Monday, 21 October, 2019
’’میں بھی افغان ہوں‘‘
حامد میر کا کالم
یہ الفاظ عوامی نیشنل پارٹی کے صدر اسفند یار ولی نے 2016میں کہے تھے جس پر کچھ محبِ وطن بھڑک اُٹھے اور اُنہوں نے اسفند یار ولی پر غداری کا الزام لگا کر اُنہیں افغانستان جانے کا حکم دیا لیکن اے این پی کے صدر نے یہ حکم نظر انداز کر دیا تھا۔

پچاس سالہ پیپلز پارٹی
وسعت اللہ خان کا کالم
پیپلز پارٹی دو روز پہلے پچاس کی ہو کر اکیاونویں برس میں داخل ہوگئی۔لاہور کے جس گھر سے متصل خالی پلاٹ میں اس کا جنم ہوا اس گھر کے مالک ڈاکٹر مبشر حسن ماشااللہ پچانوے برس کی عمر میں بھی ذہنی اعتبار سے ساٹھے پاٹھے ہیں۔پیپلز پارٹی کے جنم دن کے موقع پر جو یادگار گروپ فوٹو کھینچا گیا
نواز شریف ذمے دار ہیں
جاوید چوہدری کا کالم
یہ درست ہے میاں نواز شریف نے چار برسوں میں اتنا کام کیا جتنا چالیس برسوں میں نہیں ہواتھا‘ حکومت نے چار برسوں میں دہشتگردی 90 فیصد کم کر دی‘ لوگ یہ کریڈٹ فوج کو دیتے ہیں لیکن سوال یہ ہے فوج 2013ء سے پہلے بھی موجود تھی
بھارتی حکمرانی کا کھوکھلا پن
کلدیپ نئیر کا کالم
6 دسمبر کو بابری مسجد کے انہدام کو25 سال ہو جائیں گے۔ یہ کام کانگریس کی حکومت کے دور میں 1992ء میں کیا گیا تھا جب پی وی نرسمہا راؤ وزیراعظم تھے۔ بی جے پی کی حکومت بجائے اس کے کہ اس تاریخی مسجد کے انہدام کا مداوا کرتی
’’ہم دولت مند پاکستانی‘‘
عبدالقادر حسن کا کالم
ہم پاکستانیوں کی بھی عجب زندگی ہے جو تقسیم کر دی گئی ہے اس کا ایک حصہ بڑے لوگوں کی زندگی پر مشتمل ہے جس میں سوائے عیش و عشرت اور ضیاع وقت کے اور کچھ نہیں۔ ان عیاش لوگوں کو یہ فکر رہتی ہے
سلامتی کے خدشات اور تحفظ کے اقدامات
نصرت مرزا کا کالم
پاکستان اور امریکہ کے تعلقات کے درمیان زیرو بم آتے رہے ہیں تاہم اس دفعہ یہ تعلقات انتہائی نچلی سطح پر اس وقت پہنچ گئے تھے جب امریکی صدر نے افغان پالیسی کا اعلان کیا اور پاکستان کی اہمیت کو یکسر نظرانداز کردیا
بوڑھی سیاسی جماعتوں کا بچپنا
وسعت اللہ خان کا کالم
نوابزادہ نصراللہ خان کی زندگی میں کسی ستم ظریف نے تبصرہ کیا کہ نوابزادہ کاپورا سیاسی کیرئیر دورِ جمہوریت میں آمریت اور آمرانہ دور میں جمہوریت کی بحالی کی جدوجہد میں گزرا ہے۔
مفتوح اسلام آباد اور فیض میلہ
ڈاکٹر صغرا صدف کا کالم
فیض کی برسی کی مناسبت سے فیض کے بہت سارے شعر، نظمیں اور مصرعے آج کے پاکستان کو دعوتِ فکر دیتے محسوس ہوتے ہیں۔آج جب دنیا کے وسائل اورمال ودولت پرایک فیصد لوگوں کی اجارہ داری ہے تو 99فیصد معاشی ،معاشرتی ،سیاسی اور سماجی غرضیکہ کسی نہ کسی حوالے سے استحصال کا شکار ہے۔
رحمۃ للعالمین ﷺ کے پاک نام پر
سلیم صافی کا کالم
گناہگار تو شاید سب ہیں لیکن میں تو بہت ہی زیادہ گناہگار ہوں۔ مغفرت کی امید ہے تو اپنے عمل کے سہارے نہیں بلکہ غفورالرحیم کی صفت رحمت اور رحمت اللعالمینﷺ کے جذبہ رحمت کو دیکھ کر بخشش کی توقع لگائے بیٹھا ہوں۔
انسانی تاریخ کا بدترین نظام
ظہیر اختر بیدری کا کالم
ماہرین ارض کا ماننا ہے کہ کرۂ ارض کو وجود میں آئے ہوئے چار ارب سال ہوچکے ہیں اور اگر کوئی کائناتی حادثہ نہ ہوا تو ہماری دنیا یعنی کرۂ ارض ابھی تین ارب سال باقی رہ سکتا ہے۔
جو کرنے کا کام ہے، وہ کرو!
مقتدا منصور کا کالم
بدھ 8 نومبر کی شام کچھ حلقوں کی خواہش پر ایک ڈرامہ کھیلاگیا۔ مگر چوبیس گھنٹے کے اندر یہ ڈرامہ فلاپ اور اسکرپٹ پٹ گیا۔ وہ کھیل جو اربن سندھ کی سیاست پر کنٹرول کے لیے کئی دہائیوں سے کھیلا جارہا ہے، اس میں 1992 اور پھر 2013 کے بعد تیزی آئی ہے
بھائی اسلم کا تبخترِ علمی!
وسعت اللہ خان کا کالم
پڑھے لکھوں اور وہ بھی بال کی کھال نکالنے والوں سے علمی و تہذیبی قربت کا کوئی نہ کوئی فائدہ یقیناً پہنچتا ہوگا مگر مجھ جیسوں کو تو اس قرابت کا ہمیشہ نقصان ہی زیادہ ہوا۔ ایسے لوگوں سے بچنے میں ہی عافیت ہے جو آپ کے اندر بچپنے
سعودی میں کرپشن کیخلاف کریک ڈٰاون
محمد اسلم خان / چوپال
سعودی عرب میں گرفتار ہونے والے تین شہزادے اس لئے بہت اہم ہیں کہ وہ سعودی عرب کے تین مرکزی ٹی وی نیٹ ورکس کے مالک ہیں۔ ان میں شہزادہ ولید کئی عالمی اور علاقائی ٹی وی چینلوں کے مالک ہیں جو عرب دنیا میں نشریات فراہم کرتے
’’فرد واحد ‘‘ اور ملکی معیشت
علی احمد ڈھلوں کا کالم
سیاست میں جو کچھ ہو رہا ہے، جو ہو چکا ہے اور جو ہونے جا رہا ہے، اس حوالے سے پورے ملک پر بے یقینی چھائی ہوئی ہے۔ سیاستدانوں نے عوام کو اُلجھایا ہوا ہے جب کہ بیوروکریسی اپنا روایتی سازشی کردار ادا کررہی ہے۔ وطن عزیز دنیا کا واحد ملک ہے جس کا وزیر خزانہ کرپشن کیسز میں عدالتوں کے چکر بھی کاٹ رہا ہے
میں نہیں تو کوئی بھی نہیں
جاوید چوہدری کا کالم
ہمیں ایک بار پھر پیچھے جانا پڑے گا‘ 12 اکتوبر 1999ء ہو گیا‘ میاں نواز شریف خاندان سمیت گرفتار ہو گئے‘ یہ اٹک قلعہ پہنچے‘ اسمبلیاں معطل تھیں‘پاکستان مسلم لیگ ن اپنی دو تہائی اکثریت کے ساتھ بوکھلائی پھر رہی تھی
تباہی کے دہانے پر کھڑا شہر
مقتدا منصور کا کالم
آج اس نشست میں گورنر سندھ محمد زبیر، وزیر اطلاعات سندھ حکومت ناصر حسین شاہ اور مئیر کراچی وسیم اخترکے علاوہ شہر کی اہم کاروباری شخصیات اور ممتاز صحافیوں کی موجودگی
مقبول ترین
وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ یہ پہلی اسمبلی ہے جو’ڈیزل‘ کے بغیر چل رہی ہے اگر فضل الرحمان کے لوگ میرٹ پر ہوئے تو انہیں بھی قرضے دیے جائیں گے۔ وزیراعظم عمران خان نے نوجوانوں کے لیے ’کامیاب جوان پروگرام‘ کا افتتاح کردیا ہے۔
وزیراعظم عمران خان کی زیرصدارت تحریک انصاف کی کورکمیٹی کا اجلاس ہوا جس میں پنجاب اور خیبر پختونخوا کے وزرائے اعلیٰ اورتین گورنرز نے شرکت کی۔ حکومت نے مولانا فضل الرحمان سے مذاکرات کے لیے کمیٹی بنانے کا فیصلہ کیا ہے
اسلام آباد میں تقریب سے خطاب کرتے ہوئے فواد چوہدری نے کہا کہ نوکریاں حکومت نہیں نجی سیکٹر دیتا ہے یہ نہیں کہ ہر شخص سرکاری نوکر ی ڈھونڈے ، حکومت تو 400 محکمے ختم کررہی ہے مگرلوگوں کا اس بات پر زور ہے کہ حکومت نوکریاں دے۔
وزیراعظم عمران خان کا کہنا ہے کہ پاکستان خطے میں امن اور استحکام کے لئے اپنا کردار ادا کرنے کو تیار ہے۔ ایرانی صدر سے ملاقات کے بعد مشترکہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے ایرانی صدر حسن روحانی نے کہا کہ پاکستان اور

براہ راست نشریات
گذشتہ روز پاکستان کے وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کا ایک بیان نجی ٹی وی چینل پر دکھایا گیا جس میں کہا گیا تھا کہ پاکستان اسرائیل کے ساتھ تعلقات قائم کرنے میں دلچسپی رکھتا ہے۔ یہ بیان شاہ محمود قریشی نے ایسے وقت میں دیا ہے کہ جب ایک طرف کشمیر
ہم کربلا سے سبق سیکھ سکتے ہیں کہ کیسے تہذیب اسلامی کو فرعونی تہذیب بننے سے بچایا جائے، آج تہذیب اسلامی کو سب سے بڑا خطر ہ مقبوضہ کشمیر اور فلسطین میں ہے۔ان خیالات کا اظہار پروفیسر فتح محمد ملک سابق ریکٹر اسلامی یونیورسٹی
شہید بینظیربھٹو ہیومن رائٹس سینٹر فار وومن سے گزشتہ 10 سال کے دوران 43سوسے زائد خواتین نے رابطہ کیا اور 3707 خواتین کو گھریلو تشدد،جسمانی ہراساں کرنے، پراپرٹی میں حصہ نہ دینے کی شکایات پرریلیف

پاکستان
 
آر ایس ایس
ہمارے پارٹنر
ضرور پڑھیں
ریڈرز سروس
شعر و ادب
مقامی خبریں
آڈیو
شہر شہر کی خبریں