Thursday, 28 May, 2020
عالمی یوم القدس
گذشتہ کئی عشروں سے صہیونی ریاست کے قبضے میں انبیاءکی سرزمین نہ صرف سرزمین فلسطین بلکہ مسلمانوں کے قبلہ اول بھی عالمی سازش کے تحت قبضے میں ہے۔ مسئلہ فلسطین مسلمانوں کا اساسی اور بنیادی مسئلہ ہے جس نے دنیا میں بسنےوالے ہر مسلمان کو بے چین کر کے رکھا ہوا ہے۔
نیو ورلڈ آرڈ کا گریٹ گیم اور گلگت بلتستان

کیا نادرا کا ڈیٹا قابلِ اعتبار ہے؟
شنید ہے کہ ابھی تک احساس پروگرام کے تحت دیئے جانے والے بارہ ہزار روپے، پہلے مرحلے میں اُن افراد کو دیئے گئے ہیں؛ جن کا نام بے نظیر انکم سپورٹ پروگرام یا سابقہ ادوار میں کئے گئے، غربت کے حوالے سے مختلف سروے میں شامل تھا۔
’’کورونا وائرس سے پوری دنیا کی معیشت متاثر، کثیر الجہتی معاونت ناگذیر، ماہرین‘‘
کورونا وائرس کی وجہ سے ترقی پزیر اور ترقی یافتہ ملکوں کی معیشتیں شدید تنزلی کا شکار ہو رہی ہیں۔ 2008ء میں ہونے والی معاشی تنزلی کی نسبت کورونا وائرس کی وباء زیادہ متاثر کن ہے ۔اس کے اثرات سے چھوٹی معیشتوں کو محفوظ رکھنے
علامہ اقبال ؒ اور نظریہ ظہور امام مھدی علیہ السلام
حضرت علامہ محمد اقبال رحمتہ اللہ علیہ قانون کی اعلٰی ڈگری انگلینڈ سے اور پی ایچ ڈی جرمنی سے کرنے کے بعد ڈاکٹر کہلائے ، دنیا اس وقت نہیں جانتی تھی کہ یہ پی ایچ ڈی ڈاکٹر جو کہ سنی العقیدۃ مسلمان ایک سچے عاشق رسول ص تھے بعد میں حکیم امت کہلائیں گے۔ جی ہاں۔۔ حکیم امت۔۔۔ گلی ، محلوں ، شہروں حتٰی کہ ملکی سطح پر مشہور حکماء تو بہت سُنے اور دیکھے بھی ہونگے مگر حکیم امت (جو امت میں چھپی بیماریوں کا علاج کرے) صرف ایک ہی ہستی ہیں۔
کروونا کا عذاب اور وبال گداگری ۔۔۔۔
کرونا ایک ایسا نام جس کی دہشت نے پوری دنیا کو اپنے حصار میں جکڑ لیا ہے، شروعات میں ایسا محسوس ہو رہا تھا کہ جتنی تیزی سے یہ وائرس چائنا کو اپنی لپیٹ میں لے رہا ہے، یورپی ممالک بلخصوص اٹلی، برطانیہ اور امریکہ میں سنسنی پھیلا رہا ہے
روشن مستقبل کا انتظار
تمام عالم منتظر ہے ایسے نجات دہندہ کا جو پورے عالم میں عدل و انصاف کو قائم کرے۔ انسان فطرتاًعدل و انصاف کا خواہاں ہے مگر یہ کہ انسان ابلیسی خصوصیات کو اختیار کرتے ہوئے خود کو وحشی بنالیتاہےاور شیطانی راستے پر چلتے ہوئے اس دنیا کو تاریکی، ظلم و ستم کی طرف دھکیلنے میں اپنے شیطان صفت بھائیوں کی مدد کرنے میں اس ابلیس کے وفاداروں میں شامل ہو جاتا ہے جو خود راندہ درگاہ پروردگار ہے
امت کا نجات دھندہ (مسیحا) از احادیث
۲۰ فروری ۲۰۲۰ کو اسرائیل کی ایک ویب سائٹ اسرائیل ٹوڈے (Israel today) پر ایک آرٹیکل شائع ہوتا ہے جس میں یہ لکھا ہوتا ہے کہ اسرائیل کے اعلی درجہ کے ربی یاکووزیشولٹز (Yaakov Zisholtz Rabbi) ایک مذہبی ریڈیو کو انٹرویو کے دوران بتاتے ہیں
لاوارث  زندہ اور مردہ لاشیں
امریکہ کی انتہائی خطرناک صورتحال پر مولانا سخاوت سندرالوی کا خصوصی مضمون: نرسنگ ہومز میں جگہ نہیں ہے۔ گھروں میں رکھیں توشودر سا سلوک ہو رہا ہے۔ آج پیارے نہ زندہ کو دیکھ سکتے ہیں نہ مردہ کو ۔لاشوں کیلئے فیونرل ہومز میں فریزرز نہیں ہیں۔ قبرستانوں میں دفنانے کی جگہ نہیں مل رہی۔ مل بھی جائے چار سے پانچ دن کا ویٹنگ پیریڈ ہے ۔مریض کو شفا خانہ نہیں مل رہا ۔ بیمار کو دوا خانہ نہیں مل رہا۔
’’الٰہی نجات دھندہ اور مثالی معاشرہ‘‘
روشن مستقبل کی اُمیدانسانوں کے لیے اپنی بقاء و ارتقاءکا ایسا روح افزاء تصور ہے جس کے لیے انسان اپنے اوپر آنے والی کئی مشکلات کو ہنسی خوشی برداشت کرجاتا ہے۔ اگر انسانیت کا مستقبل روشن ہی نہ ہو اور انسان کی اس سلسلے
آن لائن ایجوکیشن سسٹم اور طلبہ کو درپیش مسائل
کورونا وائرس کے خطرے کے پیش نظر ملک بھر کے تمام تعلیمی ادارے بند کر دیے گئے ہیں۔اور دوسری جانب ایچ ای سی نے طلبہ کے وقت کے ضیاع کو بچانے کےلیے آن لائن ایجوکیشن سسٹم کو متارف کروایا ہےمگر طلبہ نے اس آن لائن سسٹم پر سخت رد عمل کا مظاہرہ کیاہے۔
عالمی صہیونزم کی شکست اور اعتراف
خطے کی موجودہ صورتحال اور بالخصوص شام و یمن اور عراق میں صہیونی محاذ کی شکست کے بعد ایک ایسی ویڈیو منظر عام پر آئی ہے کہ جس میں غاصب صیہونیوں کی جعلی ریاست اسرائیل کی قابض افواج سے تعلق رکھنے والے میجر جنرل تامیر
خواتین کے معاشرتی مسائل
ویسے تودنیا کے ہر چھوٹے بڑے ملکوں میں رہنے والی خواتین کو بہت سے معاشرتی مسائل کا سامنا کرنا پڑتا ہے لیکن ترقی یافتہ ممالک کے برعکس ترقی پذیر ممالک کی خواتین کو بہت سے معاشرتی مسائل سے نبردآزما ہونا پڑتا ہے ۔ ہمارے ملک پاکستان
کورونا عذاب نہیں تنبیہ ہے
کورونا وائرس پاکستان ہی نہیں ہی دنیا بھر میں اپنی پوری بدصورتی کے ساتھ متحرک ہے ، تشویشناک یہ ہےاس عالمی وباء کے نتیجے میں ہمارے ہاں اموات کا سلسلہ بھی شروع ہوچکا،
عورت کی آزادی۔۔۔ہم سے ہے
کبھی کبھی ہم اتنا کچھ کہنا چاہتے ہیں کہ من ہی من بہت کچھ کہ جاتے ہیں اور وہ سب کہنے کے لئے لب تو ساتھ دے رہے ہوتے ہیں لیکن زبان اخلاقیات اور اقدار و روایات کے تالوں میں ایسی جکڑی ہوتی ہے کہ جیسے قید و بند کی صعوبتیں کاٹ رہی ہو۔ہمبالآخر تھک ہار کر بیٹھ جاتے ہیں۔ ایک ہی بات سننے میں آتی ہیکہ کائنات کی رنگینی ہم سے ہے۔یعنی وجود زن سے،تو ہم ہیں کون؟
’’شہزادوں کی گرفتاریاں: کیا شاہ سلمان زندہ ہے؟‘‘
شاہ سلمان کے واحد زندہ بھائی احمد بن عبدالعزیز کا نام بھی سعودی عرب کے آئندہ ممکنہ حکمران کے طور پر سامنے آ رہا تھا۔ ذرائع کے مطابق احمد بن عبدالعزیز کو شاہی خاندان، دیگر اہم شخصیات اور کچھ مغربی طاقتوں کی بھی ممکنہ طور پر حمایت حاصل ہو سکتی تھی۔
رانگ سائیڈ
جب سچ جھوٹ کی تفریق ختم ہوجائے تو رانگ سائیڈ چلنے والے شرمندہ نہیں ہوتے اور غاصب عزت دار قرار پاتے ہیں۔ ہمارے یہاں ڈھٹائی ایک صلاحیت تصور کی جاتی ہے آپ نے اکثر سڑک پر چلتے وقت رانگ سائیڈ سے آنیوالی گاڑیوں اور موٹرسائیکلز کا سامنا کیا ہو گا۔
مقبول ترین
وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ بھارت خطے کے امن کو داﺅ پر لگا رہا ہے ‘ بھارت متنازعہ علاقوں میں تعمیراتی کام ‘سڑکیں اور فوجی بنکرز بنا رہا ہے جو کہ اس کے توسیع پسندانہ عزائم کو ظاہر کرتا ہے ‘لداخ کے متنازعہ علاقے میں تعمیرات سے بھارت عالمی قوانین کی خلاف ورزیاںکر رہا ہے۔
نیشنل کمانڈ اینڈ کنٹرول سینٹر کے اعدادوشمار کے مطابق کورونا س کے وار تیز ہوگیاہے ،60ہزار پاکستانی متاثر‘ اب تک 1240 جاں بحق ،مجموعی طور پر 19 ہزار142 مریض صحت یاب ‘ 24 گھنٹوں میں مزید ایک ہزار446 کیسز رپورٹ ہوئے۔
سابق صدر آصف علی زرداری نے کہا ہے کہ شدید مہنگائی کے باعث عوام حکومت سے تنگ آچکی ہے مو جودہ حکومت کاخاتمہ ہی عوام کے لئے ریلیف ہو گا،عوام نا اہل نیازی حکومت سے نجات چاہتی ہے ۔ کورونا وباءاور ٹڈی دل کے خاتمے کے لئے حکو مت کی کو ئی پا لیسی نظر نہیں آئی ، ڈنگ ٹپاو¿ نظام چل رہا ہے ۔
پاکستان مسلم لیگ(ن)کی ترجمان مریم اورنگزیب نے حکومت پر طنز کرتے ہوئے کہا ہے کہ عمران کے حکم پر چینی بر آمد کی گئی‘ مقدمہ بنایا جائے ،وزیراعظم کے لاپتہ ہونے پر تشویش ہے وزیراعظم کی گمشدگی کا اشتہار شائع کرنا چائیے۔

کرونا وائرس اور احتیاتی تدابیر
میرے بچپن میں میرے والد صاحب بیرون ملک ملازمت کرتے تھے. اچھا کھاتے پیتے تھے لیکن وہ ایک کمی ہوتی ہے نا کہ کب ابو آئیں گے اور کب ان کو لینے ایئرپورٹ جائیں گے، وہ ہمیشہ رہتی تھی. اور جب ان کو لینے ائیر پورٹ جاتے تو خوشی کا کوئی ٹھکانہ نہیں ہوتا تھا.
صدی کی ڈیل (deal of century) امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ کی طرف سے مسئلہ فلسطین کا پیش کیا جانے والا نام نہاد حل ہے ۔اس منصوبہ کے تحت اسرائیل اور فلسطین کے درمیان ایک نئی حد بندی کی جائے گی ۔جس کے نتیجے میں ایک جدید فلسطین تشکیل دیا جائے گا ۔اگر اس صدی کی ڈیل کے بعد کے فلسطین کو دیکھا جائے تو مکمل طور پہ تبدیل ہو جائے گا۔
سعودی عرب کے ایک ایم بی سی چینل پر رمضان کے شروع میں ایک ڈرامہ "ام ہارون" کے نام سے نشر کیا جا رہا ہے، جس میں یہودیت کو مظلوم بنا کر پیش کیا گیا ہے۔

پاکستان
 
آر ایس ایس
ہمارے پارٹنر
ضرور پڑھیں
ریڈرز سروس
شعر و ادب
مقامی خبریں
آڈیو
شہر شہر کی خبریں