Monday, 25 May, 2020
امریکہ طالبان معاہدہ کی ناکامی کون چاہتا ہے!
تحریر: ظہیرالدین بابر
افغانستان میں قتل وغارت گری کے حالیہ واقعات نے طویل عرصے سے جنگ سے تباہ حال ملک بارے امن کی امید کو ناامیدی میں بدل رہے ہیں، کابل میں زچہ وبچہ وارڈ میں ماؤں اور نونہالوں کا قتل جاری خون ریزی کے بدترین واقعات میں اپنی جگہ بنا گیا ، ایک بار پھر یہ تاثر مضبوط ہوا کہ دہشت گرد عناصر کسی مذہبی و اخلاقی اصول پر پورے نہیں اترتے،

بھارت کا ’’ہندومیڈیا‘‘ میڈیا !
عمر چوہدری کا کالم اگلا مورچہ
’’ہندومیڈیا‘‘ اس بلکتے ''کتے'' کی طرح ہے جس کی' دُم' پر پائوں رکھ دیا جائے اور وہ سر بازار چیختا چلاتا!دُم کو مروڑے دیتا چلا جاتا ہے لیکن کتے سے کوئی نہیں پوچھتا کہ سر بازار ''دُم پھیلانے'' کا مشورہ آخر کس نے دیا تھا بس یہی حال ''مودی سرکار'' کا ہے
محمد بن سلمان کا وژن 2030ء دھندلا رہا ہے
ثاقب اکبر کا کالم درخیال
سعودی ولی عہد محمد بن سلمان نے 2017ء میں سعودی عرب کی ترقی کے لیے ایک بہت بڑا اور مہنگا منصوبہ پیش کیا، جس کا عنوان وژن 2030ء رکھا گیا۔ انہوں نے اعلان کیا کہ یہ پراجیکٹ جدید معیارات کے مطابق اور ترقی یافتہ ٹیکنالوجی کا شاہکار ہوگا۔ اس کے ذریعے سعودی عرب کی آمدنی کا تیل پر انحصار ختم کر دیا جائے گا۔ اس منصوبے کے تحت بحیرہ احمر کے کنارے 12 شہروں کو بسایا جانا ہے، اسے نیوم پراجیکٹ کہتے ہیں۔
8 مئی! ریڈکراس / ریڈکریسنٹ کا عالمی دِن
تحریر: وقار فانی مغل
ڈیڑھ صدی قبل ایک سوئس تاجر کی جانب سے خدمت ِ انسانیت کیلئے ''تحریک'' اب پوری دنیا میں ریڈکراس اور ہلالِ احمر کی صورت موجود ہے۔ جنگی زخمیوں کی دیکھ بھال کی ہنری ڈوننٹ کی سوچ نے رضاکارانہ جذبوں کو فروغ دیا اور آج ہر مذہب کا
’’میریا ڈھول سپاہیا‘‘
عمر چوہدری کا کالم اگلا مورچہ
اگلے مورچے میں تعینات سپاہی کو قوم کی محبت اور خلوص بھری دعائوں کیساتھ ''مورال سپورٹ''کی ضرورت ہوتی ہے عسکری تاریخ ہمیشہ سے گواہ رہی ہے کہ افواج پاکستان نے بیرونی اور اندرونی خلفشاروں کا جس خندہ پیشانی سے مقابلہ کیا ہے
حضرت خدیجۃ الکبری، عظیم المرتبت خاتون
تحریر: رضوان نقوی
حضرت خَدیجَہ بنت خُوَیلِد، خدیجۃ الکبری و ام المومنین کے نام سے مشہور، پیغمبر اکرم صلی اللہ علیہ و آلہ وسلم کی اولین زوجہ اور حضرت زہرا سلام اللہ علیھا کی مادر گرامی ہیں۔ آپ نے بعثت سے پہلے حضرت محمدؐ کے ساتھ شادی کی۔ آپ آنحضرت پر ایمان لانے والی پہلی خاتون ہیں۔
حزب اللہ کیخلاف جرمن حکومت کا اقدام
ثاقب اکبر کا کالم درخیال
یہ بات ایک دنیا کو معلوم ہے کہ حزب اللہ کا جرم امریکا اور اسکے حواریوں کی نظر میں اسکے سوا کچھ نہیں کہ اس نے اسرائیل کو لبنان کی سرزمین سے نکل جانے پر مجبور کیا اور وہ علاقے میں صہیونی مقاصد کیخلاف ایک سیسہ پلائی ہوئی دیوار کی حیثیت رکھتی ہے۔ حزب اللہ نے شام میں بھی دہشتگرد گروہوں کا مقابلہ کیا۔ اس نے شامی سرزمین کو امریکا اور اسکے لے پالک خون خوار دہشتگرد حواریوں سے آزاد کروانے میں بھی اہم کردار ادا کیا ہے۔ یہی وجہ ہے کہ جرمنی کے حزب اللہ کے خلاف اقدام کو شامی حکومت نے بھی تنقید کا نشانہ بنایا ہے اور اسے مسترد کر دیا ہے۔
اچھی صحت کیلئے رہنمااصول
حکیم احمد حسین اتحادی ۔گولڈ میڈلسٹ (وزارت صحت)
تندرستی ہزارنعمت ہے صحت مندجسم صحت منددماغ ہوتا ہے اس لئے اچھی صحت کے لئے درج ذیل ہدایات اورپرہیزپرعمل کیجئے اوربیماریوں سے دوررہیں اورصحت مندوتوانازندگی گزاریں۔ اچھی صحت کے لئے حیوانات سے حاصل ہونے والی اشیا ء کم سے کم استعمال کریں۔ چربی لگا گوشت بہت کم کھائیں۔ دخانی عمل سے پکائی ہوئی غذا /فاسٹ فوڈبالکل نہ کھائیں۔
ہم سمجھے ہوئے ہیں اسے جس بھیس میں جو آئے
تحریر: ظہیر الدین بابر
عالمی ادارہ صحت نے خدشہ کا اظہار کیا ہے کہ جولائی کے وسط تک پاکستان میں 2 لاکھ کورونا وائرس کے کیسز ہوسکتے ہیں، ڈبیلو ایچ او کو اس پر بھی تشویش ہے کہ سندھ اور پنجاب میں عالمی وبا سے متاثر افراد کی تعداد تیزی سے بڑھ رہی ،اس پر یہ دلیل بھی سامنے آچکی کہ لاک ڈاؤن میں مذید 2 ہفتوں کی توسیع کی ایک وجہ دراصل یہی ڈبلیو ایچ او کی وارننگ ہے
۔۔۔۔۔ اب بیچو تیل
ثاقب اکبر کا کالم درخیال
امریکہ کا تیل اب اس صورت حال سے دوچار ہے۔ جو احباب پوچھتے ہیں کہ تیل کی قیمت منفی کیسے ہوسکتی ہے، وہ کوڑے والی مثال کو پیش نظر رکھیں۔ البتہ اس کی کچھ وضاحت مزید کیے دیتے ہیں۔
کرونا وارس: لاک ڈاؤن اور عوام
محمد سلیم خالد کا کالم
پوری دنیا کی طرح ارض پاکستان بھی کورونا وائرس کی لپیٹ میں آچکا ہے یہ وباء ہرگزرتے د ن کے ساتھ برُی طرح پورے ملک میں پھیل چکاہے ان حالات میں موجودہ مرکزی اور صوبائی حکومتیں ہر ممکن کوشش کرتی نظر آرہی ہیں کہ کوروناجیسی وباء پر اپنے
نہ سدھرنے والی مخلوق
ڈاکٹر تصدق حسین ایڈووکیٹ کا کالم کہکشائوں سے
قارئین! معاف کیجئے گا ہم سدھرنے والے ہرگز نہیں، شاید دعائیں آسمانوں سے پلٹائی جارہی ہیں اس لئے بے اثر ہیں۔ اچھا ایسا ہے تو پھر ہمیں انفرادی و اجتماعی معاملات کا ٹھنڈے دل سے جائزہ لینا ہوگا۔
’’اللہ ہو اللہ ہو بس ہر دم بندیا اللہ ہو‘‘
پروفیسر شہباز علی عباسی کا کالم
وقت کے گرد وپیش سے بچنا یہ حالات کے نشیب و فراز سے مستثنٰی ہونا نہ صرف ناممکن بلکہ محال ہے مگر اسی طرح حالات کو مدنظر رکھتے ہوئے زندگی کو ایک بہترین ڈگر پر چلانا انتہائی آسان ہے __
یمن پر آگ برساتی جنگ بندی
ثاقب اکبر کا کالم در خیال
سعودی اور اماراتی معیشت دن بدن زبوں حالی کا شکار ہورہی ہے۔ ایسے میں انصار اللہ کے سپاہیوں نے مختلف محاذوں پر کامیابی حاصل کی ہے لہٰذا یمن پر آگ برساتی جنگ بندی تو اس جنگ کے خاتمے کا ذریعہ بنتی دکھائی نہیں دیتی لیکن دست قدرت کی کار فرمائی سے مظلوموں کو آخرکار نجات ضرور ملے گی۔
آفات انسانی فطرت کو بدلا نہیں کرتیں
ظہیرالدین بابر کا کالم
یقینا کورونا وائرس نے دنیا بدل کر رکھ دی ،یہ کہنا ہرگز مبالغہ آرائی نہیں کہ عالمی وبا پر قابو پانے کے بعد بھی دنیا کی سیاست ، معیشت حتی سفارتکاری میں کئی نوعیت کی تبدیلیاں سالوں تک وقوع پذیر ہوتی رہیں گی ، درحقیقت قیادت کی خوبی یہ بھی ہوا کرتی ہے
امریکہ کی طرف سے عالمی ادارہ صحت کی امداد بند کرنے کا پس منظر
ثاقب اکبر کا کالم در خیال
امریکہ کے اندر اور باہر بہت سے تجزیہ کاروں کی رائے ہے کہ صدر ٹرمپ ایک مذمتی صدر بن چکے ہیں۔ وہ دنیا میں اور خود اپنے ملک کے اندر جس کی چاہتے ہیں اور جس انداز سے چاہتے ہیں مذمت کرتے ہیں، وہ دھمکیاں دینے میں دوست اور دشمن میں بھی تمیز کے روادار نہیں۔ وہ دوسروں کا تمسخر اور استہزاءبھی کرنے میں یدطولیٰ رکھتے ہیں۔
مقبول ترین
مسلم لیگ نواز خیبرپختونخوا کے صوبائی صدر امیر مقام کا کورونا ٹیسٹ مثبت آگیا ہے۔
چیف آف آرمی سٹاف جنرل قمر جاوید باجوہ نے کہا ہے کہ مقبوضہ کشمیر ایک متنازعہ علاقہ ہے اور اس کی متنازعہ حیثیت ختم کرنے کی کسی بھی کوشش کا بھرپور جواب دیا جائے گا، جنوبی ایشیاءمیں عدم استحکام پیدا کرنے کے نتائج سنگین ہوں گے۔
امریکہ کی جانب سے 6 ملین ڈالر کی امداد پاکستان کے ہسپتالوں میں کورونا کے مریضوں کی دیکھ بھال اور طبی عملے کی تربیت پر خرچ کی جائے گی۔
ملک بھر میں آج عیدالفطر کورونا وائرس اور طیارہ حادثے کے باعث سادگی کے ساتھ منائی جارہی ہے۔ملک بھر میں عید الفطر کے موقع پر مساجد، عید گاہ اور امام بارگاہوں میں نماز عید کے چھوٹے بڑے اجتماعات ہوئے۔

کرونا وائرس اور احتیاتی تدابیر
میرے بچپن میں میرے والد صاحب بیرون ملک ملازمت کرتے تھے. اچھا کھاتے پیتے تھے لیکن وہ ایک کمی ہوتی ہے نا کہ کب ابو آئیں گے اور کب ان کو لینے ایئرپورٹ جائیں گے، وہ ہمیشہ رہتی تھی. اور جب ان کو لینے ائیر پورٹ جاتے تو خوشی کا کوئی ٹھکانہ نہیں ہوتا تھا.
صدی کی ڈیل (deal of century) امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ کی طرف سے مسئلہ فلسطین کا پیش کیا جانے والا نام نہاد حل ہے ۔اس منصوبہ کے تحت اسرائیل اور فلسطین کے درمیان ایک نئی حد بندی کی جائے گی ۔جس کے نتیجے میں ایک جدید فلسطین تشکیل دیا جائے گا ۔اگر اس صدی کی ڈیل کے بعد کے فلسطین کو دیکھا جائے تو مکمل طور پہ تبدیل ہو جائے گا۔
سعودی عرب کے ایک ایم بی سی چینل پر رمضان کے شروع میں ایک ڈرامہ "ام ہارون" کے نام سے نشر کیا جا رہا ہے، جس میں یہودیت کو مظلوم بنا کر پیش کیا گیا ہے۔

پاکستان
 
آر ایس ایس
ہمارے پارٹنر
ضرور پڑھیں
ریڈرز سروس
شعر و ادب
مقامی خبریں
آڈیو
شہر شہر کی خبریں