Tuesday, 11 December, 2018
ہارس ٹریڈنگ یا دھاندلی۔ کیوں؟

ہارس ٹریڈنگ یا دھاندلی۔ کیوں؟
نجف علی ایڈوکیٹ کا کالم


پاکستانی سیاست تو آپ بہتر جانتے ہیں جب بھی کوئی پارٹی ہار جاتی ہے اس کا سب سے پہلا حدف جیتنے والی پارٹی ہوتی ہے ۔وہ قومی اسمبلی کے الیکشن ہوں یا سینیٹ کے الیکشن ہوں کبھی بھی ہارنے والا جیتنے والی پارٹی کو قبول نہیں کرتا ہے ۔یا دھاندلی کا رونا روئے گا یا ہارس ٹریدنگ کا ماتم شروع کریگا ۔اس سے مراد یہ بھی نہیں ہے کہ یھاں پر دھاندلی یا ہارس ٹریڈنگ نہیں ہوتی ہے ۔بلکل ہوتی ہے کیونکہ جہاں پر ادارے مفلوج ہوں ،انصاف نام کی چیز تک نظر نہ آرہی ہو، اشتھاری، کرپٹ لوگوں کو الیکشن لڑنے کی اجازت مل جائے اور ہر قانون بنانے والا ادارہ قانوں بناتے وقت خوف کا شکار ہویااپنے آپ کو اس قانوں سے مبرا سمجھتا ہو تواس قانون کا نافذ پہلی بات ہوگا نہیں وہ ایک مزاح سمجھا جائے گا۔اگر اس قانوں کا نافذ عمل میں آ بھی جائے گا تو کمزور، مفلوج عوام کے لئے ہوگا۔ یہ دھاندلی یا ہارس ٹریڈنگ کیوں ہوتی ہے ؟

کیا اس کا ذمہ دارجیتنے والی پارٹی ہے یا الیکشن کمیشن ؟ یقینََا اس کا جوب یہ ہوگا کہ جو اس ووٹ کروانے کا حلفیہ ذمہ دار ہے وہ الیکشن کمیشن ہے ۔کیونکہ مقابلہ کرنے والا تو اپنی جیت کے لئے ہر قسم کی کوشش کریگا ۔جس طرح کسی کو دھوکا دینااسلام میں جائز نہیں ہے لیکن حالت جنگ میں اپنے مدمقابل کو دہوکا دینا ٹھیک ہے۔کیونکہ مدمقابل کو شکست دینا مقصد ہے ۔الیکشن میں بھی دوپارٹیوں کا مقابلہ ہوتا ہے جس طرح جنگ میں وہ مقابلہ تلوار کا ہوتا ہے تو اسی طرح الیکشن میں وہ مقابلہ ووٹ کے ذریعے ہوتا ہے ۔مقابلہ کرنے والے کی پوری کوشش ہوتی ہے کہ کسی بھی طرح کامیاب ہوجاؤں۔لیکن ذمہ داری اس ادارے پر ہوتی ہے جو 20 کڑوڑ عوام کے ووٹوں کا محافظ ہے ۔الیکشن کمیشن کے پاس تمام اختیارات ہوتے ہوئے بھی دھاندلی کیوں ہوجاتی ہے؟

اس کا مطلب یہ ہے کہ ادارہ اپنے عملے اوراختیارات کے ساتھ پورا ناکام ہے۔توپھر ہارنے والے کو جیتنے والے کے خلاف تحریک چلانے کے بجائے الیکشن کمیشن کے خلاف تحریک چلانی چائیے ۔ہارنے والا ثبوت الیکشن کمیشن میں جمع کروانے کے بجائے سپریم کورٹ میں جمع کروائے تاکہ نااہل اور کرپٹ لوگوں کو سزائیں ملیں اورایک بہت بڑاقومی ادارہ اپنے اختیارات کے ساتھ اپنے پاؤں پر کہڑا ہوسکے۔جب تک الیکشن کمیشن کو بااختیار نہیں کیا جائے گا شور کرنے سے دھاندلی ختم ہوگی نہ ہارس ٹریڈنگ رکے گی۔اسی طرح ہر الیکشن میں یہ الزامات کی بھوچاڑ چلتی رہے گی۔دوسراحل اس دھاندلی اورہارس تریڈنگ کو روکنے کا یہ ہے کہ پرانافرسودہ الیکشن کروانے کے سسٹم سے نکلیں اور ووٹ کاسٹ کرنے کا جدید طریقہ کمپیوٹرائزڈ سسٹم کو لے آئیں ۔

لیکن یہ سسٹم بتاتے ہوئے ڈر بھی لگ رہا ہے کیونکہ نادرا کمپیوٹرائز ڈہونے کہ باوجود بھی دسیوں لوگوں کو دونمبر کارڈ اور پاسپورٹ شایع کرچکا ہے۔اصل ان تمام چیزوں کا حل کرپٹ نظام سے نجات اور ایماندار لوگوں کو آگے لانا ہوگا ورنہ اس ملک کی ترقی مشکل ہے۔اللہ کا واسطہ ہے ان صاحبان اختیار لوگوں کو اس موذی مرض سے ملک کو نجات دلوائیں ۔ہرناکام الیکشن پر قومی خزانے سے اربوں رپئے لگائے جاتے ہیں ۔جس کاڈاریکٹ اثر عوام پر پڑتا ہے ۔عوام غربت ،بھوک اور افلاس کی چکی میں پس رہا ہے لوگ اپنی جگر کے ٹکڑوں کو بازار میں بیچنے کے لئے آچکے ہیں ۔کبھی غربت کے عذاب سے نجات حاصل کرنے کے لئے دریاؤں میں کود کر یاٹرین کے نیچے ٓاکر اپناخاتمہ کردیتے ہیں۔ حافظہ آباد کا واقعہ عوام کے سامنے ہے ۔جس میں غریب خاندان کی لڑکیوں کو وزیراعظم جہیزسکیم کے نام پر گردے نکالنے کا م کیاجا رہا تھا۔

خادم پنجاب کی انتظامیہ کیوں کبوتر کی طرح آنکھیں بند کر کے بیٹھی ہوئی تھی۔ منصفانہ اور صحیح ووٹ کا سٹ کرنے کے لئے تیسرا جو اہم حل ہے وہ عوام کی طاقت ہے ۔اگر عوام کو اس کا شعور دلایا جائے کہ اپنے حقوق لینے کے لئے قوم پرستی ،ذات پرستی، علاقہ پرستی ،محلہ پرستی ،بڑاپن پرستی ، وڈیرا پرستی ،خان پرستی اور خوف پرستی کے بتوں کو گرا کراپنے ووٹ کا حق اپنے اور ملک کی ترقی کے لئے استعمال کریں نعروں اور شور کو مت دیکھیں اہل نمائندے کودیکھیں جو آپ اور آپ کے ملک کی ترقی کے لئے کام کرے۔ اپنا قیمتی ووٹ مت ضائع کریں ۔جب ہم ان تمام چیزوں پر عمل کریں تو کوئی لٹیرا ، کرپٹ آدمی کامیاب نہیں ہوسکے گا۔ ووٹ کا تقدس بھی رہے گا اور ہر آدمی کو ووٹ کے ذریعے اپنا حق بھی ملے گا۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
نوٹ: مبصر ڈاٹ کام ۔۔۔ کا کالم نگار، بلاگر یا مضمون نگار کی رائے سے متفق ہونا ضروری نہیں ۔۔۔ اگر آپ بھی ہمارے لیے کالم / مضمون یا اردو بلاگ لکھنا چاہتے ہیں تو قلم اٹھائیے اور 500 الفاظ پر مشتمل تحریر اپنی تصویر، مکمل نام، فون نمبر اور مختصر تعارف کے ساتھ info@mubassir.com پر ای میل کریں۔ ادار

اپنا تبصرہ دینے کے لیے نیچے فارم پر کریں
   
نام
ای میل
تبصرہ
  7539
کوڈ
 
   
متعلقہ کالم
4 دسمبر کی صبح جو چند گھنٹے پاکستان کی سب سے قدیم اور عظیم پنجاب یونیورسٹی میں گزرے، وہ میری زندگی کے ناقابلِ فراموش مناظر کی حیثیت اختیار کر گئے ہیں۔ ہزاروں کی تعداد میں طلبا اور طالبات قطار اندر قطار کرکٹ گراؤنڈ کی طرف کھنچے چلے آ رہے تھے۔
ان دنوں اتفاق سے یونیورسٹیوں سے میرا رابطہ کچھ زیادہ ہے۔ اپنے ماضی سے خوف زدہ ہوں ۔حال پر اثر انداز نہیں ہوسکتا۔اس لئے وہاں جارہا ہوں جہاں ہمارا مستقبل پرورش پارہا ہے۔کوئٹہ گیا تو سردار بہادر خان ویمنز یونیورسٹی میں دس ہزار طالبات کو حصول علم
بلاشبہ یونیورسٹیوں کی تعداد میں خوش کن اضافہ ہوا ہے، مگر جہالت کے اندھیرے پہلے سے کہیں زیادہ گہرے ہوتے جا رہے ہیں۔ خوش قسمتی سے اِن حالات میں پنجاب یونیورسٹی کو ایک ایسے وائس چانسلر میسر آ گئے ہیں جو پہلے دو یونیورسٹیوں کے وائس چانسلر
آج کا دن میرے لئے ،میری صحافتی زندگی کا تاریخی دن ہے ۔صرف میرے لئے نہیں بلکہ ہر پاکستانی کے لئے یہ ایک تاریخی دن ہے ۔ آج قومی اسمبلی میں فاٹا کے خیبرپختونخوا کے ساتھ انضمام کا بل پیش ہورہا ہے ۔ اس بل کی قومی اسمبلی اور پھر سینیٹ سے منظوری کے بعد

مزید خبریں
میڈیا کے مطابق لاہور ہائی کورٹ کے جسٹس علی اکبر قریشی نے اظہر صدیق ایڈوووکیٹ کی درخواست پر سماعت کی۔ جس میں سگریٹ نوشی پر پابندی کے قوانین کی پاسداری نہ کرنے کی نشاندہی دہی کی گئی۔
صوبہ بلوچستان کے ضلع تربت میں کالعدم تنظیموں سے تعلق رکھنے والے 15 اہم کمانڈروں سمیت تقریباً 200 فراری ہتھیار ڈال کر قومی دھارے میں شامل ہوگئے ہیں۔ تقریب کے مہمان خصوصی وزیراعلیٰ بلوچستان میرعبدالقدوس بزنجو تھے۔ اب تک ایک ہزار 8 سو کے قریب فراری ہتھیار ڈال کر قومی دھارے میں شامل ہوچکے ہیں۔
سابق وزیراعظم اور حکمران جماعت کے سربراہ میاں محمد نواز شریف کی کل سعودی عرب روانگی کا امکان ہے۔ جہاں وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف پہلے سے موجود ہیں۔ جبکہ وفاقی وزیر ریلوے خواجہ سعد رفیق بھی پی آئی اے کی پرواز کے ذریعے اہلخانہ کے ہمراہ سعودی عرب روانہ ہوگئے ہیں
مسجد اقصیٰ کے امام وخطیب الشیخ اسماعیل نواھضہ نے برما میں مسلمانوں پر ڈھائے جانے والے مظالم کی شدید مذمت کی اور عالم اسلام پر زور دیا کہ وہ روہنگیا مسلمانوں کو ریاستی جبر وتشدد سے نجات دلانے کے لیے موثر اقدامات کریں

مقبول ترین
خیبرپختونخوا حکومت پر براجماں تبدیلی کے دعویداروں نے بے روز گار نوجوانوں پر بم گرانے کی تیاری کر لی۔ خیبر پختون خوا حکومت نے سرکاری ملازمین کی ریٹائرمنٹ کی عمر میں اضافے پر غور شروع کر دیا ہے اور اس سلسلے میں ملازمین کیلئے مدت ملازمت
میڈیا کے مطابق قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف شہباز شریف کو لاہور کی کوٹ لکھپت جیل سے بذریعہ موٹروے اسلام آباد پہنچا دیا گیا، وہ قومی اسمبلی کے اجلاس میں شرکت کریں گے۔ اسپیکر اسد قیصر کی جانب سے شہباز شریف کے پروڈکشن آرڈر جاری کرنے کے
پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے مطابق کور کمانڈر لاہور لیفٹیننٹ جنرل عامر ریاض کا تبادلہ کرکے انہیں نیشنل ڈیفنس یونیورسٹی کا صدر تعینات کیا گیا ہے جب کہ نیشنل ڈیفنس یونیورسٹی کے صدر لیفٹیننٹ جنرل ماجد احسان کو نیا کور
چیف جسٹس میاں ثاقب نثارکا کہنا ہے کہ میں رہوں نہ رہوں سپریم کورٹ کا یہ ادارہ برقرار رہے گا اور میرے بعد آنے والے مجھ سے زیادہ بہتر ہیں۔ کوئٹہ میں بلوچستان بار میں اپنے خطاب میں چیف جسٹس میاں ثاقب نثار نے کہا کہ ڈیم کی تعمیرآنے والی نسلوں

پاکستان
 
آر ایس ایس
ہمارے پارٹنر
ضرور پڑھیں
ریڈرز سروس
شعر و ادب
مقامی خبریں
آڈیو
شہر شہر کی خبریں