Sunday, 05 July, 2020
’’مسٹر منوج موکنڈ! ہم ہیں حیدر کی للکار‘‘

’’مسٹر منوج موکنڈ! ہم ہیں حیدر کی للکار‘‘
عمر چوہدری کا کالم اگلہ مورچہ

 

بھارتی ٹڈی دِل سینا کے نئے ''پردھان منتری ''منوج موکنڈ نراوا کچھ زیادہ ہی 'موج' میں تھے اَردلی نے شاید اُن کے گلاس میں چند قطرے زیادہ ہی ڈال دیے تھے پنجابی میں کہتے ہیں کہ اپنی 'منجی تھلے ڈانگ پھیرو'۔۔۔

پریس کانفرنس کے سامعین کو دیکھ کر اور بڑی خبر کے بھوکے کھلاڑی کی ہرزہ سرائی دیوانے کا خواب تو ہو سکتا ہے یقینا موصوف کے ایک بار پھر ''پورے میڈیکل'' کی ضرورت ہے دماغ کی چولیں کھسک جائیں ،بلڈ پریشر زیادہ ہو جائے تو بندہ اوقات سے باہر نکلنے کی کوشش کرتا ہے ادھر بھارت میں یہ حالت ہے کہ گلی گلی میں آزادی کے نعرے گونج رہے ہیں، یونیفارم بردار اہلکار چھٹیاں لینے کے بہانے تراش رہے ہیں اور منتوں سماجتوں سے ایل او سی پر نہ بھیجنے کیلئے سفارشیں ڈھونڈتے پھرتے ہیں، بھوک اور ننگ کے شکار سپاہی ویڈیوز ریلیز کر رہے ہیں خواتین اہلکار جنسی تشدد کا نشانہ بننے کے بعد اپنی قسمت کو کوس رہی ہیں غیر اخلاقی رویے بھارت سرکار اور اس کی فوج کے ماتھے کا کلنک بن چکے ہیں اور ادھر منوج اپنی چتا میں جلنے کو تیار ہے اسے بتاتا ہوں کہ ہم نے ٹارگٹ فکس کر کے اس لیے معافی نہیں دی تھی کہ تم جیسے مسخرے ٹُن ہو کر بیان بازی شروع کر دو کبھی فرصت ملے تو ابھینندن سے ضرور ملیے گا یقینا ستائیس فروری کی پوری ''داستان'' گوش گزار کر دے گا ،ٹھڈے ،مکے ،ٹانگیں مارنے کے بعد ہم فنٹاسٹک چائے پلاتے ہیں جس کی قیمت بھارتی مگ 21کے برابر ہے ۔

بھارت سرکار کی ایل او سی سے اس پار آنے کی خواہش اور منوج کی بیان بازی محض اپنے لوگوں کو خوش کرنے کیلئے تو ہو سکتی ہے ،بھارتیو تالیاں بجائو ،بھنگڑے ڈالو ،اُچھلو کودو تمہیں ایک اور مسخرہ مل گیا ہے لیکن یاد رکھنا اب کی بار ستائیس فروری سے زیادہ بڑا سرپرائز دینگے۔

 یاد ہے نہ جنرل ضیاء الحق نے راجیو گاندھی سے کہا تھا'' بیٹا تم نے ماں کا پیار دیکھا ہے باپ کا غصہ نہیں ''۔اور پھر کرکٹ ڈپلومیسی سے واپسی پر جنرل ضیاء نے راجیو گاندھی کو وارننگ دی تھی کہ ''پاکستان نے ایٹم بم چلایا تو دنیا کے نقشے پر موجود ایک ہی ہندو ملک کا خاتمہ ہو جائے گا اور پھر جنرل ضیاء کا جہاز لاہور اترنے سے پہلے تمہاری سینا دُم دبا کر ایل او سی سے بھاگ کھڑی ہوئی تھی ''۔ابھی کل ہی کی بات ہے کہ یوم فضائیہ پر ابھینندن کا جہاز نشانہ بنانے والے سکوارڈن لیڈر حسن صدیقی(تمغہ جرأت) عزم دُہرا رہے تھے کہ پاکستان کی طرف اُٹھنے والی ہر میلی آنکھ کو نکال کر باہر پھینک دیں گے اور وہ بھی یاد ہے نہ سکوارڈن لیڈر خواجہ حسن کی شہادت کے بعد ایم ایم عالم نے عہد کیا تھا کہ ہمیں اپنے شہداء کا قرض اُتارنا ہے اور اگلے ہی روز انہوں نے فضائی تاریخ میں دشمن کے پانچ طیارے گرا کر عالمی ریکارڈ بنا لیا یہ ہے ہماری تاریخ ،ہمارا عزم اور ہمارا عہد ۔ہم داستانوں کے امین ہیں ،چونڈہ ،کھیم کرن، سلیمانکی ،ھلواڑہ اور پٹھان کوٹ پر ہم اپنی جرأتوں کے نشان ثبت کر چکے ہیں۔

مسٹر منوج موکنڈ نراوا کوئی سازش کرنے کی ناکام کوشش کی تو تمہیں لپٹنے کو ترنگا نصیب نہیں ہو گا۔ ہم کیپٹن سرور،نائیک سیف اللہ جنجوعہ، میجر طفیل ،میجر عزیز بھٹی ،پائلٹ آفیسر راشد منہاس ،میجر شبیر شریف ،میجر اکرم شہید' لانس نائیک محفوظ شہید ،سوار محمد حسین، کیپٹن کرنل شیر خان اورحوالدار لالک جان کے پیروکار ہیں ۔ ہم نے امن کے فروغ کیلئے بائیس ہزار شہادتوں کا نذرانہ پیش کیا ہے ہم اُن کے مقروض ہیں اور انہیں شرمندہ نہیں کریں گے۔

مسٹر منوج یاد رکھو !خوابوں کی دنیا اور حقائق ایک دوسرے کے برعکس ہیں ہمارے ڈی جی آئی ایس پی آر میجر جنرل آصف غفور کا ردِ عمل آ پ تک پہنچ چکا ہو گا انہوں نے واضح کیا کہ پاک فوج مقبوضہ کشمیر میں متعصب اور انتہا پسندانہ بھارتی سوچ سے آگاہ ہے انہوں نے آپ کے بیان کو رَد کرتے ہوئے اسے معمول کی ہرزہ سرائی قرار دیا تا ہم ڈی جی کی وارننگ آپ پر یقینا گراں گزری ہو گی جس میں انہوں نے ''اب کی بار زیادہ بھرپور جواب ہو گا ''ہم اگلے مورچے سے پورے تیقن کیساتھ افواج پاکستان کے دست بازو ہیں اور گھٹیا ہمسایے کو مثالی سبق دینے کیلئے ہمہ وقت تیار ہیں۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
نوٹ: مبصر ڈاٹ کام ۔۔۔ کا کالم نگار، بلاگر یا مضمون نگار کی رائے سے متفق ہونا ضروری نہیں ۔۔۔ اگر آپ بھی ہمارے لیے کالم / مضمون یا اردو بلاگ لکھنا چاہتے ہیں تو قلم اٹھائیے اور 500 الفاظ پر مشتمل تحریر اپنی تصویر، مکمل نام، فون نمبر اور مختصر تعارف کے ساتھ info@mubassir.com پر ای میل کریں۔ ادارہ

اپنا تبصرہ دینے کے لیے نیچے فارم پر کریں
   
نام
ای میل
تبصرہ
  90044
کوڈ
 
   
متعلقہ کالم
25 مئی 2020 امریکی ریاست مینیسوٹا میں سیاہ فام جارج فلائیڈ کی سفید فام پولیس افسر کے ہاتھوں ہلاکت کے بعد سے امریکہ بھر میں احتجاج کا سلسلہ جاری ہے۔ امریکی پولیس کے ایسے مظالم طویل عرصے سے جاری ہیں۔
افغانستان میں قتل وغارت گری کے حالیہ واقعات نے طویل عرصے سے جنگ سے تباہ حال ملک بارے امن کی امید کو ناامیدی میں بدل رہے ہیں، کابل میں زچہ وبچہ وارڈ میں ماؤں اور نونہالوں کا قتل جاری خون ریزی کے بدترین واقعات میں اپنی جگہ بنا گیا ، ایک بار پھر یہ تاثر مضبوط ہوا کہ دہشت گرد عناصر کسی مذہبی و اخلاقی اصول پر پورے نہیں اترتے،
عالمی ادارہ صحت نے خدشہ کا اظہار کیا ہے کہ جولائی کے وسط تک پاکستان میں 2 لاکھ کورونا وائرس کے کیسز ہوسکتے ہیں، ڈبیلو ایچ او کو اس پر بھی تشویش ہے کہ سندھ اور پنجاب میں عالمی وبا سے متاثر افراد کی تعداد تیزی سے بڑھ رہی ،اس پر یہ دلیل بھی سامنے آچکی کہ لاک ڈاؤن میں مذید 2 ہفتوں کی توسیع کی ایک وجہ دراصل یہی ڈبلیو ایچ او کی وارننگ ہے
قارئین! معاف کیجئے گا ہم سدھرنے والے ہرگز نہیں، شاید دعائیں آسمانوں سے پلٹائی جارہی ہیں اس لئے بے اثر ہیں۔ اچھا ایسا ہے تو پھر ہمیں انفرادی و اجتماعی معاملات کا ٹھنڈے دل سے جائزہ لینا ہوگا۔

مزید خبریں
سید منور حسن مسلم امہ کا اثاثہ و سرمایہ تھے۔ ان کی وفات سے پیدا ہونے والا خلاء پر نہیں ہو سکے گا۔
کورونا وائرس پاکستان ہی نہیں ہی دنیا بھر میں اپنی پوری بدصورتی کے ساتھ متحرک ہے ، تشویشناک یہ ہےاس عالمی وباء کے نتیجے میں ہمارے ہاں اموات کا سلسلہ بھی شروع ہوچکا،
وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے کورونا وائرس کے مزید پھیلاؤ کے خطرے کو مدنظر رکھتے ہوئے اضلاع کی سطح پر قرنطینہ مرکز بنانے کی ہدایت کردی ہے۔
وزارت قانون و انصاف نے صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی کی منظوری سےخالد جاوید خان کو انور منصور کی جگہ پاکستان کا نیا اٹارنی جنرل تعینات کرنے کا باضابطہ نوٹی فیکیشن جاری کر دیا ہے۔

مقبول ترین
عراق میں امریکی سفارت خانے اور فوجی تنصیبات پر راکٹ داغے گئے تاہم امریکی ایئر ڈیفنس نے راکٹس کو فضا میں ہی ناکارہ بنا دیا۔ عالمی خبر رساں ادارے کے مطابق عراق کے ریڈ زون ایریا میں واقع امریکی سفارت خانے پر ایک راکٹ داغا گیا جسے
اسلام آباد میں نیوز کانفرنس کرتے ہوئے زلفی بخاری کا کہنا تھا کہ پاکستان ٹوورازم ڈویلپمنٹ کارپوریشن (پی ٹی ڈی سی) بند نہیں ہوا بلکہ فائدہ مند ادارہ بننے جا رہا ہے۔ اس ادارے نے لاکھوں نوکریاں پیدا کرنی ہیں، ہمیں مشکل فیصلے کرنا ہوں گے۔
سی پیک اتھارٹی کے چیئرمین اور اطلاعات ونشریات کے معاون خصوصی لیفٹیننٹ جنرل ریٹائرڈ جنرل عاصم سلیم باجوہ نے کہا ہے کہ ایم ایٹ پر کام کا آغاز حکومت کی اولین ترجیح ہے۔ انہوں نے ایک ٹویٹ میں کہا کہ سینٹرل ڈیویلپمنٹ ورکنگ پارٹی نے
آئی ایس پی آر کے مطابق بھارتی فوج نے جنگ معاہدے کی خلاف ورزی کرتے ہوئے کنٹرول لائن پر بھاری ہتھیاروں سے فائرنگ کی، بٹل سیکٹر میں مارٹروں کی شیلنگ کر کے شہری آبادی کو نشانہ بنایا جس کی زد میں آ کر ایک 22 سالہ نوجوان زخمی ہو گیا۔

پاکستان
 
آر ایس ایس
ہمارے پارٹنر
ضرور پڑھیں
ریڈرز سروس
شعر و ادب
مقامی خبریں
آڈیو
شہر شہر کی خبریں