Wednesday, 14 November, 2018
قال اللہ وقال الرسول کی ایک اور آواز خاموش

قال اللہ وقال الرسول کی ایک اور آواز خاموش
تحریر: شہباز علی عباسی

 

ہماری بد قسمتی کہ پچھلے کئی سالوں سے ملک میں پھیلی دہشتگردی کی لہر نے نہ صرف قوم کے جریں سپوتوں کے سروں کے ساتھ فٹ بال کھیلے بلکہ کئی اہل علم بھی اس کی بھلی چڑھ گئے اور نجانے کتنی مزید جانیں درکار ہوں گی ان خون کے پیاسوں کو مگر ہر دور شاہد ہے کہ علماء کی قبیل سے تعلق رکھنے والوں نے نہ صرف فکر و اعتقاد کے باب میں خدمات سر انجام دیں بلکہ جب کبھی اخلاقیات,انسان دوستی اور معاشرہ عفریت کی نظر ہونے لگا تو انہوں نے ہی بڑھ کر نہ صرف مجاہدانہ کردار اداکیا بلکہ اپنی انتھک کوششوں سے یکسر نقشہ ہی تبدیل کر کے رکھ دیا اس میں کوئی شک نہیں کہ مذہب کے نام پر پھیلائی جانے والی نفرتیں اور تقسیم کا ایک لامتناہی سلسلہ ہے جس کے باعث ہمارا معاشرہ بالخصوص مختلف گروہی, لسانی اور مسلکی تقسیم کا شکار ہے اور اس گروہی تقسیم نے ہمیں نہ صرف ایک دوسرے سے دور کر دیا بلکہ ہم ایکدوسرے پر فسق وفجور اور تکفیریت کا لیبل چسپاں کرنے کا کوئی دقیقہ فروگزاشت نہیں کرتے لیکن ہمیں یہ بات نہیں بھولنی چاہیے کہ اہل علم پوری قوم کا سرمایہ ہوتے ہیں پھر چاہے وہ کسی بھی مسلک مذہب کے پیروکار ہوں خیر ہمیں تاریخ کے جھرونکوں سے اس بات کا بھی پتہ ملتا ہے کہ صاحبان اقتدار نے ہر دور میں اپنی بالا دستی قائم رکھنے کے لیے ہر اس چیز کو بطور ہتھیار استعمال کیا جو انکے لیے ممد ومعاون ثابت ہو سکتی تھی اسی کا شاخسانہ صلیبی جنگوں اور اسی قسم کی دوسری لڑائیاں ہیں مگر اس کے باوجود علماء حق یعنی علماء اسلام کی خدمات اور انسان دوستی سے مفر نہیں جسے خراج تحسین پیش کرتے ہوئے ڈاکٹر اقبال نے کہا تھا۔

حاضر ہوا جب میں شیخ مجدد کی لحد پر 
وہ خاک کہ ہے زیر فلک مطلع انوار 

یعنی قلندر لاہوری فرما رہے ہیں کہ علم رسول اور اقامت دین کے لیے قول رسول اور محبت و امن کی شمع فروزاں کرنے کے لیے قال اللہ و قال الرسول کی صدائیں بلند کرنے والوں کی قبور پرنہ صرف رحمت الہی کا نزول ہوتا ہے بلکہ ان قبور کی مٹی خاک شفا اور ان چوکھٹوں کی حاضری دنیاۓ دل بدل دیا کرتی ہے جس کی کئی مثالیں تاریخ کے اوراق میں تابندہ ہیں سو کہنے کی بات یہ ہے کہ دین کا جھنڈا اخلاص اور رضاۓ الہی کیخاطر بلند کیا جاۓ نہ کہ جاہ و حشمت اور پارلیمنٹ کے حصول کیخاطر لیکن یہ فیصلہ خداوندی ہے کہ جہاں خیر وہیں  شر بھی پایا جاتا ہے تاکہ متلاشیان حق کو پہچان ہو سکے شاید اسی لیے رحمت عالم نے ارشاد فرمایا تھا:

'انما خیارکم الذین اذارؤ ذکراللہ'•(او کما قال) 

اللہ کے دوست کی نشانی یہ ہے کہ انکے چہرے کی زیارت اللہ کے ذکر کی دعوت دیتی ہے.گویا جو چہرے اور زبانیں ذکر خداورسول کی طرف دعوت دیں وہی رب کے چیدہ چنیدہ ہیں..

حدیث مذکور کی روشنی میں دیکھا جاۓ تو دارلعلوم حقانیہ کے روح رواں سمیع الحق مرحوم کے شب و روز ترویج و اشاعت اسلام کے لیے وقف تھے آپ کی زندگی کا مقصد عظیم رسول خدا کی تعلیمات کا پرچار تھا آپ امت کو تعبیراتی اختلاف کے باوجود جسد واحد کی شکل میں دیکھنا چاہتے تھے مجھے یہاں شیخ الاسلام ڈاکٹر محمد طاہر القادری مدظلہ العالی کا وہ جملہ یاد آتا ہے آپ فرمایا کرتے ہیں بیٹا عالم دین کا خاصہ ہے کہ وہ علمی اختلاف کے باوجود اتحاد ووحدت کو نقصان نہیں پہنچاتا لہذا جوڑنے والے بنو نہ کہ توڑنے والے یہی میری نصیحت ہے-

میری دانست میں اسوقت ایسے ہی علماء کے خلاف ہرزہ سرائی جاری ہے پھر چاہے وہ شیخ الاسلام ہوں یا سمیع الحق مرحوم اس لیے کہ قدر مشترک قال اللہ و قال الرسول ہے۔ بہتی آنکھوں دکھتے دل اور لرزتی زبان کے ساتھ حقانی احباب کے ساتھ تعزیت اس جملے کے ساتھ

آہ ایک اور قال اللہ و قال الرسول کی آواز ہمیشہ ہمیشہ کے لیے خاموش ہو گئی...

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
نوٹ: مبصر ڈاٹ کام ۔۔۔ کا کالم نگار، بلاگر یا مضمون نگار کی رائے سے متفق ہونا ضروری نہیں ۔۔۔ اگر آپ بھی ہمارے لیے کالم / مضمون یا اردو بلاگ لکھنا چاہتے ہیں تو قلم اٹھائیے اور 500 الفاظ پر مشتمل تحریر اپنی تصویر، مکمل نام، فون نمبر اور مختصر تعارف کے ساتھ info@mubassir.com پر ای میل کریں۔ ادار

اپنا تبصرہ دینے کے لیے نیچے فارم پر کریں
   
نام
ای میل
تبصرہ
  25625
کوڈ
 
   
متعلقہ خبریں
سیاست میں سونامی کو عمران خان نے متعارف کروایا۔ وہ کئی برسوں سے تحریک انصاف کے سونامی کا ذکر کررہے ہیں اور ہم بھی کئی برسوں سے سونامی کا انتظار کررہے ہیں۔ اس میں شک نہیں کہ سیاسی تقریبات اور اجتماعات کو
محرم حرمت والا مہینہ ہے۔ اس کی حرمت عربوں میں ظہور اسلام سے پہلے بھی تھی۔ پیغمبراسلامؐ نے اس کے احترام کو باقی رکھا۔ 61 ہجری کے آغاز میں واقعۂ کربلا پیش آیا تو مسلمانوں میں اس مہینے کے احترام کی ایک اورنوعیت پیدا ہوگئی۔ اب اس کے ساتھ نواسۂ رسولؐ کی المناک شہادت کی یاد بھی وابستہ ہوگئی۔
موجودہ ملکی و بین الاقوامی صورتحال کے پیش نظراس وقت پاکستان کو اندرونی و بیرونی طور پربے شمار چیلنجز کا سامنا ہے۔ ڈان لیکس کی تحقیقاتی رپورٹ کے بعد آئی ایس پی آر

مزید خبریں
دنیا بھر میں بولی اور سمجھی جانی والی زبانوں میں سے اردو ہندی دنیا کی دوسری بڑی زبان بن چکی ہے، جبکہ اول نمبر پر آنے والی زبان چینی ہے اور انگریزی کا نمبر تیسرا ہے۔ روزنامہ ’واشنگٹن پوسٹ‘ نے یونیورسٹی آف ڈیسلڈرف الرچ کی 15 برس کی مطالعاتی رپورٹ
ہمارے نیم حکیموں کو کون سمجھائے کہ بلکتے، سسکتےعوام کو جمہوریت سے بدہضمی ہونے کا خوف دلانا چھوڑ دیجئے حضور! 144 معالجین کے مطابق انسانی معدے کی خرابی تمام بیماریوں کی ماں ہوتی ہے اور معدے کی خرابی سے ہی بدہضمی، ہچکی، متلی، قے، ہاتھوں میں جلن کا احساس، بھوک کا نہ لگنا، پژمردگی اور چہرے پر افسردگی کے اثرات چھائے
یہ سوال انتہائی اہم ہے کہ پارلیمنٹ لاجز میں ہونے والی غیر اخلاقی حرکتوں کے متعلق جمشید دستی کو کس نے ویڈیو ثبوت اور ”ناقابل تردید“ ثبوت فراہم کیے ہیں؟ یہ سوال بھی اہم ہے کہ آخر جمشید دستی نے یہ ا یشو کیوں چھیڑا ؟ اس کے نتیجے میں جو صورتحال پیش آسکتی ہے اس کے دور رس نتائج نکل سکتے ہیں۔
دہشت گردوں کی طرف سے جنگ بندی کے اعلان کے صرف 48 گھنٹے بعد ہی دارالحکومت اسلام آباد کودہشت گردی کا نشانہ بنادیا گیا۔

مقبول ترین
خیبر پختون خوا پولیس کے اعلیٰ افسر ایس پی طاہر داوڑ کا جسد خاکی افغانستان نے پاکستان کے حوالے کردیا ہے۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ شہید ایس پی طاہر داوڑ کا جسد خاکی جلال آباد میں پاکستان قونصل خانے کے اعلیٰ عہداروں کے حوالے کر دیا گیا ہے
سابق وزیراعظم نواز شریف نے العزیزیہ ریفرنس میں صفائی کا بیان قلمبند کرانا شروع کر دیا۔ پہلے روز 50 عدالتی سوالات میں سے 45 کے جواب ریکارڈ کرا دیئے۔ باقی سوالات پر وکیل خواجہ حارث سے مشاورت کے لیے وقت مانگ لیا۔
فلسطین میں قابض اسرائیلی فوج کے معاملے پر اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کا بند کمرا اجلاس بے نتیجہ ختم ہوگیا۔ میڈیا کے مطابق غزہ میں قابض اسرائیلی فوج نے ظلم وبربریت کی انتہا کررکھی ہے، آئے دن نہتے فلسطینیوں کو فائرنگ کرکے موت کے گھاٹ
چند روز قبل اسلام آباد سے اغوا ہونے والے خیبر پختونخوا پولیس کے ایس پی طاہر خان داوڑ کو مبینہ طور پر افغانستان میں قتل کر دیا گیا۔ خیبر پختونخوا پولیس کے ایس پی طاہر خان داوڑ 27 اکتوبر کو اسلام آباد سے لاپتہ ہوئے تھے۔

پاکستان
 
آر ایس ایس
ہمارے پارٹنر
ضرور پڑھیں
ریڈرز سروس
شعر و ادب
مقامی خبریں
آڈیو
شہر شہر کی خبریں