Monday, 06 July, 2020
تکبر عزازیل را خار کرد - به زندان لعنت گرفتار کرد

تکبر عزازیل را خار کرد - به زندان لعنت گرفتار کرد

پرندہ درویش از فیصل ایچ نتھوکہ

یہ فارسی اشعار مرشد اقبال ؒ مولانا روم کے ہیں جس میں شیطان کا حوالہ دیتے ہوئے مولانا فرما رہے کہ ابلیس کو تکبر نے برباد کر دیا اور اپنے علم پر غرور کرنے کی وجہ سے لعنتی ہو گیا۔ شیطان نے حضرت آدم علیہ السلام کو کمتر سمجھا اور خود کو افضل و اعلی جانا اور ہمیشہ کیلئے لعنت کا مستحق ٹھہرا۔ 

   عزیزان محترم ! کسی مومن مرد و عورت کی آبروریزی کرنا کسی بھی ایسی بات پر چاہے اس میں وہ خامی موجود ہو یا نہ ہو سخت گناہ بھی ہے اور معاشرتی حوالہ سےبھی اس کے بہت سارے نقصانات بھی ہیں ۔ جب آپ کسی پر طنزیہ جملہ کستے ہیں یا اس کی کسی بھی بات کا مذاق اڑاتے ہیں یا کسی غلطی پر سرزنش کے بہانے اس کی تذلیل کرتے ہیں تو اصل میں آپ اس کی شخصیت کو پامال کر رہے ہوتے ہیں جو کہ قطعا قابل قبول نہیں ہے۔ یاد رکھیے جو کسی کی آبروریزی کرتا ہے خداوند متعال اس کی عزت معاشرے میں کم کر دیتا ہے جو بظاہر نظر نہ آنے والی چیز ہے لیکن آہستہ آہستہ اس کے اثرات آنا شروع ہو جاتے ہیں اور وہ شخص تکبر کی وجہ دنیا میں ذلت کی مثال بن کر رہ جاتا ہے۔ اس میں کوئی شک نہیں کہ عزت اور ذلت میرے اللہ کے پاس ہے جسے چاہے عزت دے اور جسے چاہے ذلت دے۔ جب اللہ کے مقرب بندوں میں شامل ہو جائیں گے تو یقینا اللہ ہمیں عزت سے نوازے گا۔ 

 مذاق اڑانا کے حوالے اللہ تعالی نے واضح الفاظ میں قرآن حکیم میں آیت نازل کی ہے جس سے اس موضوع کی سنجیدگی کا اندازہ لگایا جا سکتا ہے۔ 

            ”اے ایمان والو! نہ مردوں کی کوئی جماعت دوسرے مردوں کا مذاق اڑائے ممکن ہے وہ ان سے بہتر ہوں اور نہ عورتیں دوسری عورتوں کا مذاق اڑائیں کیا عجب وہ ان سے بہتر نکلیں۔ (الحجرات 11:49)

           معزز قارئین اخلاق حسنہ کا بھی درس یہی ہے کہ کسی کو بھی اپنے سے کمتر یا حقیر مت جانیں اور تکبر کی بھی ابتداء یہی ہے لازمی بات ہے جب آپ کسی کا مذاق اڑاتے ہیں تو اس کا مطلب آپ اس کو خود سے کمتر جانتے ہوئے اس کی تحقیر کرتے ہیں۔  مذاق اڑانا ایک شخص کی تحقیر کرنا اور اسے بے عزت کرنا ہے۔ اسی لئے روایات  میں کسی کی آبرو  کو نقصان پہچانے کی واضح الفاظ میں مذمت کی گئی ہے۔ 

حضرت علی علیہ السلام کاقول ہے۔۔۔۔۔کہ جناب رسول خدا صلی اللہ علیہ و الہ وسلم نے فرمایا ۔۔۔۔جو کوئی کسی مسلمان کی آبروریزی کرے گا تو اس پر اللہ اس کے فرشتوں اور تمام لوگوں کی لعنت ہوتی ہے اس کی نفل اور فرض عبادت قبول نہیں ہوگی

دوسری جانب تکبر کی قرآ ن و حدیث  میں سخت الفاظ میں مذمت بیان ہوئی ہے۔

 

أَلَيْسَ فِي جَهَنَّمَ مَثْوًى لِلْمُتَكَبِّرِينَ 

 

 (کیا جہنم ان لوگوں کی جگہ نہیں جو متکبر ہیں)  سورة {الزمر} آیت نمبر {۶۰}

 

عبداللہ بن مسعود رضی اللہ تعالیٰ عنہ سے روایت ہے کہ نبی صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم نے ارشاد فرمایا کہ جس کے دل میں رائی کے دانہ کے برابر بھی تکبر ہوگا وہ جنت میں نہیں جائے گا اس پر ایک آدمی نے عرض کیا کہ ایک آدمی چاہتا ہے کہ اس کے کپڑے اچھے ہوں اور اس کی جو تی بھی اچھی ہو آپ صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم نے ارشاد فرمایا کہ اللہ جمیل ہے اور جمال ہی کو پسند کرتا ہے تکبر تو حق کی طرف سے منہ موڑنے اور دوسرے لوگوں کو کمتر سمجھنے کو کہتے ہیں۔

 

( صحیح مسلم:جلد اول:حدیث نمبر 266)

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
نوٹ: مبصر ڈاٹ کام ۔۔۔ کا کسی بھی خبر سے متفق ہونا ضروری نہیں ۔۔۔ اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔ علاوہ ازیں آپ بھی اپنا کالم، بلاگ، مضمون یا کوئی خبر info@mubassir.com پر ای میل کر سکتے ہیں۔ ادارہ

اپنا تبصرہ دینے کے لیے نیچے فارم پر کریں
   
نام
ای میل
تبصرہ
  77364
کوڈ
 
   
متعلقہ خبریں
آپ تبلیغی جماعت کے نصاب اور مولانا طارق جمیل کی ہر دور میں اپنائی گئی حکمت عملی سے اختلاف کریں- صرف موجودہ دور میں مولانا کے حالیہ حکمرانوں سے مراسم پر انگلی اٹھانا درست نہ ہوگا- اسی طرح مولانا سید جواد نقوی کے حالیہ بیان پر شور کرنے سے پہلے، مجالس کو علمی بنائیں کہ ان میں صرف اہل بیت اطہار کا ذکر ہو اور ان میں خطاب کرنے والے ذاکر و خطباء، فیس کے چکر سے ماوراء ہو کر، خلوص کے ساتھ شریک ہوں؛ تب مولانا کی بات غلط قرار پائے گی-
عزیزان! یہ خود آشنائی کا سفر جو آپ کو رب آشنائی تک لے جائے اس کا راز خلوت ہے جو رات کی تیرگی میں پنہاں ہے جو اسے درک کر لے اُس کی رسائی رب تک ممکن ہو جاتی ہے۔ دعا ہے اللہ تعالٰی ہم سب کو تمسک بالدین و نماز شب عطا فرمائے۔ (آمین)
شنید ہے کہ ابھی تک احساس پروگرام کے تحت دیئے جانے والے بارہ ہزار روپے، پہلے مرحلے میں اُن افراد کو دیئے گئے ہیں؛ جن کا نام بے نظیر انکم سپورٹ پروگرام یا سابقہ ادوار میں کئے گئے، غربت کے حوالے سے مختلف سروے میں شامل تھا۔

مزید خبریں
کورونا وائرس پاکستان ہی نہیں ہی دنیا بھر میں اپنی پوری بدصورتی کے ساتھ متحرک ہے ، تشویشناک یہ ہےاس عالمی وباء کے نتیجے میں ہمارے ہاں اموات کا سلسلہ بھی شروع ہوچکا،
کی سڑک کے کنارے ایک ہوٹل میں چائے پینے کے لیے رکا تو ایک مقامی صحافی دوست سے ملاقات ہوگئی جنہیں سب شاہ جی کہتے ہیں سلام دعا کے بعد شاہ جی سے پوچھا کہ ٹیکنالوجی کی وجہ سے پاکستان کتنا تبدیل ہوچکا ہے تو کہنے لگے کہ سوشل میڈیا کی وجہ سےعدم برداشت میں بہت اضافہ ہوا ہے۔
میرے پڑھنے والو،میں ایک عام سی،نا سمجھ ایک الہڑ سی لڑکی ہوا کرتی تھی، بات بات پہ رو دینا تو جیسے میری فطرت کا حصہ تھا، اور پھربات بے بات ہنسنا میری کمزوری، یہ لڑکی دنیا کے سامنے وہی کہتی اور وہی کرتی تھی جو یہاں کے لوگ سن اور سمجھ کر خوش ہوتے تھے
صبح سویرے اسکول جاتے وقت ہم عجیب مسابقت میں پڑے رہتے تھے پہلا مقابلہ یہ ہوتا تھا کہ کون سب سے تیز چلے گا دوسرا شوق سلام میں پہل کرنا۔ خصوصاً ساگری سے آنیوالے اساتذہ کو سلام کرنا ہم اپنے لیے ایک اعزاز تصور کرتے تھے۔

مقبول ترین
عراق میں امریکی سفارت خانے اور فوجی تنصیبات پر راکٹ داغے گئے تاہم امریکی ایئر ڈیفنس نے راکٹس کو فضا میں ہی ناکارہ بنا دیا۔ عالمی خبر رساں ادارے کے مطابق عراق کے ریڈ زون ایریا میں واقع امریکی سفارت خانے پر ایک راکٹ داغا گیا جسے
اسلام آباد میں نیوز کانفرنس کرتے ہوئے زلفی بخاری کا کہنا تھا کہ پاکستان ٹوورازم ڈویلپمنٹ کارپوریشن (پی ٹی ڈی سی) بند نہیں ہوا بلکہ فائدہ مند ادارہ بننے جا رہا ہے۔ اس ادارے نے لاکھوں نوکریاں پیدا کرنی ہیں، ہمیں مشکل فیصلے کرنا ہوں گے۔
سی پیک اتھارٹی کے چیئرمین اور اطلاعات ونشریات کے معاون خصوصی لیفٹیننٹ جنرل ریٹائرڈ جنرل عاصم سلیم باجوہ نے کہا ہے کہ ایم ایٹ پر کام کا آغاز حکومت کی اولین ترجیح ہے۔ انہوں نے ایک ٹویٹ میں کہا کہ سینٹرل ڈیویلپمنٹ ورکنگ پارٹی نے
آئی ایس پی آر کے مطابق بھارتی فوج نے جنگ معاہدے کی خلاف ورزی کرتے ہوئے کنٹرول لائن پر بھاری ہتھیاروں سے فائرنگ کی، بٹل سیکٹر میں مارٹروں کی شیلنگ کر کے شہری آبادی کو نشانہ بنایا جس کی زد میں آ کر ایک 22 سالہ نوجوان زخمی ہو گیا۔

پاکستان
 
آر ایس ایس
ہمارے پارٹنر
ضرور پڑھیں
ریڈرز سروس
شعر و ادب
مقامی خبریں
آڈیو
شہر شہر کی خبریں