Monday, 18 November, 2019
ایٹمی ہتھیاروں کے عدم پھیلاؤ کا عالمی دن

ایٹمی ہتھیاروں کے عدم پھیلاؤ کا عالمی دن

 

اسلام آباد ۔ دنیا بھر میں آج جوہری تجربات کیخلاف عالمی دن منایا جا رہا ہے۔  دنیا بھر میں ایٹمی ہتھیاروں کا پھیلاؤ تشویشناک صورتحال اختیار کرتا جا رہا ہے۔ اس صورتحال کے خلاف عالمی سطح پر شعور بیدار کرنے کے لئے اقوام متحدہ کی جانب سے 2 دسمبر 2009 ء کو اس دن کو منانے کا فیصلہ اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے 64 ویں اجلاس میں کیا گیا تھا۔ 

اجلاس میں اس بات کافیصلہ بھی کیا گیا تھاکہ دنیا کو ایٹمی ہتھیاروں سے پاک کیا جائے اور عالمی سطح پر جوہری ہتھیاروں کے ٹیسٹ پر پابندی لگائی جائے اور دنیا کو آنے والے وقتوں کے لئے محفوظ تر بنایا جائے۔

جوہری دھماکوں کے خلاف عالمی دن کے موقع پر اقوامِ متحدہ کے سیکرٹری جنرل کے دفتر سے جاری ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ دنیا میں گزشتہ سات دہائیوں میں 2000 جوہری تجربات کیے گئے۔

بیان کے مطابق یہ تجربات جنوبی بحرالکاہل، شمالی امریکہ، وسطی ایشیا سے لے کر شمالی افریقہ تک کیے گئے۔ اقوامِ متحدہ ہر سال 29 اگست کو جوہری دھماکوں کے خلاف عالمی دن کے طور پر مناتی ہے۔

اس دن کی مناسبت سے سیکرٹری جنرل انتونیو گوتیخش کے دفتر سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ یہ دن ماضی میں جوہری دھماکوں سے متاثرین کے احترام کے ساتھ ساتھ اس لیے منایا جاتا ہے تاکہ دنیا کو یہ یاد دہانی کرائی جائے کہ یہ دھماکے ماحولیات اور عالمی استحکام کے لیے مسلسل خطرہ ہیں۔

سیکرٹری جنرل کی طرف سے کہا گیا کہ اس بات کو یقینی بنانے کے لیے کہ کوئی ملک مزید جوہری دھماکا نہ کرے، نیوکلیئر ٹیسٹ بین ٹریٹی (سی ٹی بی ٹی) پر مکمل عمل درآمد کو یقینی بنایا جائے۔

اُنھوں نے تمام ممالک پر زور دیا کہ وہ جوہری دھماکے نہ کرنے سے متعلق معاہدے ’سی ٹی بی ٹی‘ پر دستخط کریں۔

اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل نے مزید کہا ہے کہ گزشتہ 20 برس سے ممالک کی طرف سے رضا کارانہ طور پر جوہری تجربات نہ کرنے پر عمل درآمد کیا جاتا رہا، لیکن اس کے باوجود شمالی کوریا واحد ملک ہے جو ایسے تجربات کرتا آیا ہے۔

سی ٹی بی ٹی سے متعلق اقوام متحدہ میں پیش کردہ قرارداد کے حق میں پاکستان ووٹ دیتا آیا ہے لیکن اس کا موقف رہا ہے کہ جب تک نئی دہلی اس معاہدے پر دستخط نہیں کرتا، پاکستان اس کی توثیق نہیں کرے گا۔

واضح رہے کہ اس دن کا مقصد لوگوں کی توجہ اس جانب دلانا ہے کہ کئی دہائیوں سے ہونے والے جوہری تجربوں نے لوگوں اور ماحولیات کو کتنا نقصان پہنچایا ہے اس دن کے منانے کی تجویز قازقستان نے پیش کی تھی کیونکہ 61 سال پہلے سوویت یونین نے اس سرزمین پر سب سے پہلا جوہری تجربہ کیا تھا۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
نوٹ: مبصر ڈاٹ کام ۔۔۔ کا کالم نگار، بلاگر یا مضمون نگار کی رائے سے متفق ہونا ضروری نہیں ۔۔۔ اگر آپ بھی ہمارے لیے کالم / مضمون یا اردو بلاگ لکھنا چاہتے ہیں تو قلم اٹھائیے اور 500 الفاظ پر مشتمل تحریر اپنی تصویر، مکمل نام، فون نمبر اور مختصر تعارف کے ساتھ info@mubassir.com پر ای میل کریں۔ ادارہ

اپنا تبصرہ دینے کے لیے نیچے فارم پر کریں
   
نام
ای میل
تبصرہ
  41997
کوڈ
 
   
متعلقہ خبریں
حال ہی میں امریکہ کی سنٹرل انٹیلی جنس ایجنسی (سی آئی اے ) کی جانب سے ڈی کلاسیفائی کی گئی دستاویزات میں پاکستان کے سابق فوجی حکمران جنرل ضیا الحق کا ایک خط بھی شامل ہے
فرانسیسی نیوز ایجنسی اے ایف پی کے ایک جائزے کے مطابق افغانستان میں سرگرم طالبان ملکی سکیورٹی فورسز کی صفوں میں اندر تک رسائی کے لیے خوبصورت بچوں کو جنسی غلاموں کے طور پر استعمال کر رہے ہیں اور مؤثر حملے کر پا رہے ہیں۔

مقبول ترین
وزیراعظم عمران خان کا کہنا ہے کہ عدلیہ طاقتور اور کمزور کےلیے الگ قانون کا تاثر ختم کرے۔ ہزارہ موٹروے فیز 2 منصوبے کی افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ پچھلے دنوں کنٹینر
لاہور ہائیکورٹ نے سابق وزیراعظم اور مسلم لیگ ن کے قائد میاں محمد نواز شریف کا نام ای سی ایل سے نکالتے کا حکم دیتے ہوئے انہیں 4 ہفتے کیلئے بیرون ملک جانے کی اجازت دیدی جبکہ عدالت کی طرف سے کوئی گارنٹی نہیں مانگی گئی۔
وفاقی دارالحکومت اسلام آباداور کراچی سمیت ملک کے مختلف شہروں میں جمعیت علماء اسلام (ف) کے کارکنوں نے دھرنے دے کر سڑکیں بلاک کردیں۔ مولانا فضل الرحمان کے آزادی مارچ کے ’پلان بی‘ کے تحت ملک بھر میں دھرنوں کا سلسلہ
وفاقی حکومت اور نیب کی جانب سے موقف اختیار کیا گیا تھا کہ لاہور ہائیکورٹ کو درخواست پر سماعت کا اختیار نہیں جبکہ نواز شریف کے وکیل نے موقف اختیار کیا کہ عدالت کے پاس کیس سننے کا پورا اختیار ہے۔ عدالت نے درخواست کو قابل سماعت قرار

پاکستان
 
آر ایس ایس
ہمارے پارٹنر
ضرور پڑھیں
ریڈرز سروس
شعر و ادب
مقامی خبریں
آڈیو
شہر شہر کی خبریں