Monday, 21 May, 2018
’’سینٹرل ایشیا کا گیٹ وے ۔۔۔ گوادر‘‘

’’سینٹرل ایشیا کا گیٹ وے ۔۔۔ گوادر‘‘
تحریر: ظریف بلوچ

گوادر جوکہ بلوچستان کا ایک جنوبی ساحلی شہر ہے اور تین اطراف سمندر میں واقع ہونے کی وجہ سے یہ ایک جزیرہ نما شہر ہے۔ اور گوادر بلوچستان کی ساحلی شہر ہونے کے ساتھ سینٹرل ایشیا کا گیٹ وے بھی کہلاتا ہے اور گوادر کی اہمیت اس وقت مذید اجاگر ہوا جب 2002میں گوادر پورٹ کی تعمیر کا آغاز ہوا اور گوادر پورٹ دنیا کی ایک گہری بندرگاہ ہے جو کہ اپنی افادیت اور اہمیت کی وجہ سے سینٹرل ایشیا کا گیٹ وے ہے۔ 

گوادر پورٹ نہ صرف معاشی حوالے سے اہم ہے بلکہ عسکری حوالے سے بھی گوادر پورٹ کی اہمیت ہے ۔اس کے ساتھ ساتھ گوادر کی گہری سمندر جو کہ  بین الاقوامی بحری جہازوں کے لئے ایک آبی گزرگاہ بھی ہے۔گوادر کو ملک اور بین الاقوامی دنیا سے ملانے کے لئے سی پیک کا منصوبہ بھی مکمل ہوچکا ہے جسے مقتدر حلقے ملکی معیشیت کے لئے ایک سنگ میل سمجھتے ہیں کیونکہ سی پیک منصوبے کے تحت چیالیس بلین ڈالرز کی میگا پروجیکٹس کے منصوبے ہیں اور ان منصوبوں سے لاکھوں روزگار کے ذرائع پیدا ہوں گے۔ گوادر انٹرنیشنل ائیر پورٹ اور ریلوے لائن کے منصوبے بھی اس میگا پروجیکٹس کے لئے مختص کردئیے گئے۔ کیونکہ گوادر پورٹ سے کئی اور منصوبے بھی علاقے کی ترقی اور خوشحالی کے لئے شروع کئے جائیں گے جو کہ ملک اور بلوچستان کے عوام کی ترقی اور خوشحالی کے نئے دور کے آغاز ہوں گے۔ 

گوادر جو کہ سی پیک کا مرکز ہے گوادر پورٹ کے چیرمین دوستین جمالدینی  نے گوادر پورٹ کی اہمیت بیان کرتے ہوئے کہا کہ گوادر پورٹ مکران کا پہلا بڑا پورٹ ہے اور اس سے مکران اور پورے صوبے کو صنعت کے حوالے سے فروغ ملے گا اور کئی صنعتی منصوبے شروع ہوں گے۔ اور اس سے نہ صرف صوبے کی معشیت میں اضافہ ہوگا بلکہ علاقے میں بے روزگاری میں کمی ہوگی اور جی ڈی پی کی شرح میں اضافہ کے ساتھ ساتھ علاقے میں ترقی اور خوشحالی کے نئے دور کا آغاز ہوگا ان کا مذید کہنا تھا کہ گوادر پورٹ سے شہر اور ضلع کی اکنامک میں اضافہ ہوگا اور اس سے گوادر میں بے روزگاری کا خاتمہ ہوگا.انہوں نے کہا کہ گوادر پورٹ میں ملازمت کے حوالے سے مقامی لوگوں کو ترجیح دیا جارہا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ حکومت پاکستان کی ہدایات اور مقامی آبادی کے تعاون سے گوادر پورٹ تیز رفتار ترقی کی طرف گامزن ہے۔اور اس حوالے سے تمام سٹیک ہولڈر اور متعلقہ حکام کے ساتھ ملکر گوادر کو پاکستان اور جنوبی ایشیا کا معاشی حب بنایا جائے گا۔  گوادر کے سماجی شخصیت میر ابوبکر دشتی کا کہنا ہے کہ گوادر پورٹ اور سی پیک سے بلوچستان اور

 گوادر میں ترقی اور خوشحالی کا دور شروع ہوگا۔انکا کہنا ہے کہ ترقی کے ثمرات سے فائدہ مقامی لوگوں کو ملنا چاہئے اور ہیاں کے بزنس کمیونٹی کو اس سے استفادہ کرنا ہوگا۔۔ مقامی صحافی غلام یاسین بزنجو گوادر پورٹ کی اہمیت پر روشنی ڈالتے ہوئے کہتا ہے کہ گوادر پورٹ ایک اہم بندرگا ہے۔ کیونکہ دنیا میں اس وقت وہی ملک یا خطے خود کفیل سمجھے جاتے ہیں جو کہ اپنے پورٹ اور سمندری راستوں پر انحصار کرتے ہیں  ان کا کہنا ہے کہ  ہماری خوش قسمتی ہے کہ گوادر پورٹ بلوچستان کے پسماندہ علاقے میں موجود ہے. جس سے نہ صرف ہمیں اس سے استفادہ کا موقع ملے گا ، بلکہ دنیا کے دیگر ممالک بھی ہماری مدد سے اپنے تجارتی ساز و سامان دنیا بھر میں پہنچانے میں کامیاب ہوں گے  ۔ ان کے مطابق  سی پیک کوئی عام روٹ نہیں ہے  بلکہ سی پیک کے ساتھ انرجی سیکٹر سمیت بہت سارے دیگر پروجیکٹس شامل ہیں جس سے نہ صرف ہماری نوجوان نسل برسرروزگار ہوں گے بلکہ اس سے نئے ذرائع اور پیدا ہوںگے ۔  

چیرمین گوادر پورٹ دوستین جمالدینی نے کہا کہ گوادر پورٹ سی پیک کا اہم جز ہے اور اس سے بلوچستان کے جنوبی علاقوں میں معاشی ترقی اور روزگار کے نئے مواقع پیدا ہوں گے۔ ان کا کہنا تھا کہ گوادر پورٹ اور سی پیک سے بلوچستان کی پسماندگی اور روزگار کی کمی کو دور کرنے کے لئے اقدامات کئے جارہے ہیں۔ اور گوادر پورٹ بلوچستان کی ترقی اور خوشحالی کے لئے اہم سنگ میل ثابت ہوگا۔

گوادر پورٹ کو دنیا سے ملانے کے لئے سی پیک روٹ کے ساتھ ساتھ گوادر میں انٹرنیشنل ہوائی اڈے پر کام ہورہا ہے جبکہ ریلوے نظام کے ذرئعے گوادر کو دنیا کے دیگر ممالک سے ملایا جائے گا۔ اس حوالے سے دوستین جمالدینی کہتے ہیں کہ روڈ اور ریلوے نظام سے گوادر پورٹ کو نہ صرف ملک بلکہ ہمسایہ ممالک سے ملایا جارہا ہے جس سے علاقے میں معاشی استحکام آئے گی اور روزگار کے نئے ذرائع پیدا ہوں گے ۔

ان کا مذید کہنا تھا کہ گوادر پورٹ کی وجہ سے مکران کے تین شہر اکنامک سنٹر ہوں گے۔ گوادر۔پسنی اور تربت اکنامک سنٹر میں منتقل ہوں گے اور اس حوالے سے صوبائی حکومت شارٹ ٹو مڈم ٹرم سٹی پلان تیار کررہا ہے انہوں نے کہا گوادر پورٹ سے سیاسی۔سماجی اور معاشی حوالے سے مقامی لوگ مسفید ہوں گے۔ 

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
نوٹ: مبصر ڈاٹ کام ۔۔۔ کا کالم نگار، بلاگر یا مضمون نگار کی رائے سے متفق ہونا ضروری نہیں ۔۔۔ اگر آپ بھی ہمارے لیے کالم / مضمون یا اردو بلاگ لکھنا چاہتے ہیں تو قلم اٹھائیے اور 500 الفاظ پر مشتمل تحریر اپنی تصویر، مکمل نام، فون نمبر اور مختصر تعارف کے ساتھ info@mubassir.com پر ای میل کریں۔ ادارہ

اپنا تبصرہ دینے کے لیے نیچے فارم پر کریں
   
نام
ای میل
تبصرہ
  73313
کوڈ
 
   
متعلقہ خبریں
اکثر جب ہم بازار جاتے ہیں تو ہمیں مردانہ آواز مگر زنانہ لباس زیب تن کئے ہوئے کوئی آواز پیچھے سے آتی ہے کہ ’’اے بابو کچھ دے دو‘‘اور جب ہم مڑ کر دیکھتے ہیں تو کوئی خواجہ سرا پیچھے کھڑا ہوتا ہے بعض افراد تو اس تیسری جنس کو کچھ نہ کچھ
تاریخ گواہ ہے معاشرے میں غلط چیز کو پروان چڑھانا ایسی چنگاری ثابت ہوتی ہے جس کے لپیٹ سے کوئی بھی نہیں بچ سکتا ہے۔ فلسطین میں ایک لڑکی نے پہلا خودکش دہماکہ کیا جسے مسلم دنیا میں ایک ہیروئن کی طورپر پیش کیا گیا۔
فرحت اللہ بابرمسلسل سماجی موضوعات پہ آواز اٹھانے کی وجہ سے ایک باعزت سیاستدان اور سماجی رہنما کے طور پر پہچانے جاتے ہیں ۔ وہ ایک فلسفی کی طرح سوچتے ہیں اور اس پرعمل کرتے ہیں ۔
پاکستان کی ترقی کا دارومدار تعلیم یافتہ نوجوان نسل پر مبنی ہے ۔لیکن ان جوانوں کی لیڈنگ کرنے کے لئے تعلیم یافتہ لیڈر کی ضرورت ہے۔پاکستان حاصل کرنے کے لئے اگر قائد اعظم جیسے عظیم لیڈر کی ضرورت پڑی تھی تو پاکستان کی بقا کے

مزید خبریں
دنیا بھر میں بولی اور سمجھی جانی والی زبانوں میں سے اردو ہندی دنیا کی دوسری بڑی زبان بن چکی ہے، جبکہ اول نمبر پر آنے والی زبان چینی ہے اور انگریزی کا نمبر تیسرا ہے۔ روزنامہ ’واشنگٹن پوسٹ‘ نے یونیورسٹی آف ڈیسلڈرف الرچ کی 15 برس کی مطالعاتی رپورٹ
ہمارے نیم حکیموں کو کون سمجھائے کہ بلکتے، سسکتےعوام کو جمہوریت سے بدہضمی ہونے کا خوف دلانا چھوڑ دیجئے حضور! 144 معالجین کے مطابق انسانی معدے کی خرابی تمام بیماریوں کی ماں ہوتی ہے اور معدے کی خرابی سے ہی بدہضمی، ہچکی، متلی، قے، ہاتھوں میں جلن کا احساس، بھوک کا نہ لگنا، پژمردگی اور چہرے پر افسردگی کے اثرات چھائے
یہ سوال انتہائی اہم ہے کہ پارلیمنٹ لاجز میں ہونے والی غیر اخلاقی حرکتوں کے متعلق جمشید دستی کو کس نے ویڈیو ثبوت اور ”ناقابل تردید“ ثبوت فراہم کیے ہیں؟ یہ سوال بھی اہم ہے کہ آخر جمشید دستی نے یہ ا یشو کیوں چھیڑا ؟ اس کے نتیجے میں جو صورتحال پیش آسکتی ہے اس کے دور رس نتائج نکل سکتے ہیں۔
دہشت گردوں کی طرف سے جنگ بندی کے اعلان کے صرف 48 گھنٹے بعد ہی دارالحکومت اسلام آباد کودہشت گردی کا نشانہ بنادیا گیا۔

مقبول ترین
بھارتی ریاست مدھیہ پردیش میں ہندو انتہا پسندؤں نے ایک اور مسلمان کو گائے کے ذبیحہ کے الزام میں قتل کر دیا۔ بھارتی میڈیا کے مطابق بھارتی ریاست مدھیہ پردیش کے ضلع ساتنا میں انتہا پسند ہندؤں کے ہجوم نے 2 مسلمانوں ریاض خان اور شکیل پر گائے کو ذبح
مشیر خزانہ بلوچستان رقیہ ہاشمی نےساتھی اراکین کے ناروا رویے کے خلاف عہدے سے استعفادے دیا. ذرائع کے مطابق 14مئی کو بجٹ پیش کرنے کی تقریر کے دوران ساتھی اراکین کی جانب سے نازیبا الفاظ استعمال کرنے پر مشیر خزانہ نے احتجاجاً
وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے امریکی ریاست ٹیکساس کے ہائی اسکول میں فائرنگ کے نتیجے میں جاں بحق ہونے والی طالبہ سبیکا کے گھر کا دورہ کیا اور ان کے والد سے تعزیت کی۔ اس موقع پر وزیراعظم نے کہا کہ سبیکا پاکستان کی ہونہار طالبہ تھی
دنیا کے پہلے تیرتے ہوئے نیوکلیئر پاور اسٹیشن کی رونمائی گزشتہ روز روس کے شمالی شہر مرمینسک میں ایک شاندار تقریب کے دوران ہوئی جہاں سائبیریا روانگی سے قبل اس میں نیوکلیئر فیول ڈالا جائے گا۔ نیو کلیئر پاور اسٹیشن

پاکستان
 
آر ایس ایس
ہمارے پارٹنر
ضرور پڑھیں
ریڈرز سروس
شعر و ادب
مقامی خبریں
آڈیو
شہر شہر کی خبریں