Wednesday, 21 February, 2018
میانمار حکومت مسلمانوں کے قتل عام میں براہ راست ملوث ہے، ایرانی سپریم لیڈر

میانمار حکومت مسلمانوں کے قتل عام میں براہ راست ملوث ہے، ایرانی سپریم لیڈر

تہران۔ ایرانی سپریم لیڈر سید علی خامنہ ای نے کہا ہے کہ میانمار میں ہونے والے انسانی قتل عام پر عالمی خاموشی نے امن کے نوبل انعام کی اہمیت کو ختم کر دیا ہے ۔

سید علی خامنہ ای نے میانمار کے دلخراش اور اندوہ ناک واقعات پر عالمی اداروں کی خاموشی اور کسی عملی اقدام کی طرف نہ بڑھنے پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئےحقوق بشر کے دعوے کرنے والوں پر سخت تنقید کی اور تاکید کرتے ہوئے کہا کہ اس مسئلہ کا حل صرف یہی ہے کہ مسلمان حکومتیں میانمار کی ظالم حکومت  کے خلاف عملی قدم اٹھائیں  اور اس پر سیاسی و معاشی دباؤ بڑھائیں۔ انہوں نے ایرانی حکومت سے بھی کہا کہ  دنیا میں کہیں بھی ہونے والے ظلم کے خلاف اپنا شجاعانہ موقف واضح کرے۔

انہوں نے میانمار میں مسلمانوں کے وسیع قتل عام کو مسلمانوں اور بودائیوں کے درمیان ایک جھڑپ قرار دینے کی مذمت کی اور کہاکہ  ممکن ہے کہ ان واقعات میں مذہبی تعصب کار فرما ہو لیکن حقیقت میں یہ ایک سیاسی مسئلہ ہے کیونکہ اس میں میانمار کی ظالم و جابر حکومت براہ راست ملوث ہے۔ انہوں نے نوبل انعام یافتہ خاتون رہنما آنگ سان سوچی کا حوالہ دیتے ہوئے کہا: ان وحشت ناک اور دہشت گردی کے واقعات میں وہ نوبل انعام یافتہ  ظالم و بے رحم عورت بھی سر فہرست ہے اور اس کی خاموشی سے امن کا نوبل انعام اپنی موت آپ مر گیا ہے۔

انہوں نے کہاکہ  میانمار کی ظالم و جابر حکومت کی طرف سے انجام دیے جانے والے  یہ دل کو دہلا دینے والے واقعات مسلمان ممالک ، اسلامی حکومتوں، عالمی اداروں ، ریا کار اور حقوق بشر کے جھوٹے دعوے کرنے والوں کی آنکھوں کے سامنے ہو رہے ہیں لیکن ہر کوئی چپ سادھے بیٹھا ہے۔

اقوام متحدہ کی جانب سے میانمار کی ظالمانہ کارروائیوں کے خلاف صرف ایک مذمتی قرار داد منظور کر لینے پر سید علی خامنہ ای نے کہاکہ حقوق بشر کے جھوٹے دعویدار آج کہاں ہیں؟ جب یہ دعویدار کسی ملک میں ایک مجرم کو سزا دلوانے کی خاطر آسمان سر پر اٹھا لیتے ہیں کیا آج انہیں میانمار میں قتل عام ہونے ہوئے مسلمان اور ان کی جھونپڑیوں سے اٹھتے ہوئے آگ کے بادل نظر نہیں آ رہے ؟

مسلمان ممالک کی طرف سے اس جنگ میں شامل ہونے اور عملی اقدام کرنے کے حوالے سے وضاحت کرتے ہوئے آیت اللہ خامنہ ای نے کہا: عملی اقدام سے مراد لشکر کشی نہیں بلکہ اس سے مراد سیاسی، معاشی اور تجارتی دباو میں اضافہ کرنا  اور عالمی اداروں میں اس ظلم کے خلاف آواز بلند کرنا ہے ۔

ایرانی سپریم لیڈر سید علی خامنہ ای نے کہا ہے کہ میانمار حکومت کی ظالمانہ کارروائیوں کا جواب دینے کے لیے اسلامی سربراہی کانفرنس کا فوری انعقاد انتہائی ضروری ہے۔ انہوں نے ایرانی حکومت کو تاکید کرتے ہوئے کہا کہ  آج کی دنیا ظلم سے پُر دنیا ہے، ایرانی حکومت کو چاہیے کہ جہاں کہیں ظلم ہو رہا ہے، چاہے وہ صہیونی ریاست کی طرف سے فلسطین میں ہے، یمن ، بحرین یا میانمار میں ظلم ہو رہا ہے، ان کے خلاف آواز بلند کرے اور اپنا شجاعانہ موقف واضح کرے

اپنا تبصرہ دینے کے لیے نیچے فارم پر کریں
   
نام
ای میل
تبصرہ
  83830
کوڈ
 
   
متعلقہ خبریں
ایرانی بحریہ نے آبنائے ہْرمز میں اپنی سالانہ سمندری فوجی مشقوں کا آغاز کر دیا ہے۔ اس مرتبہ ان فوجی مشقوں میں ایرانی پاسدارانِ انقلاب کے دستے شامل نہیں ہیں۔ ان فوجی مشقوں میں ایرانی ایئرفورس کے علاوہ زمینی دستے بھی شریک ہوں گے۔
عراق کے دارالحکومت بغداد کے مصروف ترین علاقے میں یکے بعد دیگرے دو خود کش حملوں میں کم از کم 38 افراد ہلاک اور 100 کے قریب زخمی ہو گئے ہیں۔زخمیوں کو طبی امداد کے لیے قریبی اسپتالوں میں منتقل کر دیا گیاہے۔خود کش حملوں کے بعد سیکیورٹی فورسز نے علاقے کو گھیرے میں لے لیا ہے۔
سعودی حکومت کے اقدامات پر اپنے ایک آڈیو پیغام میں تنقید کرنے والے سعودی شہزادے کو اْن کے عہدے سے برطرف کر دیا گیا ہے۔ میری ٹائم اسپورٹس فیڈریشن کے سربراہ نےعبداللہ بن سعود نے سعودی شہزادوں کو گرفتار کرنے کے حکومتی فیصلے کو غیر منطقی قرار دیا تھا۔
سعودی حکومت کی جانب سے جاری کردہ رپورٹ میں بتایا گیا کہ شہزادوں، حکومتی عہدیدار اور کاروباری شخصیات سمیت زیرحراست 200سے زائد افراد کے کیسز جلد از جلد نمٹانے کی کوشش کی جارہی ہے۔

مزید خبریں
مسجد اقصیٰ کے امام وخطیب الشیخ اسماعیل نواھضہ نے برما میں مسلمانوں پر ڈھائے جانے والے مظالم کی شدید مذمت کی اور عالم اسلام پر زور دیا کہ وہ روہنگیا مسلمانوں کو ریاستی جبر وتشدد سے نجات دلانے کے لیے موثر اقدامات کریں
سعودی عرب کے فرمانروا شاہ عبداللہ بن عبدالعزیز نے ایک شاہی فرمان کے ذریعے انٹیلی جنس چیف شہزادہ بندر بن سلطان کو ان کی علالت کے پیش نظر عہدے سے ہٹا دیا ہے اور ان کی جگہ ان کے نائب یوسف الادریسی کو محکمہ سراغرسانی کا قائم مقام سربراہ مقرر کیا ہے۔
سعودی مفتی صالح الفیضان نے بوفے کیخلاف فتویٰ جاری کردیا۔جمعے کوسعودی مفتی نے سرکاری ٹی وی پرفتویٰ جاری کرتے ہوئے بوفے کوغیرشرعی قراردے دیا۔
سعودی ولی عہد شہزادہ سلمان بن عبدالعزیز نے چین پر زور دیا ہے کہ وہ دیرینہ فلسطینی تنازعے اور شام میں جاری بحران کو حل کرانے میں کردار ادا کرے۔

مقبول ترین
پاک فوج کے اضافی دستے سعودی عرب بھیجنے پر قومی اسمبلی میں بحث ہوئی ہے۔ میڈیا کے مطابق قومی اسمبلی میں پاک فوج کو سعودی عرب بھیجنے کا معاملہ پھر زیر بحث آیا۔ پاکستان تحریک انصاف کی رکن شیریں مزاری نے اظہار
وزیر مملکت اطلاعات و نشریات مریم اورنگزیب کا کہنا ہےکہ تمام اداروں کو اپنی آئینی حدود میں رہنا چاہیے۔ ان کا کہنا تھا کہ اپوزیشن لیڈر نے درست کہا ہے کہ ہم سے بھی غلطیاں ہوئیں اور جب سیاست دانوں پربھینس چوری کے پرچی کٹے تو غلطی تب بھی ہوئی۔
ایرانی دار الحکومت تہران میں سکیورٹی فورسز اور صوفی عقیدت مندوں کے درمیان ہونے والی جھڑپوں میں 6 افراد جاں بحق ہوگئے۔ تہران پولیس کے ترجمان بریگیڈیئر سعید منتظرالمہدی نے واقعے کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا کہ تہران کے
میڈیا کے مطابق سپریم کورٹ میں میڈیا کمیشن کیس کی سماعت کے دوران چیف جسٹس پاکستان جسٹس میاں ثاقب نثار نے ریمارکس دیئے کہ کل پیغام دیا گیا کہ عدالت قانون سازی میں مداخلت نہیں کر سکتی، میں نے بار بار کہا پارلیمنٹ سپریم ادارہ ہے

پاکستان
 
آر ایس ایس
ہمارے پارٹنر
ضرور پڑھیں
ریڈرز سروس
شعر و ادب
مقامی خبریں
آڈیو
شہر شہر کی خبریں