Saturday, 25 November, 2017
میانمار حکومت مسلمانوں کے قتل عام میں براہ راست ملوث ہے، ایرانی سپریم لیڈر

میانمار حکومت مسلمانوں کے قتل عام میں براہ راست ملوث ہے، ایرانی سپریم لیڈر

تہران۔ ایرانی سپریم لیڈر سید علی خامنہ ای نے کہا ہے کہ میانمار میں ہونے والے انسانی قتل عام پر عالمی خاموشی نے امن کے نوبل انعام کی اہمیت کو ختم کر دیا ہے ۔

سید علی خامنہ ای نے میانمار کے دلخراش اور اندوہ ناک واقعات پر عالمی اداروں کی خاموشی اور کسی عملی اقدام کی طرف نہ بڑھنے پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئےحقوق بشر کے دعوے کرنے والوں پر سخت تنقید کی اور تاکید کرتے ہوئے کہا کہ اس مسئلہ کا حل صرف یہی ہے کہ مسلمان حکومتیں میانمار کی ظالم حکومت  کے خلاف عملی قدم اٹھائیں  اور اس پر سیاسی و معاشی دباؤ بڑھائیں۔ انہوں نے ایرانی حکومت سے بھی کہا کہ  دنیا میں کہیں بھی ہونے والے ظلم کے خلاف اپنا شجاعانہ موقف واضح کرے۔

انہوں نے میانمار میں مسلمانوں کے وسیع قتل عام کو مسلمانوں اور بودائیوں کے درمیان ایک جھڑپ قرار دینے کی مذمت کی اور کہاکہ  ممکن ہے کہ ان واقعات میں مذہبی تعصب کار فرما ہو لیکن حقیقت میں یہ ایک سیاسی مسئلہ ہے کیونکہ اس میں میانمار کی ظالم و جابر حکومت براہ راست ملوث ہے۔ انہوں نے نوبل انعام یافتہ خاتون رہنما آنگ سان سوچی کا حوالہ دیتے ہوئے کہا: ان وحشت ناک اور دہشت گردی کے واقعات میں وہ نوبل انعام یافتہ  ظالم و بے رحم عورت بھی سر فہرست ہے اور اس کی خاموشی سے امن کا نوبل انعام اپنی موت آپ مر گیا ہے۔

انہوں نے کہاکہ  میانمار کی ظالم و جابر حکومت کی طرف سے انجام دیے جانے والے  یہ دل کو دہلا دینے والے واقعات مسلمان ممالک ، اسلامی حکومتوں، عالمی اداروں ، ریا کار اور حقوق بشر کے جھوٹے دعوے کرنے والوں کی آنکھوں کے سامنے ہو رہے ہیں لیکن ہر کوئی چپ سادھے بیٹھا ہے۔

اقوام متحدہ کی جانب سے میانمار کی ظالمانہ کارروائیوں کے خلاف صرف ایک مذمتی قرار داد منظور کر لینے پر سید علی خامنہ ای نے کہاکہ حقوق بشر کے جھوٹے دعویدار آج کہاں ہیں؟ جب یہ دعویدار کسی ملک میں ایک مجرم کو سزا دلوانے کی خاطر آسمان سر پر اٹھا لیتے ہیں کیا آج انہیں میانمار میں قتل عام ہونے ہوئے مسلمان اور ان کی جھونپڑیوں سے اٹھتے ہوئے آگ کے بادل نظر نہیں آ رہے ؟

مسلمان ممالک کی طرف سے اس جنگ میں شامل ہونے اور عملی اقدام کرنے کے حوالے سے وضاحت کرتے ہوئے آیت اللہ خامنہ ای نے کہا: عملی اقدام سے مراد لشکر کشی نہیں بلکہ اس سے مراد سیاسی، معاشی اور تجارتی دباو میں اضافہ کرنا  اور عالمی اداروں میں اس ظلم کے خلاف آواز بلند کرنا ہے ۔

ایرانی سپریم لیڈر سید علی خامنہ ای نے کہا ہے کہ میانمار حکومت کی ظالمانہ کارروائیوں کا جواب دینے کے لیے اسلامی سربراہی کانفرنس کا فوری انعقاد انتہائی ضروری ہے۔ انہوں نے ایرانی حکومت کو تاکید کرتے ہوئے کہا کہ  آج کی دنیا ظلم سے پُر دنیا ہے، ایرانی حکومت کو چاہیے کہ جہاں کہیں ظلم ہو رہا ہے، چاہے وہ صہیونی ریاست کی طرف سے فلسطین میں ہے، یمن ، بحرین یا میانمار میں ظلم ہو رہا ہے، ان کے خلاف آواز بلند کرے اور اپنا شجاعانہ موقف واضح کرے

اپنا تبصرہ دینے کے لیے نیچے فارم پر کریں
   
نام
ای میل
تبصرہ
  72345
کوڈ
 
   
متعلقہ خبریں
مصر کے دارالحکومت قاہرہ سے 200 کلو میٹر جبوب مشرق میں مغربی صحرا بہاریہ نخلستان میں عسکریت پسندوں کے ساتھ جھڑپوں میں افسران اور اہلکاروں سمیت 52 فوجی اہلکار ہلاک جبکہ متعدد زخمی ہو گئے ہیں۔ جبکہ مصر کی وزارت داخلہ نے کئی حملہ آوروں کی ہلاکت کا بھی دعویٰ کیا ہے۔
مقبوضہ بیت المقدس کے علاقے غرب اردن میں مسلح فلسطینی کی فائرنگ کے نتیجے میں اسرائیلی سیکیورٹی فورسز کے تین اہلکار ہلاک جبکہ ایک زخمی ہوگیا ہے جبکہ سیکیورٹی فورسز کی جوابی کارروائی میں حملہ آور ہلاک ہوگیا ہے۔
مصر میں اخوان المسلمون کے سابق سربراہ محمد مہدی عاکف 89 سال کی عمر میں دوران حراست انتقال کرگئے ہیں۔ وہ عمر کے آخری ایام میں کینسر سمیت مختلف امراض کا بھی شکار ہوگئے تھے اوران کا 10 ماہ سے کینسر کا علاج کیا جارہا تھا۔
مسجد اقصیٰ کے امام وخطیب الشیخ اسماعیل نواھضہ نے برما میں مسلمانوں پر ڈھائے جانے والے مظالم کی شدید مذمت کی اور عالم اسلام پر زور دیا کہ وہ روہنگیا مسلمانوں کو ریاستی جبر وتشدد سے نجات دلانے کے لیے موثر اقدامات کریں

مزید خبریں
مسجد اقصیٰ کے امام وخطیب الشیخ اسماعیل نواھضہ نے برما میں مسلمانوں پر ڈھائے جانے والے مظالم کی شدید مذمت کی اور عالم اسلام پر زور دیا کہ وہ روہنگیا مسلمانوں کو ریاستی جبر وتشدد سے نجات دلانے کے لیے موثر اقدامات کریں
سعودی عرب کے فرمانروا شاہ عبداللہ بن عبدالعزیز نے ایک شاہی فرمان کے ذریعے انٹیلی جنس چیف شہزادہ بندر بن سلطان کو ان کی علالت کے پیش نظر عہدے سے ہٹا دیا ہے اور ان کی جگہ ان کے نائب یوسف الادریسی کو محکمہ سراغرسانی کا قائم مقام سربراہ مقرر کیا ہے۔
سعودی مفتی صالح الفیضان نے بوفے کیخلاف فتویٰ جاری کردیا۔جمعے کوسعودی مفتی نے سرکاری ٹی وی پرفتویٰ جاری کرتے ہوئے بوفے کوغیرشرعی قراردے دیا۔
سعودی ولی عہد شہزادہ سلمان بن عبدالعزیز نے چین پر زور دیا ہے کہ وہ دیرینہ فلسطینی تنازعے اور شام میں جاری بحران کو حل کرانے میں کردار ادا کرے۔

مقبول ترین
اسلام آباد انتظامیہ کی جانب سے دھرنے کے شرکاء کو دی گئی 12 بجے کی ڈیڈ لائن ختم ہوگئی ہے تاہم فیض آباد کے مقام پر مظاہرین کی جانب سے دھرنا جاری ہے۔ بتایا جاتا ہے کہ انتظامیہ ڈیڈ لائن میں اضافہ کردیا ہے اور کہا ہے
دہشت گردی کے خلاف جنگ کے لیے سعودی عرب کی سربراہی میں قائم اسلامی ممالک کی افواج کے اتحاد کی سرکاری ویب سائٹ متعارف کرا دی گئی ہے۔ دہشت گردی مخالف اسلامی فوجی اتحاد‎ (آئی ایم سی ٹی سی) کی ویب
سعودی ولی عہد محمد بن سلمان کا کہنا ہے کہ کرپشن کے خلاف سعودی عرب میں ہونے والی حالیہ کارروائی کو تخت حاصل کرنے کی کوشش قرار دینا مضحکہ خیز ہے۔ انہوں نے ایران کے رہبرِ اعلیٰ آیت اللہ خامنہ ای کے بارے میں
اسلام آباد انتظامیہ نے دھرنے کے شرکا کو آج رات 12 بجے تک فیض آباد خالی کرنے کی وارننگ جاری کردی جب کہ حکم پر عملدرآمد نہ ہونے کی صورت میں آپریشن کا عندیہ دیا گیا ہے۔ انتظامیہ کا کہنا ہے کہ آپریشن کی تمام ذمہ

پاکستان
 
آر ایس ایس
ہمارے پارٹنر
ضرور پڑھیں
ریڈرز سروس
شعر و ادب
مقامی خبریں
آڈیو
شہر شہر کی خبریں