Friday, 13 December, 2019
کرپشن الزام میں گرفتارسعودی شہزادہ مطعب ڈیل کے بعد رہا

کرپشن الزام میں گرفتارسعودی شہزادہ مطعب ڈیل کے بعد رہا

ریاض ۔ گرفتارسعودی شہزادوں میں سے ایک شہزادہ مطعب بن عبداللہ کو ایک ارب ڈالرایک ارب ڈالرواپس کرنے کے سمجھوتے پررہا کردیا گیا ہے جبکہ شہزاد مطعب کے علاوہ مزید تین افراد نے بھی سعودی حکومت سے ڈیل کرلی ہے اور جلد ہی انکی رہائی کا بھی امکان ہے۔شہزادہ مطعب ولی عہد محمد بن سلمان کے کزن ہیں اور وہ سعودی عرب کی نیشنل گارڈ کے سربراہ بھی تھے۔ وہ گرفتار کئے گئے افراد میں سے سب سے زیادہ سیاسی اثر و رسوخ رکھنے والے شہزادے تھے۔

برطانوی نشریاتی ادارے کے مطابق کرپشن کے الزام میں گرفتار سعودی شہزادوں میں سے ایک شہزادہ مطعب بن عبداللہ کو ایک ارب ڈالر واپس کرنے کے سمجھوتے کے بعد رہا کردیا گیا ہے۔ شہزادہ مطعب ولی عہد محمد بن سلمان کے کزن اور سعودی عرب کے سابق فرماں روا شاہ عبداللہ کے صاحبزادے ہیں۔ 64 سالہ شہزادہ مطعب سعودی عرب کے نیشنل گارڈ کے سربراہ بھی تھے جنہیں گرفتاری سے کچھ دیر قبل ہی عہدے سے ہٹا دیا گیا تھا۔ وہ گرفتار کئے گئے افراد میں سے سب سے زیادہ سیاسی اثر و رسوخ رکھنے والے شہزادے تھے۔  

سعودی حکام کے مطابق شہزاد مطعب کے علاوہ مزید تین شخصیات سے بھی رہائی کیلئے شرائط طے پاگئی ہیں۔ تاہم رہائی کے لیے سمجھوتا کرنے والوں کے نام ظاہر نہیں کئے گئے ہیں۔

واضح رہے کہ شہزادہ مطعب ان 200 اہم سیاسی و کاروباری شخصیات میں سے ایک ہیں جنہیں 4 نومبر کو نظربند کیا گیا تھا۔ سعودی عرب میں نئی اینٹی کرپشن کمیٹی نے 11 شہزادوں، چار موجودہ اور درجنوں سابق وزرا کو گرفتار کیا تھا۔ گرفتار ہونے والوں میں معروف سعودی کاروباری شخصیت شہزادہ الولید بن طلال بھی شامل تھے۔

یہ گرفتاریاں اس انسداد بدعنوانی کمیٹی کی تشکیل کے چند گھنٹوں بعد کی گئیں جس کے سربراہ ولی عہد محمد بن سلمان ہیں۔ اس موقعے پر سعودی عرب کے اٹارنی جنرل نے کہا تھا کہ ملک میں حالیہ عشروں کے دوران ایک کھرب ڈالر کی خردبرد ہوئی ہے۔

اپنا تبصرہ دینے کے لیے نیچے فارم پر کریں
   
نام
ای میل
تبصرہ
  55683
کوڈ
 
   
متعلقہ خبریں
سعودی عرب میں پولیس کی چھاپہ مار ٹیم اور دہشت گردوں کے درمیان جھڑپ میں 8 دہشت گرد مارے گئے۔ سعودی خبر رساں ایجنسی کے مطابق سعودی عرب کے شہر القطیف میں دہشت گردوں کی موجودگی کی اطلاع پر پولیس نے چھاپہ مارا جس پر ملزمان
یمن کی اسلامی تنظیم انصار اللہ کے سربراہ نے یمن پر سعودی عرب کی مسلط کردہ جنگ کے 1000 دن مکمل ہونے کے موقع پر کہا ہے کہ سعودی عرب، یمنی عوام کا ایسا دشمن ہے جوکسی بھی انسانی، اسلامی اور اخلاقی قانون کا پابند نہیں ہے
اسرائیلی جیلوں میں قید فلسطینیوں کو گرم کپڑے فراہم کرنے کی کوشش کی گئی مگرقابض جیل انتظامیہ نے اسیران کے لواحقین کو اسیران تک گرم کپڑے اور دیگر ضروریات کی فراہمی پر پابندی عاید کردی۔
صہیونی ریاست کی قید مغربی کنارے کے شہرالخلیل سے تعلق رکھنے والے 45 سالہ اسیر علا الدین فہمی فہد الکرکی قید کے چوبیس سال مکمل کرنے کے بعد اب 25 ویں سال میں داخل ہوچکے ہیں۔

مزید خبریں
مسجد اقصیٰ کے امام وخطیب الشیخ اسماعیل نواھضہ نے برما میں مسلمانوں پر ڈھائے جانے والے مظالم کی شدید مذمت کی اور عالم اسلام پر زور دیا کہ وہ روہنگیا مسلمانوں کو ریاستی جبر وتشدد سے نجات دلانے کے لیے موثر اقدامات کریں

مقبول ترین
وفاقی دارالحکومت کی اسلامک انٹرنیشنل یونیورسٹی اسلام آباد میں دو طلبا تنظیموں کے درمیان تصادم ہوا، تصادم کے دوران ایک طالبعلم جاں بحق ہو گیا جبکہ 21 شدید زخمی ہو گئے، پولیس حالات کنٹرول میں ناکام ہوئی تو رینجرز نے
افریقی ملک ملک نائیجر میں دہشت گردوں نے فوجی اڈے پر حملے کیے جس کے باعث 78 اہلکار ہلاک ہو گئے ہیں۔ غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق دہشتگردوں نے بھاری ہتھیاروں سے مغربی حصے میں مالی کی سرحد کے قریب واقعے فوج
معاون خصوصی اطلاعات فردوس عاشق اعوان نے کہا ہے کہ دل کے اسپتال پر حملہ کرنے والے وکلا میں وزیراعظم کا بھانجا بھی شامل ہے اور وزیراعظم نے اس حوالے سے مذمت کی ہے۔
لاہور کی انسداد دہشتگردی عدالت میں وکلاء کو ایڈمن جج عبدالقیوم کے روبرو پیش کیا گیا جہاں سرکاری وکیل نے ملزمان کے جسمانی ریمانڈ کی درخواست کی تاہم عدالت نے درخواست مسترد کرتے ہوئے وکلاء کو جوڈیشل ریمانڈ پر جیل بھیج دیا۔

پاکستان
 
آر ایس ایس
ہمارے پارٹنر
ضرور پڑھیں
ریڈرز سروس
شعر و ادب
مقامی خبریں
آڈیو
شہر شہر کی خبریں