Thursday, 17 October, 2019
اب جارحیت کی تو ایل اوسی بھارت کا قبرستان ہوگا، فاروق حیدر

اب جارحیت کی تو ایل اوسی بھارت کا قبرستان ہوگا، فاروق حیدر

مظفرآباد۔ وزیراعظم آزادکشمیر راجہ فاروق حیدر پانڈوسیکٹر میں بھارتی فائرنگ کے متاثرین سے ملنے بھارتی  فوج کے مورچوں کے سامنے جا پہنچے۔ 

کنٹرول لائن کے حساس ترین پانڈوسیکٹر میں عوامی اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ بھارت جان بوجھ کر ایل او سی پر کشیدگی بڑھا رہا ہے، مگر ہم ڈرنے والے ہر گز نہیں ہیں۔ 

وزیر اعظم آزاد کشمیر کا کہنا تھا کہ ایل او سی اور آزادکشمیر کے لوگ دفاع وطن میں پاک فوج کے شانہ بشانہ ہیں۔ 

انہوں نے کشمیریوں کے حوصلے کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ یہاں پر بسنے والے 24گھنٹے کے مجاہد ہیں، انہیں سلام پیش کرنے آیا ہوں،بزدل دشمن نے جنازوں پر بھی فائرنگ کی ہے لیکن  کشمیری عوام کے حوصلے ہمیشہ بلند رہے ہیں۔ 

فاروق حیدر نے کہا کہ وزیراعظم پاکستان اور آرمی چیف نے بھی کنٹرول لاین کا دورہ کیا جس سے یہاں بسنے والوں کو حوصلہ ملا۔ 

فاروق حیدرنے کہا کہ ہندوستانی افواج نےآزادکشمیر پر جارحیت کی کوشس کی تو لائن آف کنٹرول کو اس کا قبرستان بنا دیں گے۔ 

وزیراعظم آزادکشمیرنے کہا کہ پاکستان کے اکیس  کروڑ عوام لائن آف کنٹرول کے لوگوں کے ساتھ کھڑے ہیں۔ آج یہاں سے سرینگر کی عوام کو پیغام دینےآیا ہوں کہ وہ اپنی جدوجہد میں تنہا نہیں۔ 

اپنا تبصرہ دینے کے لیے نیچے فارم پر کریں
   
نام
ای میل
تبصرہ
  60331
کوڈ
 
   
متعلقہ خبریں
حریت رہنما سید علی گیلانی نے پاکستانی عوام اور مسلم امہ سے کشمیریوں کی مدد کے لیے فوری طور پر میدان عمل میں آنے کی اپیل کی ہے۔ کشمیر میڈیا سروس کے مطابق کل جماعتی حریت کانفرنس کے چیئرمین سید علی گیلانی نے اپنے کھلے خط میں
بھارت نے مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت سے متعلق آئین کا آرٹیکل 370 ختم کر دیا۔ بھارتی میڈیا کے مطابق صدارتی حکم نامے کے ذریعے آرٹیکل 370 کو ختم کر دیا گیا ہے جس کے تحت مقبوضہ کشمیر اب ریاست نہیں کہلائے گی۔
بھارتی جارحیت کے خلاف ہزاروں افراد سڑکوں پر نکل آئے، تدفین میں ہزاروں افراد کی شرکت کی، شرکا کے بھارت کے خلاف اور آزادی کے حق میں نعرے ، شرکاء پرآنسو گیس کی شیلنگ
مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی بد ترین خلاف ورزیاں کی جا رہی ہیں ، پیلٹ گن جیسے ممنوعہ ہتھیاروں سے نوجوانوں کو بینائی سے محروم کیا جا رہا ہے، ڈاکٹر خالد محمود خان

مقبول ترین
وزیراعظم عمران خان کی زیرصدارت تحریک انصاف کی کورکمیٹی کا اجلاس ہوا جس میں پنجاب اور خیبر پختونخوا کے وزرائے اعلیٰ اورتین گورنرز نے شرکت کی۔ حکومت نے مولانا فضل الرحمان سے مذاکرات کے لیے کمیٹی بنانے کا فیصلہ کیا ہے
اسلام آباد میں تقریب سے خطاب کرتے ہوئے فواد چوہدری نے کہا کہ نوکریاں حکومت نہیں نجی سیکٹر دیتا ہے یہ نہیں کہ ہر شخص سرکاری نوکر ی ڈھونڈے ، حکومت تو 400 محکمے ختم کررہی ہے مگرلوگوں کا اس بات پر زور ہے کہ حکومت نوکریاں دے۔
وزیراعظم عمران خان کا کہنا ہے کہ پاکستان خطے میں امن اور استحکام کے لئے اپنا کردار ادا کرنے کو تیار ہے۔ ایرانی صدر سے ملاقات کے بعد مشترکہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے ایرانی صدر حسن روحانی نے کہا کہ پاکستان اور
اسلام آباد میں وزیراعظم آفس کے سامنے مقبوضہ کشمیر میں جاری بھارتی مظالم کیخلاف انسانی زنجیر بنائی گئی۔ وزیراعظم عمران خان نے بھی اس تقریب میں شرکت کی اور قوم سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ بھارتی فوج نے مقبوضہ کشمیر میں

پاکستان
 
آر ایس ایس
ہمارے پارٹنر
ضرور پڑھیں
ریڈرز سروس
شعر و ادب
مقامی خبریں
آڈیو
شہر شہر کی خبریں