Tuesday, 15 October, 2019
بھارت مقبوضہ کشمیر میں کیمیائی ہتھیار استعمال کر رہا ہے، مسعود خان

بھارت مقبوضہ کشمیر میں کیمیائی ہتھیار استعمال کر رہا ہے، مسعود خان

اسلام آباد ۔ آزاد کشمیر کے صدر سردار مسعود خان نے کہا ہے کہ بھارتی سیکیورٹی فورسز مقبوضہ کشمیر میں صرف انسانی حقوق کی خلاف ورزی نہیں بلکہ معصوم افراد کے خلاف کیمیائی ہتھیار استعمال کر رہی ہیں لیکن عالمی اداروں نے مسئلہ کشمیر کے حل کے لیےکردار ادا نہیں کیا۔

اسلام آباد میں انسانی حقوق کے عالمی دن کی مناسبت سے منعقدہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے مسعود خان نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں آبادی کا تناسب بدلنے کی کوشش کی جارہی ہے اور آر ایس ایس کے انتہاپسند شہریوں کو ریاست چھوڑنے کے لیے دھمکیاں دے رہے ہیں۔

انھوں نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں انسانیت کے خلاف جرائم کا ارتکاب کیا جارہا ہے اور بھارتی فورسز کیمیائی ہتھیاروں کا استعمال کر رہی ہیں۔

صدر آزاد کشمیر نے دعویٰ کیا کہ پلواما اور اننت ناگ میں کیمیائی ہتھیاروں کے استعمال کی شہادتیں موجود ہیں۔

خیال رہے کہ رواں سال کے اوائل میں دفتر خارجہ نے مقبوضہ کشمیر میں شہریوں کے خلاف کیمیائی ہتھیاروں کے استعمال کی جانب توجہ مبذول کرانے کی کوشش کی تھی تاہم پہلی مرتبہ بھارتی فورسز کی جانب سے کیمیائی ہتھیاروں کے استعمال کا الزام سامنے آیا ہے۔

بین الاقوامی قوانین اور کیمیائی ہتھیاروں کے کنونشن کے مطابق مسلح تنازعات سمیت کسی بھی صورت حال میں کیمیائی ہتھیاروں کے استعمال کی اجازت نہیں ہے۔

غیرملکی دورں کا ذکر کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ اپنے حالیہ دورہ برسلز اور واشنگٹن کے دوران مسئلہ کشمیرکے حل پر زور دیا۔

انھوں نے کہا کہ مسئلہ کشمیر کے حل کے لیے مضبوط پاکستان کا ہونا بہت ضروری ہے جبکہ اقوام متحدہ سمیت کسی عالمی ادارے نے مسئلے کے حل کے لیے آواز بلند نہیں کی۔

صدر آزاد کشمیر کا کہنا تھا کہ کشمیریوں اور پاکستان کے درمیان رخنہ ڈالنے کی مہم کسی صورت کامیاب نہیں ہوگی۔

اپنا تبصرہ دینے کے لیے نیچے فارم پر کریں
   
نام
ای میل
تبصرہ
  44283
کوڈ
 
   
متعلقہ خبریں
وادی میں جگہ جگہ بھارتی فوجی تعینات ہیں جنہوں نے خاردار تاریں لگا کر رکاوٹیں کھڑی کر رکھی ہیں، کشمیری اپنی سر زمین پر قیدیوں کی زندگی بسر کرنے پر مجبور ہیں، لوگ اپنے پیاروں کی خیریت جاننے کے لیے ترس گئے۔
بھارتی جارحیت کے خلاف ہزاروں افراد سڑکوں پر نکل آئے، تدفین میں ہزاروں افراد کی شرکت کی، شرکا کے بھارت کے خلاف اور آزادی کے حق میں نعرے ، شرکاء پرآنسو گیس کی شیلنگ
صدرآزاد کشمیرمسعود احمد خان نے کہا ہے کہ پاکستان اورکشمیر کو ایک دوسرے سے علیحدہ نہیں کیا جاسکتا جب کہ کشمیر کے بغیر پاکستان نامکمل ہے۔ بھارت کشمیریوں کی جدوجہد کو دہشت گردی سے ملانے کا پروپیگنڈا کر رہا ہے۔
مقبوضہ وادی کشمیر میں کیمیائی ہتھیاروں کا استعمال معمول بن گیا، گزشتہ روز پلوامہ میں چار مکانات کو کیمیائی مواد سے اڑا دیا گیا جس میں شہید ہونے والے چار معصوم کشمیریوں کی لاشیں بھی ناقابل شناخت ہو گئیں۔

مقبول ترین
وزیراعظم عمران خان کا کہنا ہے کہ پاکستان خطے میں امن اور استحکام کے لئے اپنا کردار ادا کرنے کو تیار ہے۔ ایرانی صدر سے ملاقات کے بعد مشترکہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے ایرانی صدر حسن روحانی نے کہا کہ پاکستان اور
اسلام آباد میں وزیراعظم آفس کے سامنے مقبوضہ کشمیر میں جاری بھارتی مظالم کیخلاف انسانی زنجیر بنائی گئی۔ وزیراعظم عمران خان نے بھی اس تقریب میں شرکت کی اور قوم سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ بھارتی فوج نے مقبوضہ کشمیر میں
برطانوی پولیس نے 2016 میں برطانیہ سے بیٹھ کر پاکستان میں نفرت انگیز تقریر کرنے سے متعلق تفتیش میں متحدہ قومی مومنٹ (ایم کیو ایم) کے بانی الطاف حسین پر دہشت گردی کی دفعہ کے تحت فرد جرم عائد کردی۔
وزیراعظم کی چین کے صدر شی جن پنگ سے ملاقات ہوئی جس میں مقبوضہ کشمیر کی صورت حال اور علاقائی سیکیورٹی پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ وزیراعظم عمران خان اور چین کے صدر شی جن پنگ کے درمیان بیجنگ کے اسٹیٹ گیسٹ ہاؤس میں ملاقات ہوئی۔

پاکستان
 
آر ایس ایس
ہمارے پارٹنر
ضرور پڑھیں
ریڈرز سروس
شعر و ادب
مقامی خبریں
آڈیو
شہر شہر کی خبریں