Monday, 18 February, 2019
’’پنجاب حکومت نے سانحہ ماڈل ٹاؤن رپورٹ جاری کردی‘‘

’’پنجاب حکومت نے سانحہ ماڈل ٹاؤن رپورٹ جاری کردی‘‘

لاہور۔ صوبائی وزیر قانون رانا ثناء اللہ نے کہا ہے کہ سانحہ ماڈل ٹاؤن کی انکوائری رپورٹ نقائص سے بھرپور ہے اور اس میں کسی حکومتی شخصیت کا نام نہیں ہے۔

حکومتِ پنجاب کے وزیر قانون رانا ثناء اللہ نے کہا ہے کہ وزیرِ اعلیٰ میاں محمد شہباز شریف کی ہدایت پر سانحہ ماڈل ٹاؤن کی انکوائری رپورٹ کو پبلک کر دیا گیا ہے۔ اس رپورٹ کی کوئی ویلیو نہیں، صرف انفارمیشن ہے۔ عدالت سے درخواست کرتا ہوں کہ مزید انکوائری رپورٹ پنڈنگ پڑی ہے، انہیں بھی پبلک کرنے کے احکامات دیے جائیں۔

لاہور میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے رانا ثناء اللہ کا کہنا تھا کہ گزشتہ ڈھائی تین سالوں سے رپورٹ کے بارے میں پروپگینڈہ کیا جاتا رہا۔ پنڈی کے شیطان کہتے تھے کہ رپورٹ میں ایسی چیزیں سامنے آئیں گی جس سے پتہ نہیں کیا ہو جائے گا۔ حالانکہ سانحہ ماڈل ٹاؤن رپورٹ میں کسی حکومتی شخصیت کو ذمہ دار نہیں ٹھہرایا گیا۔ رپورٹ میں وزیرِ اعلیٰ پنجاب میاں محمد شہباز شریف کے لیے صرف یہ کہا گیا کہ شاید ان کا حکم آگے نہیں پہنچایا گیا تھا۔ رپورٹ میں کسی فرد واحد کو ذمہ دار نہیں ٹھہرایا گیا۔

رانا ثناء اللہ کا کہنا تھا کہ قانون کی نظر میں جسٹس باقر نجفی کی رپورٹ بے اثر ہے۔ یہ رپورٹ قانون کی نظر میں ڈیفیکٹو ہے۔ اس رپورٹ میں شہباز شریف کے الفاظ کو مشکوک کرنے کی کوشش کی گئی۔ رپورٹ میں ایک لفظ ایساا نہیں جو وزیرِ اعلیٰ کو ذمہ دار ٹھہراتا ہو۔ ان کا بیان حلفی بھی ریکارڈ پر موجود ہے۔ انہوں نے کہا کہ رپورٹ کے مطابق مجھ پر ایک میٹنگ کرنے کا الزام جس میں بیریر ہٹانے کا حکم شامل تھا۔ رپورٹ میں ذکر ہے کہ عوامی تحریک کے ورکرزکی مزاحمت وجہ بنی۔ وزیرِ قانون نے سوال اٹھایا کہ عوامی تحریک کے مظلوموں کو اکٹھا کس نے کیا تھا؟ وہ کون تھا جو ان ورکرز کو اکساتا رہا۔ عوامی تحریک نے لوگوں کو اکٹھا کیا گیا لیکن یہ نہیں بتایا گیا کس نے اکٹھے کیے؟ وہ کون تھا جو کہہ رہا تھا کہ اب شہادت کا وقت آ گیا ہے؟
 
ان کا کہنا تھا کہ قانون کی نظر میں رپورٹ میں خامی ہے۔ رپورٹ شہادت کے طور پر پیش نہیں کی جا سکتی۔ رپورٹ نقائص سے بھرپور ہے۔ اس میں موقع پر موجود کسی پولیس اہلکار کو ذمہ دار بھی نہیں ٹھہرایا گیا۔ رپورٹ نامکمل تھی اس لیے اسے شائع نہیں کیا گیا۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
نوٹ: مبصر ڈاٹ کام ۔۔۔ کا کسی بھی خبر سے متفق ہونا ضروری نہیں ۔۔۔ اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔ علاوہ ازیں آپ بھی اپنا کالم، بلاگ، مضمون یا کوئی خبر info@mubassir.com پر ای میل کرسکتے ہیں۔ ادارہ

اپنا تبصرہ دینے کے لیے نیچے فارم پر کریں
   
نام
ای میل
تبصرہ
  75041
کوڈ
 
   
متعلقہ خبریں
پاکستان مسلم لیگ (ن) نے قومی اسمبلی میں بہاولپور اور جنوبی پنجاب صوبہ بنانے کے لئے آئینی ترمیمی بل جمع کرادیا۔ میڈیا کے مطابق مسلم لیگ (ن) کے رہنماؤں احسن اقبال، رانا تنویر، رانا ثناءاللہ، عبدالرحمن کانجو کی جانب سے قومی اسمبلی
نقیب اللہ محسود سمیت 4افراد کا قتل ماورائے عدالت قرار دے دیا گیا۔ انسداد دہشتگردی عدالت میں ‎نقیب اللہ قتل کیس میں بڑی پیش رفت سامنے آئی ہے۔ انکوائری کمیٹی نے نقیب اللہ کے قتل پررپورٹ انسداد دہشتگردی عدالت میں پیش کر دی۔
سانحہ ساہیوال کی تحقیقات کرنے والی مشترکہ تحقیقاتی ٹیم کے سربراہ اعجاز شاہ نے واقعے سے متعلق ابتدائی رپورٹ وزیراعلیٰ پنجاب کو پیش کردی جب کہ دوسری جانب ایوان وزیراعلیٰ نے جے آئی ٹی کے سربراہ ایڈیشنل آئی جی اعجاز شاہ کی
سابق صدر آصف علی زرداری، فریال تالپور، نمر مجید سمیت دیگر بینکنگ کورٹ میں پیش ہوئے۔ ملزمان کے وکیل نے موقف اپنایا کہ ایف آئی اے کو حتمی چالان جمع کرانے کا حکم دیا جائے۔ عدالت نے کہا ہم سپریم کورٹ کی اجازت کے بغیرمزید کارروائی نہیں کرسکتے۔

مزید خبریں
سپریم کورٹ میں آج دوران سماعت چیف جسٹس پاکستان کا سینئر وکیل اعتزاز احسن سے خوش گوار مکالمہ ہوا جس کے دوران چیف جسٹس نے کہا کہ میری طرف سے کسی کی دل آزاری ہوئی ہے تو معاف کردیں۔ چیف جسٹس نے کہا کہ تسلیم کرتا ہوں کہ
میڈیا کے مطابق لاہور ہائی کورٹ کے جسٹس علی اکبر قریشی نے اظہر صدیق ایڈوووکیٹ کی درخواست پر سماعت کی۔ جس میں سگریٹ نوشی پر پابندی کے قوانین کی پاسداری نہ کرنے کی نشاندہی دہی کی گئی۔
صوبہ بلوچستان کے ضلع تربت میں کالعدم تنظیموں سے تعلق رکھنے والے 15 اہم کمانڈروں سمیت تقریباً 200 فراری ہتھیار ڈال کر قومی دھارے میں شامل ہوگئے ہیں۔ تقریب کے مہمان خصوصی وزیراعلیٰ بلوچستان میرعبدالقدوس بزنجو تھے۔ اب تک ایک ہزار 8 سو کے قریب فراری ہتھیار ڈال کر قومی دھارے میں شامل ہوچکے ہیں۔
سابق وزیراعظم اور حکمران جماعت کے سربراہ میاں محمد نواز شریف کی کل سعودی عرب روانگی کا امکان ہے۔ جہاں وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف پہلے سے موجود ہیں۔ جبکہ وفاقی وزیر ریلوے خواجہ سعد رفیق بھی پی آئی اے کی پرواز کے ذریعے اہلخانہ کے ہمراہ سعودی عرب روانہ ہوگئے ہیں

مقبول ترین
وزیراعظم عمران خان سے سعودی ولی عہد محمد بن سلمان نے ون آن ون ملاقات کی۔ وزیراعظم اور سعودی ولی عہد کی ملاقات وزیراعظم ہاؤس اسلام آباد میں ہوئی۔ ملاقات میں پاک سعودی تعلقات اور باہمی دلچسپی کے امور پر تبادلہ خیال کیا گیا۔
سعودی ولی عہد محمد بن سلمان کا طیارہ جیسے ہی پاکستانی فضائی حدود میں داخل ہوا تو معززمہمان کا شایان استقبال شروع کر دیا گیا۔ پاک فضائیہ کے ایف 16 اور جے ایف 17 تھنڈر طیاروں نے شاہی طیارے کو اپنے حصار میں لے لیا۔
چین کے ڈپٹی چیف آف مشن چاؤ لی جیان کا کہنا ہے کہ سعودی عرب سمیت کوئی بھی ملک چین پاکستان اقتصادی راہداری منصوبے (سی پیک) کا حصہ بن سکتا ہے۔ میڈیا کے مطابق جیو ٹی وی کے پروگرام جیو پارلیمنٹ میں گفتگو کرتے ہوئے ڈپٹی چیف
ترجمان قومی اسمبلی کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ قومی اسمبلی کے پیر کو ہونے والے اجلاس کا شیڈول تبدیل کر دیا گیا ہے۔ قومی اسمبلی کا پیر کی شام 4 بجے ہونے والا اجلاس اب بدھ کی شام 4 بجے ہو گا۔

پاکستان
 
آر ایس ایس
ہمارے پارٹنر
ضرور پڑھیں
ریڈرز سروس
شعر و ادب
مقامی خبریں
آڈیو
شہر شہر کی خبریں