Wednesday, 27 March, 2019
’’ڈاکٹر شاہد مسعود نے سپریم کورٹ سے معافی مانگ لی‘‘

’’ڈاکٹر شاہد مسعود نے سپریم کورٹ سے معافی مانگ لی‘‘

زینب قتل کیس کے ملزم عمران کے بینک اکاؤنٹس کا دعویٰ کرنے والے اینکر پرسن شاہد مسعود نے سپریم کورٹ سے تحریری معافی مانگ لی۔ شاہد مسعود کی جانب سے سپریم کورٹ میں جمع کرائے گئے تحریری معافی نامے میں کہا گیا ہے کہ تحقیقاتی کمیٹی کی فائنڈنگز پر کوئی مقدمہ نہیں لڑنا چاہتا۔

اینکر پرسن نے سپریم کورٹ میں جمع کرائے گئے اپنے جواب میں آئندہ محتاط رہنے کی یقین دہانی بھی کرائی ہے۔

وائس آف امریکہ کے مطابق جواب میں ڈاکٹر شاہد مسعود نے معافی مانگے بغیر انھوں نے آئندہ محتاط رہنے کی یقین دہانی کرائی ہے اور تسلیم کیا ہے کہ الزامات کی تحقیقات کے لیے سپریم کورٹ کی جانب سے قائم تحقیقاتی ٹیم کی رپورٹ درست ہے۔ کمیٹی کی تحقیقات پر مقدمہ لڑنے سے بھی انہوں نے معذرت کرلی ہے۔

ہفتہ کو سپریم کورٹ میں جمع کروائے گئے جواب میں ڈاکٹر شاہد مسعود کا کہنا تھا کہ "یقین دلاتا ہوں کہ آئندہ اس طرح کا بیان دیتے ہوئے محتاط رہوں گا، سانحہ قصور پر بطور باپ جذباتی ہوگیا تھا، مجرم عمران علی کے بینک اکاؤنٹس کے حوالے سے معلومات ملیں جبکہ عمران علی کی با اثر افراد سے تعلقات کی بھی اطلاع ملی۔"

گزشتہ سماعت کے موقع پر چیف جسٹس نے شاہد مسعود سے کہا تھا کہ آپ کی معافی کا وقت گزر چکا ہے اور آپ کو نتائج بھگتنا ہوں گے جبکہ اینکر پرسن شاہد مسعود نے بھی کسی صورت معافی نہ مانگنے کا دعوی کیا تھا۔

خیال رہے کہ ڈاکٹر شاہد مسعود نے قصور کی ننھی زینب کے قاتل عمران کے متعدد غیر ملکی بینک اکاؤنٹس کا دعویٰ کیا تھا جس کا سپریم کورٹ نے نوٹس لیتے ہوئے معاملے کی تحقیقات کے لیے ایک جے آئی ٹی تشکیل دی تھی۔

جے آئی ٹی کی جانب سے سپریم کورٹ میں جمع کرائی گئی اپنی رپورٹ میں اینکر پرسن شاہد مسعود کے تمام الزامات کو جھوٹ پر مبنی قرار دیدیا تھا۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
نوٹ: مبصر ڈاٹ کام ۔۔۔ کا کسی بھی خبر سے متفق ہونا ضروری نہیں ۔۔۔ اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔ علاوہ ازیں آپ بھی اپنا کالم، بلاگ، مضمون یا کوئی خبر info@mubassir.com پر ای میل کرسکتے ہیں۔

اپنا تبصرہ دینے کے لیے نیچے فارم پر کریں
   
نام
ای میل
تبصرہ
  81220
کوڈ
 
   
متعلقہ خبریں
جرمنی میں مقیم سعودی عرب کے شاہی خاندان کے فرد شہزادہ خالد بن فرحان السعود نے سعودی عرب کے موجودہ بادشاہی نظام کے خلاف تحریک کا اعلان کر دیا ہے۔ شہزادہ خالد پچھلی ایک دہائی سے خود ساختہ جلا وطنی میں ہیں۔
سپریم کورٹ نے فیض آباد دھرنا ازخود نوٹس کیس کا فیصلہ محفوظ کرلیا۔ جسٹس قاضی فائز عیسیٰ نے ریمارکس دیئے کہ کیا وزیراعظم سپریم کورٹ اور قانون سے بالا تر ہیں، اٹارنی جنرل کو ای سی سی اجلاس میں بلا لیا تھا تو انکار کر دیتے، ایک جماعت
وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ معیشت کی بہتری کے لیے ہر صورت منی لانڈرنگ کو روکنا ہوگا، کرپشن ہی ملکوں کو غریب بناتی ہے، کرپٹ حکمران کرپشن کیلئے گرفت کرنے والے اداروں میں اپنے لوگ لگا کر انہیں تباہ کرتے ہیں۔
سعودی اخبار کو انٹرویو دیتے ہوئے وزیر اعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ ہر تنازع کا سیاسی حل ہوتا ہے اور میں فوجی حل پر یقین نہیں رکھتا، اس لیے سعودی عرب اور یمن میں تنازع ختم کرانے کے لیے پاکستان کردار ادا کرنے کو تیار ہے لیکن ہم حوثیوں کے حملوں

مقبول ترین
وفاقی وزیر اطلاعات ونشریات فواد چودھری نے کہا ہے کہ وکیل خواجہ حارث کو چاہیے کہ وہ اپنے موکل نواز شریف کو پیسے واپس کرنے کا مشورہ دیں۔ نواز شریف باہر جانا چاہتے ہیں تو عوام کے پیسے واپس کر دیں۔
کراچی کینٹ سٹیشن پر جیالوں کی بڑی تعداد صبح سے ہی موجود تھی، پارٹی پرچموں کی بہار نظر آئی، کارکنوں نے پارٹی نغموں پر رقص بھی کیا، بلاول بھٹو کی آمد پر جیالوں نے گل پاشی کی اور اپنے ہردلعزیز رہنما کو زبردست طریقے سے خوش آمدید کہا۔
چیف جسٹس پاکستان آصف سعید کھوسہ کی سربراہی میں سپریم کورٹ کے تین رکنی بنچ نے سابق وزیراعظم نواز شریف کی طبی بنیادوں پر درخواستِ ضمانت کی سماعت کی۔ سپریم کورٹ نے 50 لاکھ روپے کے مچلکے کے عوض نواز شریف
میجر جنرل آصف غفور کا کہنا تھا کہ بھارتی طیاروں نے 26 فروری کو پاکستان کی فضائی حدود کی خلاف ورزی کرتے ہوئے پےلوڈ پھینکے جس کے بعد 27 فروری کو پاکستان نے عام آبادی کو نشانہ بنائے بغیر جوابی کارروائی کا فیصلہ کیا۔

پاکستان
 
آر ایس ایس
ہمارے پارٹنر
ضرور پڑھیں
ریڈرز سروس
شعر و ادب
مقامی خبریں
آڈیو
شہر شہر کی خبریں