Friday, 22 March, 2019
’’ویلنٹائن ڈے منانا غیر اسلامی نہیں، سعودی عالم دین‘‘

’’ویلنٹائن ڈے منانا غیر اسلامی نہیں، سعودی عالم دین‘‘

کہ یہ ایک  سماجی تہوار ہے اوراسے منانے میں کوئی شرعی پابندی نہیں۔

مکہ مکرمہ میں امربالمعروف و نہی عن المنکر کمیٹی کے سابق ڈائریکٹرجنرل قاسم الغامدی نے عرب ٹی وی سے بات کرتے ہوئے کہا کہ ہم عالمی سطح پر کئی دن مناتے ہیں مثلاً والدین کا عالمی دن، ماں کا عالمی دن، استاد کا عالمی دن یاخواتین کا عالمی دن وغیرہ، یہ سب سماجی نوعیت کے  ایام ہیں ان کا براہ راست مذہب کے بنیادی عقائد کے ساتھ کوئی تعلق نہیں اور نا ہی اسلام میں ایسی سماجی و ثقافتی سرگرمیوں کی کوئی ممانعت ہے۔ ویلنٹائن ڈے یا محبت کے عالمی دن کو منانے میں بھی کوئی شرعی پابندی نہیں۔

علامہ قاسم الغامدی نے کہا کہ اسلام بھی لوگوں کے درمیان اچھی بات کو عام کرنے کی تلقین کرتا ہے۔ اگر آپ کسی کو کسی بھی حوالے سے مبارکباد پیش کرتے ہیں تو اس میں کوئی حرج نہیں، خیر اور بھلائی کی بات صرف مسلمانوں سے نہیں بلکہ یہود و نصاریٰ کے ساتھ بھی کی جاسکتی ہے، البتہ براہ راست جنگ کرنے اور لڑنے والے عناصر اس میں شامل نہیں۔ انہوں نے کہا نبی اکرم ﷺ اپنے یہودی پڑوسیوں کے ہاں آتے جاتے رہتے اور ان کے مسائل کے حل میں ان کی مدد کرتے۔ اللہ کافرمان بھی ہے’’لوگوں سے اچھے طریقے سے بات کرو‘‘۔
علامہ قاسم الغامدی کا کہنا تھا کہ ویلنٹائن ڈے کے مخالفین اسے اسلام کے ساتھ جوڑتے ہیں اور دعویٰ کرتے ہیں کہ یہ جاہلیت کے تہواروں میں سے ایک ہے، اگر کوئی  شخص تہوار منانے کی کوشش کررہاہے جس کا اسلام میں کوئی وجود نہیں تو وہ اسلامی تعلیمات کی خلاف ورزی ہے۔ مگر ویلنٹائن ڈے ایک سماجی تہوار ہے، اس تہوار کے موقعے پر ہم ایک دوسرے کے لیے محبت کے جذبات کا اظہار کرتے ہیں۔

ایک سوال کے جواب میں الغامدی نے کہا کہ یہودیوں اور عیسائیوں سمیت دیگر غیر مسلموں کو عید اور تہواروں پر ہم انہیں مبارکباد پیش کرسکتے ہیں۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
نوٹ: مبصر ڈاٹ کام ۔۔۔ کا کسی بھی خبر سے متفق ہونا ضروری نہیں ۔۔۔ اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔ علاوہ ازیں آپ بھی اپنا کالم، بلاگ، مضمون یا کوئی خبر info@mubassir.com پر ای میل کرسکتے ہیں۔ ادارہ

اپنا تبصرہ دینے کے لیے نیچے فارم پر کریں
   
نام
ای میل
تبصرہ
  2330
کوڈ
 
   
متعلقہ خبریں
جرمنی میں مقیم سعودی عرب کے شاہی خاندان کے فرد شہزادہ خالد بن فرحان السعود نے سعودی عرب کے موجودہ بادشاہی نظام کے خلاف تحریک کا اعلان کر دیا ہے۔ شہزادہ خالد پچھلی ایک دہائی سے خود ساختہ جلا وطنی میں ہیں۔
وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ معیشت کی بہتری کے لیے ہر صورت منی لانڈرنگ کو روکنا ہوگا، کرپشن ہی ملکوں کو غریب بناتی ہے، کرپٹ حکمران کرپشن کیلئے گرفت کرنے والے اداروں میں اپنے لوگ لگا کر انہیں تباہ کرتے ہیں۔
سعودی اخبار کو انٹرویو دیتے ہوئے وزیر اعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ ہر تنازع کا سیاسی حل ہوتا ہے اور میں فوجی حل پر یقین نہیں رکھتا، اس لیے سعودی عرب اور یمن میں تنازع ختم کرانے کے لیے پاکستان کردار ادا کرنے کو تیار ہے لیکن ہم حوثیوں کے حملوں
میڈیا کے مطابق سپریم کورٹ نے پانی کی کمی اور ڈیمزکی تعمیر سے متعلق کیس کا تفصیلی فیصلہ جاری کردیا ہے جبکہ ڈیمزکی تعمیر اورکام کی نگرانی کے لیےعملدرآمد کمیٹی بھی قائم کردی ہے۔ عدالتِ عظمیٰ کے تفصیلی فیصلے کے مطابق عملدرآمد کمیٹی

مقبول ترین
ملائیشیا کے وزیراعظم مہاتیر محمد تین روزہ دورے پر پاکستان پہنچ گئے ہیں۔ ترجمان دفتر خارجہ کے مطابق ملائیشیا کے وزیراعظم مہاتیر محمد وزیراعظم عمران خان کی دعوت پر 21 سے 23 مارچ تک پاکستان کا دورہ کریں گے اور وہ
سپریم کورٹ میں بحریہ ٹاؤن عملدرآمد کیس کی سماعت ہوئی۔ عدالت عظمیٰ نے بحریہ ٹاؤن کی جانب سے 460 ارب روپے جمع کروانے کی پیشکش قبول کرتے ہوئے بحریہ ٹاؤن کراچی کو کام کرنے کی اجازت دے دی۔
اسلام آبادمیں اخبارات کے ایڈیٹرز اور مالکان سے ملاقات میں گفتگو کرتے ہوئے وزیراعظم نے کہا کہ بھارت میں الیکشن مہم پاکستان کی نفرت کی بنیاد پر ہورہی ہے،ہم بھارت کے حوالے سے ہونے والی کسی بھی مہم جوئی کا جواب
آصف علی زرداری اور بلاول بھٹو نے جعلی اکاونٹس کیس میں نیب کے سامنے اپنے ابتدائی بیانات ریکارڈ کروا دئیے۔ پیپلز پارٹی کے دونوں رہنما، کارکنوں اور پارٹی رہنماوں کے ہمراہ نیب راولپنڈی کے دفتر میں پیش ہوئے۔

پاکستان
 
آر ایس ایس
ہمارے پارٹنر
ضرور پڑھیں
ریڈرز سروس
شعر و ادب
مقامی خبریں
آڈیو
شہر شہر کی خبریں