Monday, 03 August, 2020
ایرانی سپریم لیڈرخامنہ ای کی طرف سے ملی یکجہتی کونسل کے مکتوب کا جواب موصول ہوگیا

ایرانی سپریم لیڈرخامنہ ای کی طرف سے ملی یکجہتی کونسل کے مکتوب کا جواب موصول ہوگیا

ملی یکجہتی کونسل کے ایک وفد نے ۱۴ جنوری سے ۲۲ جنوری ۲۰۲۰ تک اسلامی جمہوریہ ایران کا دورہ کیا۔ اس موقع پر وفد نے دیگر علما اور حکومتی ذمہ داروں سے ملاقات کے علاوہ ایران کے سپریم لیڈرسید علی خامنہ ای مدظلہ کے دفتر کے انچارج آیۃ اللہ محسن قمی سے بھی ملاقات کی۔اس ملاقات میں وفد کے اراکین نے رہبر معظم کی خدمت میں ایک مکتوب اپنے دستخطوں کے ساتھ ان کی خدمت میں پیش کیا۔ جس میں القدس فورس کے سربراہ جنرل قاسم سلیمانی،عراق کی پاپولر فورس کے ڈپٹی کمانڈر ابو مہدی مہندس اور ان کے ساتھیوں کی امریکی بمباری کے نتیجے میں شہادت پر تعزیت پیش کی گئی تھی۔ اس خط میں ملی یکجہتی کونسل کی اتحاد امت کے لیے مساعی کا بھی تذکرہ تھا۔

یاد رہے کہ مذکورہ وفد کی سربراہی کونسل کے سیکرٹری جنرل جناب لیاقت بلوچ کررہے تھے۔ وفد کے دیگر اراکین میں سید ثاقب اکبر ڈپٹی جنرل سیکرٹری ملی یکجہتی کونسل، اسلامی تحریک کے سیکرٹری جنرل علامہ عارف حسین واحدی، جمعیت علمائے پاکستان کے سیکرٹری جنرل پیرمحمد صفدر شاہ گیلانی، مجلس وحدت مسلمین کے ڈپٹی سیکرٹری جنرل سید ناصر شیرازی، ہدیۃ الہادی پاکستان کے نائب رہبر رضیت باللہ، متحدہ جمعیت اہل حدیث کے چیف آرگنائزر علامہ مقصود احمد سلفی اور جمیعت علمائے اسلام سینئر کے رہنما طاہر حبیب نقشبندی شامل تھے۔ ملی یکجہتی کونسل کے اراکین کے نام مذکورہ مکتوب کا جواب موصول ہوا ہے جو رہبر معظم کے انچارج آیۃ اللہ محسن قمی نے تحریر کیا ہے۔ مکتوب کا ترجمہ ذیل میں پیش خدمت ہے:

ملی یکجہتی کونسل پاکستان کے محترم اراکین اللہ آپ کی عزت میں اضافہ فرمائے
سلام علیکم 
اسلام کے سرفرزاکمانڈروں الحاج قاسم سلیمانی، ابو مہدی المہندس اور ان کے ساتھیوں کی مجرم امریکہ کے دہشت گردانہ حملے میں ہونے والی شہادت کی مناسبت سے آپ کا پیغام تعزیت رہبر معظم انقلاب اسلامی حضرت آیۃ اللہ العظمیٰ سید علی خامنہ ای مدظلہ کی خدمت میں پہنچا جس پر وہ شکر گزار ہیں۔ ان عالی مقام شہدا نے راہ خدا میں اپنے نیک کاموں اور جدوجہد کی جزا خوبصورت ترین ممکن صورت میں حاصل کرلی ہے اور وہ منفور ترین دشمنان اسلام کے ہاتھوں شہادت کے بلند درجے تک جا پہنچے ہیں۔ ان عزیزوں کی شہادت کی مناسبت سے ایران اسلامی میں ایرانی قوم اور اسلامی جمہوریہ ایران کے ذمہ داروں سے تعزیت اور ہمدردی کے اظہار کے لیے آپ کی ایران اسلامی میں قابل قدر موجودگی لائق تکریم و تحسین ہے۔ میں آپ کے لیے اللہ تعالیٰ سے مسلمانوں کی صفوں میں وحدت کو مستحکم کرنے کے لیے مزید کامیابی کی دعا کرتا ہوں نیز عظیم اسلامی امت اور خاص طور پر پاکستان کی مسلمان ملت کی دائمی خوشحالی اور عزت کی دعا کرتا ہوں۔
محسن قمی
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
نوٹ: مبصر ڈاٹ کام ۔۔۔ کا کسی بھی خبر سے متفق ہونا ضروری نہیں ۔۔۔ اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔ علاوہ ازیں آپ بھی اپنا کالم، بلاگ، مضمون یا کوئی خبر info@mubassir.com پر ای میل کر سکتے ہیں۔ ادارہ

اپنا تبصرہ دینے کے لیے نیچے فارم پر کریں
   
نام
ای میل
تبصرہ
  26318
کوڈ
 
   
متعلقہ خبریں
دفتر خارجہ کی جانب سے جاری کئے گئے ایک مشترکہ بیان میں تینوں ملکوں نے دہشتگرد مزاحمتی تحریک کے دوبارہ اٹھنے سے بچنے کےلئے افغانستان سے غیر ملکی فوجوں کے منظم، ذمہ دار اور حالات پر مبنی انخلا پر زور دیا۔
سعودی عرب اپنا اثر رسوخ استعمال کرکے کرپشن کے الزامات کی وجہ سے مستعفی ہونے والے اسلامی یونیورسٹی کے صدر ڈاکٹر یوسف الدرویش کی جگہ کسی اور سعودی استاد کو جامعہ کا صدر بنوانے کی کوشش کررہا ہے۔
الزامات کے گرداب میں پھنسے بین الاقوامی اسلامی یونیورسٹی کے صدر سعودی نیشنل یوسف الدرویش نے استعفیٰ دے دیا۔ ایک بیان میں صدر جامعہ نے اپنا استعفیٰ صدر پاکستان کو بھجوا دیا،استعفیٰ کی کاپی ریکٹر آفس کو موصول ہو گئی۔
موجودہ عالمی نظام ناکام ہوگیا ہے، اسلام ہی موجودہ حالات میں انسانیت کی نجات کا ضامن ہے۔ ہمیں ایک غلامی سے نجات پا کر دوسری غلامی میں نہیں جانا چاہیے۔ اسلام حریت وآزادی کا سبق دیتا ہے. یہ بات ملی یکجہتی کونسل کے مرکزی مشاورتی اجلاس کے مشترکہ اعلامیہ میں کہی گئی ہے۔

مقبول ترین
سعودی عرب، خلیجی ممالک، ترکی، امریکا اور یورپ کے کئی ممالک میں عیدالاضحیٰ مذہبی جوش وجذبے سے منائی جارہی ہے جبکہ کورونا وبا کے باعث سماجی فاصلے اور احتیاطی تدابیر کا مکمل خیال رکھا جارہا ہے۔
سرینگر:وسطی کشمیر کے ضلع بڈگام سے تعلق رکھنے والے نیشنل کانفرنس پارٹی کے سرکردہ رہنما روح اللہ مہدی نے ٹویٹر پر اس بات کا اعلان کیا کہ وہ اب اس منصب سے دستبردار ہوگئے ہیں، لہذا آئندہ سے ان کے کسی بھی بیان کو نیشنل کانفرنس سے منسوب نہ کیا جائے۔
ایک عجیب وغریب واقعے میں کان پور پولیس نے ایک بکری کو ماسک نہ پہننے پرگرفتارکرلیا۔ یہ واقعہ اس وقت پیش آیا جب بیکن گنج پولیس نے بکری کو اٹھایا اور جیپ میں بٹھا کر تھانے لے گئی۔
وفاقی وزیر اطلاعات شبلی فراز نے کہا ہے کہ لگتا ہے کراچی میں کوئی حکومت ہی نہیں اور کراچی والوں کوسندھ حکومت کےرحم وکرم پرنہیں چھوڑاجاسکتا۔ پیپلز پارٹی کی سندھ حکومت نے صوبے بالخصوص کراچی کی ترقی کے لیے کوئی کام نہیں کیا۔

پاکستان
 
آر ایس ایس
ہمارے پارٹنر
ضرور پڑھیں
ریڈرز سروس
شعر و ادب
مقامی خبریں
آڈیو
شہر شہر کی خبریں