Wednesday, 03 June, 2020
جمعة الوداع کے موقع پر یوم القدس منایا جائے گا، ملی یکجہتی کونسل پاکستان

جمعة الوداع کے موقع پر یوم القدس منایا جائے گا، ملی یکجہتی کونسل پاکستان

اسلام آباد ۔ جمعة الوداع کو یوم القدس منایا جائے گا۔ عوام گھروں سے فلسطینی پرچم لہرا کر یکجہتی فلسطین کریں۔ حکومت یوم القدس کو پاکستان کے سرکاری کلینڈر کا حصہ قرار دے، وزیر اعظم اپنی رہائش گاہ پر یوم القدس کو فلسطین اور پاکستان کا پرچم لہرا کر پاکستان کی فلسطین حمایت کا اعلان کریں ۔

ان خیالات کا اظہار ملی یکجہتی کونسل پاکستان کے جنرل سیکرٹری ثاقب اکبر، جماعت اہل حرم پاکستان کے مرکزی رہنما مفتی گلزار احمد نعیمی، پاکستان مسلم لیگ ق کے رہنما ارباب ہاشم، تحریک جوانان پاکستان کے چیئر مین عبد اللہ گل اور مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے رہنما مولانا ضیغم عباس سمیت اسلام آباد میں فلسطین فاؤنڈیشن کے ترجمان محمدُعلی نے بدھ کے روز پریس کلب میں منعقدہ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ 

پریس کانفرنس کا انعقاد فلسطین فاؤنڈیشن اسلام آباد چیپٹر کے زیر اہتمام کیا گیا تھا۔

پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے مقررین نے کہا کہ دنیا اس وقت کورونا کی وباء کے باعث لاک ڈاؤن کا شکار ہے لیکن فلسطین کی مظلومیت یہ ہے کہ گذشتہ 72 سالوں سے سر زمین مقدس فلسطین سنہ ۱۹۴۸ کے کورونا وائرس یعنی اسرائیل کا شکار ہے ۔ انہوں نے فلسطین میں اسرائیل کے ظلم و ستم اور مقبوضہ کشمیر میں بھارت کی ریاستی دہشت گردی کو ایک ہی سلسلہ کی کڑیاں قرار دیتے ہوئے زور دیا کہ عالمی برادری دنیا کے امن کی خاطر اسرائیل جیسی خطر ناک وائرس کا خاتمہ کرنے کے لئے موثر اقدامات کرے۔

مقررین کا کہنا تھا کہ دنیا بھر میں رمضان المبارک کا آخری جمعہ یوم القدس منایا جاتا کے لہذا پاکستان میں بھی اس دن کو یوم القدس منایا جائے گا۔ یوم القدس پر کورونا وباء کے باعث اگر چہ عوامی اجتماعات سے گریز کیا جائے گا تاہم عوام سے اپیل کی جاتی ہے کہ گھروں میں رہتے ہوئے جمعة الوداع کو شام پانچ بجے اپنی چھتوں اور کھڑکیوں سے فلسطینی پرچم لہرا کر تکبیر اللہ اکبر کی صدائیں بلند کریں اور مظلوم فلسطینیوں سے یکجہتی کا اظہار کریں۔ 

فلسطین فاؤنڈیشن اس عنوان سے سوشل میڈیا پر بھرپور مہم چلائے گی۔

مقررین نے مطالبہ کیا کہ حکومت پاکستان یوم القدس کو پاکستان میں سرکاری کیلنڈر کا حصہ قرار دے اور وزیر اعظم عمران خان اپنی رہائش گاہ سے یوم القدس کو فلسطین اور پاکستان کا پرچم لہرا کر پاکستان کی فلسطین حمایت کا اعلان کریں ۔

انہوں نے خطہ کی صورتحال پر گفتگو کرتے ہوئے مزید کہا کہ امریکہ اسرائیل اور بھارت خطے کے امن و استحکام کو تباہ و برباد کرنے میں مصروف عمل ہیں۔ کشمیر کا مسئلہ ہو یا فلسطین کا اسی طرح یمن یا دنیا کا کوئی اور مسئلہ ہو عالمی سامراجی قوتوں کے دوہرے معیار کے باعث حل نہیں ہو رہا ہے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
نوٹ: مبصر ڈاٹ کام ۔۔۔ کا کسی بھی خبر سے متفق ہونا ضروری نہیں ۔۔۔ اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔ علاوہ ازیں آپ بھی اپنا کالم، بلاگ، مضمون یا کوئی خبر info@mubassir.com پر ای میل کر سکتے ہیں۔ ادارہ

اپنا تبصرہ دینے کے لیے نیچے فارم پر کریں
   
نام
ای میل
تبصرہ
  56138
کوڈ
 
   
متعلقہ خبریں
تاریخ گواہ ہے کہ اسلام کو سب سے زیادہ نقصان مسلمان حکمرانوں نے دیا ہے۔ دنیا میں جہاں کہیں بھی مسلمان بستے تھے ان کے اگر جھونپڑیوں کو تباء کیا گیا یا ان کو قتل کیا گیا تو اس میں بھی مسلمان حکمرانوں نے اپنے تخت کو بچانے کے لیے اپنا منافقانہ طریقے کار اپنایا۔ القدس وہ مقدس جگہ ہے جس کو بچانے کے لیے یا آزاد کرنے کے لیے ہر دور میں مسلمان حکمرانوں نے نعرہ بلند کیا۔ اس نعرے کے پیچھے ان کے کئی مقاصد ہوا کرتے تھے جب وہ اپنے مقاصد کو پہنچ جاتے توالقدس کو فراموش کر دیتے تھے۔
دنیا میں لوگ کامیابی حاصل کرنے کےلیے ہر مشکل کو گلے لگانے کےلیے تیار بیٹھے ہیں کامیاب ہونا اور ترقی کی راہوں پر گامزن ہونا ہر ایک کی دلی تمناء ہے اب کامیابی کے معیارات مختلف ہیں اس حساب سے اسکی راہ بھی مختلف ہوتی ہے کسی کا معیار حکومت ہے، کسی کا دولت جمع کرنا اور کسی کا علمی میدان جیت جانا ہے وغیرہ ۔
مسجد اقصیٰ کو مسلمانوں کا قبلہ اول کہا جاتا ہے۔ اسے اسلامی نقطۂ نظر سے خانہ کعبہ اور مسجد نبوی کے بعد مقدس ترین مقام کی حیثیت حاصل ہے۔ یہ مسجد فلسطین کے دارالحکومت بیت المقدس کے مشرقی حصے میں واقع ہے جس پر اس وقت اسرائیل کا قبضہ ہے۔ کہا جاتا ہے کہ مسجد کے اندر پانچ ہزار نمازیوں کی گنجائش ہے البتہ اس کے وسیع صحن بھی موجود ہیں جن میں ہزاروں افراد نماز ادا کر سکتے ہیں۔
ملی یکجہتی کونسل پاکستان کے مرکزی رہنمائوں نے کہا ہے کہ 27 رمضان المبارک کی شب کو پاکستان کا معرض وجود میں آنا اس وطن کی خصوصی مذہبی حیثیت کا آئینہ دار ہے، حکومت پاکستان اس روز کو بھی سرکاری طور پر یوم پاکستان کی حیثیت سے منائے

مقبول ترین
آج یہ کہتے ہوئے دل کر رہا ہے کہ مسلسل ہنستی رہوں کہ سپر پاورامریکہ۔۔۔ جی ہاں! وہی امریکہ جس نے افغانستان کو کھنڈرات میں بدل دیا وہی امریکہ جس نے عراق پر ایک عرصہ جنگ مسلط کیے رکھی، کبھی بمباری کر کے تو کبھی داعش کی شکل میں کیڑے مکوڑوں کی فوج بنا کے، عراق پر اپنا تسلط برقرار رکھنا چاہا۔
علامہ محمداقبال رحمۃ اللہ تعالی علیہ نے فرمایا ہے کہ”ثبات ایک تغیرکو ہے زمانے میں“،گویا اس آسمان کی چھت کی نیچے کسی چیز کو قرارواستحکام نہیں۔تاریخ گواہ ہے کہ اس زمین کا جغرافیہ ایک ایک صدی میں کئی کئی مرتبہ کروٹیں بدلتارہا ہے۔سائنس کی بڑھتی ہوئی رفتار کے ساتھ جغرافیے کی تبدیلی کا عمل بھی تیزتر ہوتاجارہاہے،چنانچہ گزشتہ ایک صدی نے تین بڑی بڑی سپر طاقتوں کے ڈوبنے کا مشاہدہ کیا،
صوبائی وزیر مرتضیٰ بلوچ کورونا وائرس کے باعث کئی روز سے ہسپتال میں زیر علاج تھے۔ ان کا تعلق پاکستان پیپلز پارٹی سے تھا۔ میڈیا کے مطابق صوبائی وزیر کچی آبادی غلام مرتضیٰ بلوچ کورونا وائرس کے باعث انتقال کر گئے ہیں۔ مرحوم کچھ روز
نظریہ مہدویت ایسا موضوع ہے، جو صدیوں سے انسانوں کے درمیان زیر بحث رہا ہے۔ اس اعتقاد کے ساتھ انسان کا مستقبل روشن ہے، یہ عقیدہ کسی ایک قوم، کسی فرقے یا کسی مذہب کے ساتھ مخصوص نہیں ہے بلکہ مہدویت ایک ایسی عالمگیر حکومت کا نام ہے کہ جس کی بنیاد تمام انسانوں کے مابین عدل و انصاف اور اخلاق و محبت پر ہوگی۔ مہدویت ایسی آواز ہے، جو کہ ہر روشن خیال انسان کے اندر فطری طور پر موجود ہے۔ ایسی امید ہے، جو زندگی کو تروتازہ اور غم و اندیشہ سے دور کرکے نور الٰہی کی طرف لے جاتی ہے۔

پاکستان
 
آر ایس ایس
ہمارے پارٹنر
ضرور پڑھیں
ریڈرز سروس
شعر و ادب
مقامی خبریں
آڈیو
شہر شہر کی خبریں