Tuesday, 15 October, 2019
اسلام آباد اور تہران کے درمیان براہ راست پروازوں کا آغاز

اسلام آباد اور تہران کے درمیان براہ راست پروازوں کا آغاز

 

اسلام آباد ۔ ایران کی نجی کمپنی 'کیش ایئرلائن' کی جانب سے ایران اور پاکستان کے دارالحکومتوں کے درمیان پہلی بار براہ راست پروازوں کا آغاز کردیا گیا جو دونوں ہمسایہ ممالک کے تعلقات میں ایک اہم سنگ میل ہے.

موصولہ اطلاعات کے مطابق  کیش ایئرلائن کا ایئربس-321 طیارہ گزشتہ روز 46 مسافروں کو لے کر تہران سے اسلام آباد پہنچ گیا جس کے بعد یہ جہاز اسلام آباد سے مسافروں کو لے کر تہران واپس چلا گیا.

کیش ایئر لائن کی پرواز اسلام آباد کے بین الاقوامی ہوائی اڈے پر پہنچنے کے موقع پر ایک خصوصی تقریب کا انعقاد کیا گیا تھا جس میں پاکستان میں قائم اسلامی جمہوریہ ایران کے سفارتخانے کا ایک نمائندہ بھی شریک تھا.

پروگرام کے تحت کیش ایئرلائن کی پرواز ہفتے میں ایک دن (منگل) تہران سے اسلام آباد آئے گی اور اسی شام اسلام آباد سے تہران واپس جائے گی.

تہران اور اسلام آباد کے درمیان براہ راست پروازوں کے آغاز نے دونوں ممالک کے درمیان طویل المدت زمینی سفر کو آسان بنادیا ہے. پاکستان سے ایران جانے کے لئے مسافروں کو 20 گھنٹے سے زائد زمینی طے کرنا پڑتا تھا مگر اب براہ راست پروازوں کے ذریعے یہ سفر تین گھنٹے میں پورا ہوگا.

کیش ایئر لائن کی پرواز کے آغاز سے ایران اور پاکستان کے درمیان موجودہ پروازوں کی تعداد چار ہوگئی ہے اس سے پہلے 'ایران ایئر کمپنی' کی جانب سے تہران اور کراچی کے درمیان ہر جمعرات کے روز پرواز چلائی جاتی ہے جبکہ ایران کی نجی کمپنی 'تابان' کی مشہد اور لاہور کے درمیان براہ راست پروازوں کا عمل جاری ہے جبکہ حال ہی میں ایران کی مشہور کمپنی 'ماہان ایئر' نے بھی مشہد اور لاہور کے درمیان براہ راست پروازوں کا آغاز کردیا ہے.

توقع کی جاتی ہے کہ ایران اور پاکستان کے دارالحکومتوں کے درمیان براہ راست پروازوں کے آغاز سے دوطرفہ تعلقات میں ایک نئے باب کا آغاز ہوگا بالخصوص دونوں ممالک کی تاجر برداری اور کاروباری حلقوں میں مشترکہ سرگرمیوں کے لئے مثبت فضا قائم ہوگی. تہران، اسلام آباد کی براہ راست پروازوں کے ذریعے سے پاک،ایران تجارتی اور اقتصادی سرگرمیوں کو مزید بڑھانے میں مدد ملے گی.

اپنا تبصرہ دینے کے لیے نیچے فارم پر کریں
   
نام
ای میل
تبصرہ
  76842
کوڈ
 
   
متعلقہ خبریں
پیپلز پارٹی کے رہنما قمر زمان کائرہ نے سیاست میں اسٹیبلشمنٹ کی مداخلت بند کرنے کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ پی ایس پی اورمتحدہ کے بننے پر جوڈیشل کمیشن بنایا جائے۔

مقبول ترین
وزیراعظم عمران خان کا کہنا ہے کہ پاکستان خطے میں امن اور استحکام کے لئے اپنا کردار ادا کرنے کو تیار ہے۔ ایرانی صدر سے ملاقات کے بعد مشترکہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے ایرانی صدر حسن روحانی نے کہا کہ پاکستان اور
اسلام آباد میں وزیراعظم آفس کے سامنے مقبوضہ کشمیر میں جاری بھارتی مظالم کیخلاف انسانی زنجیر بنائی گئی۔ وزیراعظم عمران خان نے بھی اس تقریب میں شرکت کی اور قوم سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ بھارتی فوج نے مقبوضہ کشمیر میں
برطانوی پولیس نے 2016 میں برطانیہ سے بیٹھ کر پاکستان میں نفرت انگیز تقریر کرنے سے متعلق تفتیش میں متحدہ قومی مومنٹ (ایم کیو ایم) کے بانی الطاف حسین پر دہشت گردی کی دفعہ کے تحت فرد جرم عائد کردی۔
وزیراعظم کی چین کے صدر شی جن پنگ سے ملاقات ہوئی جس میں مقبوضہ کشمیر کی صورت حال اور علاقائی سیکیورٹی پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ وزیراعظم عمران خان اور چین کے صدر شی جن پنگ کے درمیان بیجنگ کے اسٹیٹ گیسٹ ہاؤس میں ملاقات ہوئی۔

پاکستان
 
آر ایس ایس
ہمارے پارٹنر
ضرور پڑھیں
ریڈرز سروس
شعر و ادب
مقامی خبریں
آڈیو
شہر شہر کی خبریں