Friday, 23 August, 2019
پاکستانی عمرہ زائرین کے لیے مشکلات بڑھ گئیں

پاکستانی عمرہ زائرین کے لیے مشکلات بڑھ گئیں

 اسلام آباد۔ سعودی عرب نے پاکستانی عمرہ زائرین کے لیے ایک دفعہ پھر مشکلات میں اضافہ کردیا ہے اور بائیو میٹرک تصدیق کی شرط بحال کردی ہے جس کا اطلاق 4 دسمبر سے ہوگا۔

تفصیلات کے مطابق سعودی سفارت خانے کی جانب سے جاری کردہ بیان میں کہا گیا ہے کہ پاکستان سے عمرہ کے لیے جانے والے عمرہ زائرین کے لیے بائیو میٹرک تصدیق کی شرط بحال کردی گئی ہے اس شرط کا اطلاق 4 دسمبر بروز سوموار سے ہوگا جبکہ 45 سال سے زائد عمر کے افراد غیر معینہ مدت کے لیے شناختی کارروائی سے مستثنیٰ ہوں گے۔

سعودی سفارت خانے کے ترجمان نے بتایا کہ 45 سال سے زائد عمر کے افراد عارضی جبکہ 12سال سے کم عمر بچوں کو بائیومیٹرک تصدیق سے استثنیٰ حاصل ہوگا اور آئیندہ سوموار  سے عمرہ ویزا کے لیے درخواست گزاروں کو انگلیوں کے نشانات دینا ہوں گے۔

اس سے قبل سعودی حکومت نے ایک مجوزہ کمپنی سے فیس ادا کرکے بائیو میٹرک سسٹم کے تحت دوبارہ فنگر پرنٹس کی تصدیق کے لیے کہا تو ملک کے طول وعرض میں مجوزہ کمپنی کے چند آفسزکے باہر ہزاروں افراد کی لائنیں لگ گئیںتھیں اور لوگ دور دارز کا سفر کرکے کراچی ، لاہور اور دیگر بڑے شہروں میں آنے لگے تھے۔

رش کی وجہ سے عمرہ زائرین پر پولیس نے لاٹھی چارج بھی کیا تھا۔ لوگ رات بھر ان دفاترکے باہر رہنے پر مجبور ہوگئے تھے  لیکن باوجود اس کے ان کا نمبر نہ آتا تھا ۔ جب احتجاج بڑھا تو سعودی حکومت نے بائیومیٹرک سسٹم کی شرط صرف ایک ماہ کے لیے ہٹانے کا اعلان کردیا تھا۔ نہ جانے حکومتی سطح پر ایسے فیصلے کی کیسے منظوری دی گئی جس کی وجہ سے عوام مشکلات سے دوچار ہوئے، در بدرکی ٹھوکریں کھاتے رہے اور ہماری وزرات مذہبی امور خاموش رہی وہ تو بھلا ہو میڈیا کا جس نے عوامی مشکل کے حل کے لیے مہم چلائی تو سعودی حکومت صرف ایک ماہ کے لیے پابندی ہٹانے کے لیے راضی ہوئی تھی

اپنا تبصرہ دینے کے لیے نیچے فارم پر کریں
   
نام
ای میل
تبصرہ
  8130
کوڈ
 
   
متعلقہ خبریں
ترجمان چینی وزارت خارجہ کا کہنا ہے کہ جنرل قمر جاوید باجوہ پاکستان آرمی کے زبردست سپہ سالار ہیں۔ گزشتہ دنوں وزیراعظم عمران خان نے جنرل قمر جاوید باجوہ کو مزید 3 سال کیلئے آرمی چیف مقرر کیا تھا۔ اس حوالے سے پاکستان کے دیرینہ دوست
پاکستان نے مسئلہ کشمیر کو عالمی عدالت انصاف میں لے جانے کا اصولی فیصلہ کر لیا ہے۔ میڈیا کے مطابق آئندہ ماہ جنیوا میں انسانی حقوق کمیشن اجلاس بلانے کیلئے وزارت خارجہ نے تیاری شروع کر دی ہے اور اس سلسلے میں سابق سیکرٹری
وزیراعظم عمران خان نے آرمی چیف کی مدت ملازمت میں 3 سال کی توسیع کردی۔ وزیراعظم آفس کے مطابق وزیراعظم عمران خان نے آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کے عہدے کی موجودہ مدت مکمل ہونے کے بعد انہیں مزید 3 سال کیلئے آرمی چیف مقرر
وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے خبردار کیا ہے کہ بھارت کسی بھی وقت پاکستان کے خلاف جارحیت کرسکتا ہے جس کے بارے میں بین الاقوامی برادری کو آگاہ کر رہے ہیں جبکہ پاکستانی قوم بھارتی جارحیت سے نمٹنے کے لیے مکمل تیار ہے۔

مقبول ترین
صدر آزاد کشمیر مسعود خان کا کہنا ہے کہ امیت شاہ اور راج ناتھ سنگھ سن لو ہم کشمیر میں تمہارا اور بھارتی فوجیوں کا قبرستان بنادیں گے۔ کشمیریوں سے اظہار یکجہتی ریلی سے خطاب کرتے ہوئے صدر آزاد کشمیر سردار مسعود خان کا کہنا تھا کہ آرٹیکل
سماجی رابطے کی سائٹ ٹوئٹر پر وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ بھارتی میڈیا دعوے کررہا ہے کہ افغانستان سے کچھ دہشت گرد مقبوضہ وادی میں داخل ہوئے ہیں، بھارتی دعویٰ ہے کہ دہشت گرد جنوبی علاقوں میں بھی داخل ہوئے ہیں
وزیراعظم عمران خان نے خدشہ ظاہر کرتے ہوئے کہا ہے کہ اب وہ بھارت سے مزید بات چیت کا کوئی ارادہ نہیں رکھتے کیونکہ اس کا اب کوئی فائدہ نہیں ہے۔ وزیراعظم عمران خان نے امریکی جریدے نیویارک ٹائمز کو انٹرویو دیتے ہوئے مقبوضہ کشمیر
ترجمان چینی وزارت خارجہ کا کہنا ہے کہ جنرل قمر جاوید باجوہ پاکستان آرمی کے زبردست سپہ سالار ہیں۔ گزشتہ دنوں وزیراعظم عمران خان نے جنرل قمر جاوید باجوہ کو مزید 3 سال کیلئے آرمی چیف مقرر کیا تھا۔ اس حوالے سے پاکستان کے دیرینہ دوست

پاکستان
 
آر ایس ایس
ہمارے پارٹنر
ضرور پڑھیں
ریڈرز سروس
شعر و ادب
مقامی خبریں
آڈیو
شہر شہر کی خبریں