Thursday, 28 May, 2020
’’وفاقی حکومت نے میڈیا کورٹس بنانے کا اعلان کر دیا‘‘

’’وفاقی حکومت نے میڈیا کورٹس بنانے کا اعلان کر دیا‘‘

کراچی ۔ پاکستان میں تحریک انصاف کی حکومت نے ذرائع ابلاغ سے متعلق مقدمات کو سننے کے لیے میڈیا کورٹس کے قیام کا فیصلہ کیا ہے۔

وزیراعظم عمران خان کی معاون خصوصی برائے اطلاعات و نشریات فردوس عاشق اعوان نے کراچی میں ٹی وی چینلز کے مالکان کی تنظیم پاکستان براڈ کاسٹرز ایسوسی ایشن (پی بی اے) کے وفد سے ملاقات کے بعد ایک پریس کانفرنس میں کہا کہ انہوں نے میڈیا کورٹس بنانے کے لیے چینلز مالکان کو تجویز پیش کی ہے۔

فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ میڈیا عدالتوں کا مقصد میڈیا انڈسٹری کے تنازعات کو ان خصوصی عدالتوں کے ذریعے جلد حل کرنا ہے۔ ’جب حکومت یا پیمرا ٹی وی چینلز اور کیبل آپریٹرز کے خلاف کوئی ایکشن لیتی ہے تو وہ عدالت چلے جاتے ہیں اور پھر سالہا سال مقدمات چلتے ہیں۔ اس لیے حکومت پیمرا کے ساتھ مل کر میڈیا کورٹس بنانے جا رہی ہے۔‘

ان کا کہنا تھا کہ ’میڈیا کورٹس صرف اور صرف میڈیا سے متعلق مقدمات کو سنیں گی۔ فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ میڈیا ورکرز کو مسائل کا سامنا ہے اور اس حوالے سے ان کی پی بی اے کے ساتھ تفصیلی بات چیت ہوئی ہے۔ انہوں نے بتایا کہ نئی ایڈورٹائزنگ پالیسی لائی جارہی ہے جس پر جلد علمدرآمد کیا جائے گا۔

وزیراعظم کی معاون خصوصی برائے اطلاعات نے کہا کہ وزارت اطلاعات میڈیا ریگولیٹری اتھارٹی (پیمرا) کے ساتھ مل کر ڈیجیٹلائزیشن پالیسی بھی لے کر آرہی ہے۔ انہوں نے بتایا کہ حکومت میڈیا ورکرز کی تنخواہوں پر سمجھوتہ نہیں کرے گی۔ 

اطلاعات فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ ان کی میڈیا چینلز کے مالکان سے ملاقات میں اہم باتیں ہوئی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ میڈیا مالکان بہت زیادہ محب وطن ہیں اور ’ہندوستان کے ساتھ میڈیا وار میں چینل مالکان کی تنظیم ملک کے دفاع کی پہلی دیوار ہے۔‘

فردوس عاشق اعوان نے امریکی صدر ٹرمپ کے کشمیر پر ثالثی کے بیان کو اجاگر کرنے پر ٹی وی چینل کے مالکان کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ ’یہ میڈیا میں بیٹھے ہمارے فوجی اور سپاہی ہیں جو پاکستان کی سلامتی، خودمختاری اور شناخت کے تحفظ میں ریاست کے ساتھ کھڑے ہو کر حکومت کے بیانیے کو عوام تک پہنچانے میں پارٹنر کا کردار ادا کر رہے ہیں۔‘

ان کا کہنا تھا کہ میڈیا ورکرز چینلز میں ریڑھ کی ہڈی کی حیثیت رکھتے ہیں اور ان کی مشکلات پر بھی مالکان سے بات کی ہے۔ ’حکومت نے تمام شراکت داروں کی رائے لینے کے بعد اشتہارات کی نئی پالیسی رائج کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔‘

انہوں نے کہا کہ الیکٹرانک میڈیا کو ریگولیٹر پیمرا ہے جس سے چینل مالکان کو شکایات ہیں۔ ’حکومت چینل مالکان اور پیمرا کے درمیان ثالث کا کردار ادا کرے گی تاکہ ضابطہ اخلاق پر بھی عمل ہو اور کسی کے ساتھ ناانصافی بھی نہ ہو۔‘

دوسری طرف سی پی این ای نے میڈیا کورٹس کی تجویز مسترد کر دی ہے اور کہا ہے کہ سی پی این ای میڈیا سے متعلق امتیازی قوانین سازی کی سخت مخالف ہے، سی پی این ای نے پیمرا کے مسودے کو بھی مسترد کیا تھا، سی پی این ای کی طرف سے جاری کردہ بیان میں‌ کہا گیا ہے کہ میڈیا سے متعلق تنازعات کو نمٹانے کے لیے ادارے، قوانین اورقواعد موجود ہیں، اظہارکی آزادی کےفروغ کے لیے میڈیا پردباؤ کا خاتمہ ضروری ہے،

میڈیا کے معاملات کو ملک کےعام قوانین کے تحت ہی چلایا جائے، میڈیا کورٹس جیسے امتیازی اقدامات کی تجاویز کو فوری واپس لیا جائے، پاکستان میں میڈیااورصحافی بلواسطہ اوربراہ راست دباؤ کا شکار ہیں، جمہوری حکومت کا فرض بنتا ہےکہ وہ میڈیا کو درپیش دباؤ سے نجات دلائے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
نوٹ: مبصر ڈاٹ کام ۔۔۔ کا کسی بھی خبر سے متفق ہونا ضروری نہیں ۔۔۔ اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔ علاوہ ازیں آپ بھی اپنا کالم، بلاگ، مضمون یا کوئی خبر info@mubassir.com پر ای میل کر سکتے ہیں۔ ادارہ

اپنا تبصرہ دینے کے لیے نیچے فارم پر کریں
   
نام
ای میل
تبصرہ
  45405
کوڈ
 
   
متعلقہ خبریں
قومی احتساب بیورو (نیب) کے حکام نے ادارے کے تمام اعلیٰ افسران کو نیب آفیشلز کی جانب سے بنائے گئے واٹس ایپ گروپس ختم کرنے کی ہدایت جاری کر دی۔ اس سلسلے میں مراسلہ تمام افسران کو بھجوا دیا گیا۔
سپریم کورٹ نے پشاور ہائیکورٹ کو ملٹری کورٹس سے سزا یافتہ ملزمان کو رہا کرنے سے روک دیا اور کہا ہے کہ پشاور ہائیکورٹ ضمانت کے عبوری احکامات بھی جاری نہ کرے۔ تفصیلات کے مطابق جسٹس مشیر عالم اور جسٹس قاضی امین پر مشتمل سپریم کورٹ کے بینچ نے ملٹری کورٹ سے سزا یافتہ قیدیوں کی پشاور ہائی کورٹ سے ضمانتوں کے خلاف وفاق کی درخواست پر سماعت کی۔
سپریم کورٹ میں کورونا وائرس از خود نوٹس کیس کی سماعت کے دوران ریمارکس دیئے گئے ہیں کہ وفاق اور صوبے ایک ہفتے میں یکساں پالیسی بنائیں ورنہ عبوری حکم جاری کریں گے۔ ٹیسٹنگ کٹس اور ای پی پیز پر اربوں روپے خرچ کیے جارہے ہیں۔
2019 میں پاکستان میں انسانی حقوق کی صورتحال پر ہیومن رائٹس کمیشن آف پاکستان (ایچ آر سی پی) نے اپنی رپورٹ جاری کردی۔ ہیومن رائٹس کمیشن آف پاکستان کی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ سال 2019 سیاسی اختلاف رائے کو منظم طریقے سے دبانے

مزید خبریں
وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے کورونا وائرس کے مزید پھیلاؤ کے خطرے کو مدنظر رکھتے ہوئے اضلاع کی سطح پر قرنطینہ مرکز بنانے کی ہدایت کردی ہے۔
وزارت قانون و انصاف نے صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی کی منظوری سےخالد جاوید خان کو انور منصور کی جگہ پاکستان کا نیا اٹارنی جنرل تعینات کرنے کا باضابطہ نوٹی فیکیشن جاری کر دیا ہے۔
اسلام آباد: ہائر ایجوکیشن کمیشن (ایچ ای سی) اور مائیکروسافٹ نے Imagine Cup 2020میں نیشنل یونیورسٹی آف انجینئرنگ اینڈ ٹیکنالوجی (نسٹ)، اسلام آباد کی ٹیمFlowlines کو نیشنل فائنل 2020کا فاتح قرار دیاہے۔نسٹ کی ٹیم نے ملک بھر کی 60 فائنلسٹ ٹیموں میں بہترین کارکردگی دکھائی۔
پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے بانی رہنما اور وزیر اعظم عمران خان کے دیرینہ سیاسی معاون نعیم الحق طویل علالت کے بعد انتقال کر گئے۔ انھیں کینسر کا مرض‌لاحق تھا۔ وہ کراچی کے نجی اسپتال میں زیر علاج تھے۔

مقبول ترین
وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ بھارت خطے کے امن کو داﺅ پر لگا رہا ہے ‘ بھارت متنازعہ علاقوں میں تعمیراتی کام ‘سڑکیں اور فوجی بنکرز بنا رہا ہے جو کہ اس کے توسیع پسندانہ عزائم کو ظاہر کرتا ہے ‘لداخ کے متنازعہ علاقے میں تعمیرات سے بھارت عالمی قوانین کی خلاف ورزیاںکر رہا ہے۔
نیشنل کمانڈ اینڈ کنٹرول سینٹر کے اعدادوشمار کے مطابق کورونا س کے وار تیز ہوگیاہے ،60ہزار پاکستانی متاثر‘ اب تک 1240 جاں بحق ،مجموعی طور پر 19 ہزار142 مریض صحت یاب ‘ 24 گھنٹوں میں مزید ایک ہزار446 کیسز رپورٹ ہوئے۔
سابق صدر آصف علی زرداری نے کہا ہے کہ شدید مہنگائی کے باعث عوام حکومت سے تنگ آچکی ہے مو جودہ حکومت کاخاتمہ ہی عوام کے لئے ریلیف ہو گا،عوام نا اہل نیازی حکومت سے نجات چاہتی ہے ۔ کورونا وباءاور ٹڈی دل کے خاتمے کے لئے حکو مت کی کو ئی پا لیسی نظر نہیں آئی ، ڈنگ ٹپاو¿ نظام چل رہا ہے ۔
پاکستان مسلم لیگ(ن)کی ترجمان مریم اورنگزیب نے حکومت پر طنز کرتے ہوئے کہا ہے کہ عمران کے حکم پر چینی بر آمد کی گئی‘ مقدمہ بنایا جائے ،وزیراعظم کے لاپتہ ہونے پر تشویش ہے وزیراعظم کی گمشدگی کا اشتہار شائع کرنا چائیے۔

پاکستان
 
آر ایس ایس
ہمارے پارٹنر
ضرور پڑھیں
ریڈرز سروس
شعر و ادب
مقامی خبریں
آڈیو
شہر شہر کی خبریں