Wednesday, 21 February, 2018
عاصمہ جہانگیر کے ساتھ نظریاتی اختلاف کا رشتہ تھا، آصف لقمان قاضی

عاصمہ جہانگیر کے ساتھ نظریاتی اختلاف کا رشتہ تھا، آصف لقمان قاضی

 

اسلام آباد ۔ جماعت اسلامی پاکستان کے سابق امیر قاضی حسین احمد  مرحوم کے صاحبزادے اور ملی یکجہتی کونسل کے رہنما آصف لقمان قاضی نے معروف وکیل عاصمہ جہانگیر کی رحلت پر تعزیت کرتے ہوئے اپنے پوسٹ میں لکھا ہے کہ عاصمہ جہانگیر انتقال کر گئیں۔ اللہ تعالیٰ مغفرت فرمائے اور اپنے جوار رحمت میں جگہ عطا فرمائے۔ ھم ان کے اھل خانہ کے غم میں شریک ھیں۔ اگرچہ ان کے ساتھ نظریاتی اختلاف رھا لیکن نظریاتی اختلاف بھی تو ایک رشتہ تھا ،جو اب تیزی سے ناپید ھوتا جا رھا ھے۔ فیض احمد فیض نے اپنی نظم "رقیب سے" میں لکھا ھے ۔۔۔

ھم پہ مشترکہ ھیں احسان غم الفت کے
اتنے احسان کہ گنواوں تو گنوا نہ سکوں 
ھم نے اس عشق میں کیا کھویا ھے کیا سیکھا ھے
جز ترے اور کو سمجھاوں تو سمجھا نہ سکوں

عاصمہ جہانگیر نے انسانی حقوق اور آئین کی بالا دستی کی طویل جدوجہد کی۔ اللہ تعالیٰ ان کی نیکیوں کو قبول کرے اور لغزشوں سے درگزر فرمائے۔ آمین۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
نوٹ: مبصر ڈاٹ کام ۔۔۔ کا کسی بھی خبر سے متفق ہونا ضروری نہیں ۔۔۔ اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔ علاوہ ازیں آپ بھی اپنا کالم، بلاگ، مضمون یا کوئی خبر info@mubassir.com پر ای میل کرسکتے ہیں۔ ادارہ

عاصمہ جہانگیر کے ساتھ نظریاتی اختلاف کا رشتہ تھا، آصف لقمان قاضی
اپنا تبصرہ دینے کے لیے نیچے فارم پر کریں
   
نام
ای میل
تبصرہ
  73482
کوڈ
 
   
متعلقہ خبریں
اسلامی نظریاتی کونسل پاکستان کی سفارشات کو پارلیمنٹ میں پیش کیا جانا چاہیے ۔ ان سفارشات کے نفاذ سے انتہا پسندی کی حوصلہ شکنی ہوگی نیز ریاست کا اسلامی تشخص مستحکم ہوگا ۔ ان خیالات کا اظہار کونسل کے ڈپٹی سیکریٹری جنرل ثاقب اکبر نے ایک بیان میں کیا۔
تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے تیسری شادی کرلی ان کے نکاح کی تصاویر منظر عام پر آگئیں۔ میڈیا کے مطابق تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے دو شادیوں کی ناکامی کے بعد تیسرا نکاح کرلیا جو کہ بشریٰ مانیکا نامی ان
وفاقی وزیر داخلہ احسن اقبال نے کہا ہے کہ ہم سپریم کورٹ یا ججز پر تنقید نہیں کرتے لیکن فیصلوں پر تنقید کرنا تو ہمارا آئینی اور قانونی حق ہے ۔ سب کو اپنے کردار کی طرف دیکھناہے کہ ہم سیاسی عدم استحکام کاباعث تو نہیں بن رہے۔
چیئرمین سینیٹ میاں رضا ربانی نے پاکستان فوج کی جانب سے سعودی عرب میں مزید فوجی اہلکار بھیجے جانے کے اعلان کے بعد حکومت سے اس معاملے پر وضاحت طلب کرتے ہوئے ایوان کو اعتماد میں لینے کا حکم دیا ہے۔ چیئرمین سینیٹ نے وزیر دفاع خرم دستگیر کو کہا ہے کہ وہ پیر کو ایوان میں آ کر اس بارے میں معلومات دیں۔

مزید خبریں
صوبہ بلوچستان کے ضلع تربت میں کالعدم تنظیموں سے تعلق رکھنے والے 15 اہم کمانڈروں سمیت تقریباً 200 فراری ہتھیار ڈال کر قومی دھارے میں شامل ہوگئے ہیں۔ تقریب کے مہمان خصوصی وزیراعلیٰ بلوچستان میرعبدالقدوس بزنجو تھے۔ اب تک ایک ہزار 8 سو کے قریب فراری ہتھیار ڈال کر قومی دھارے میں شامل ہوچکے ہیں۔
سابق وزیراعظم اور حکمران جماعت کے سربراہ میاں محمد نواز شریف کی کل سعودی عرب روانگی کا امکان ہے۔ جہاں وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف پہلے سے موجود ہیں۔ جبکہ وفاقی وزیر ریلوے خواجہ سعد رفیق بھی پی آئی اے کی پرواز کے ذریعے اہلخانہ کے ہمراہ سعودی عرب روانہ ہوگئے ہیں
وزیر اعظم نواز شریف نے کہا ہے کہ دہشت گردی کے خلاف پورے عزم سے لڑ رہے ہیں ، دہشت گردوں کا نیٹ ورک توڑ دیا ہے ، آخری دہشت گرد کے خاتمے تک جنگ لڑیں گے۔ وزیر اعظم نواز شریف سے پشاور میں مسلم لیگ ن کے سینیٹرز اور ارکان قومی
سابق گورنر پنجاب چوہدری محمد سرورنے تحریک انصاف میں باضابطہ طور پر شامل ہونےکی تصدیق کردی ہے۔ ایک نجی ٹی وی سے بات کرتے ہوئے چوہدری سرور کا کہنا تھا کہ تحریک انصاف جمہوریت پسند جماعت ہے اس لئے اس میں شامل ہونے کا

مقبول ترین
پاک فوج کے اضافی دستے سعودی عرب بھیجنے پر قومی اسمبلی میں بحث ہوئی ہے۔ میڈیا کے مطابق قومی اسمبلی میں پاک فوج کو سعودی عرب بھیجنے کا معاملہ پھر زیر بحث آیا۔ پاکستان تحریک انصاف کی رکن شیریں مزاری نے اظہار
وزیر مملکت اطلاعات و نشریات مریم اورنگزیب کا کہنا ہےکہ تمام اداروں کو اپنی آئینی حدود میں رہنا چاہیے۔ ان کا کہنا تھا کہ اپوزیشن لیڈر نے درست کہا ہے کہ ہم سے بھی غلطیاں ہوئیں اور جب سیاست دانوں پربھینس چوری کے پرچی کٹے تو غلطی تب بھی ہوئی۔
ایرانی دار الحکومت تہران میں سکیورٹی فورسز اور صوفی عقیدت مندوں کے درمیان ہونے والی جھڑپوں میں 6 افراد جاں بحق ہوگئے۔ تہران پولیس کے ترجمان بریگیڈیئر سعید منتظرالمہدی نے واقعے کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا کہ تہران کے
میڈیا کے مطابق سپریم کورٹ میں میڈیا کمیشن کیس کی سماعت کے دوران چیف جسٹس پاکستان جسٹس میاں ثاقب نثار نے ریمارکس دیئے کہ کل پیغام دیا گیا کہ عدالت قانون سازی میں مداخلت نہیں کر سکتی، میں نے بار بار کہا پارلیمنٹ سپریم ادارہ ہے

پاکستان
 
آر ایس ایس
ہمارے پارٹنر
ضرور پڑھیں
ریڈرز سروس
شعر و ادب
مقامی خبریں
آڈیو
شہر شہر کی خبریں