Thursday, 24 May, 2018
مسئلہ فلسطین: مسلمان حکمران برابر کے شریک ہیں، ملی یکجہتی کونسل

مسئلہ فلسطین: مسلمان حکمران برابر کے شریک ہیں، ملی یکجہتی کونسل

اسلام آباد . فلسطینیوں کے خون کے ساتھ کھیلی جانی والی ہولی پر پوری انسانیت اور ہم سب کے دل مجروح ہیں ۔اسرائیلی بربریت امریکی اقدام کا شاخصانہ ہے ۔امریکا کا بیت المقدس میں اپنے سفارت خانے کو قائم کرنا اسرائیل کو شہ دینے کے مترادف ہے کہ ایک ہی ریاست ہے دو ریاستی حل کے تاثر کی نفی کی گئی ہے۔ 

ان خیالات کا اظہار ملی یکجہتی کونسل پاکستان کے سینیئرنائب صدر علامہ سید ساجد علی نقوی نے مقبوضہ فلسطین مین اسرائیلی مظالم کے خلاف کونسل کے ہنگامی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا انھوں نے کہا کہ ٹرمپ کے اس اقدام سے دنیا کے متفقہ موقف میں کھلا تضاد پیدا ہو چکا ہے ۔ 

یوم یکجہتی فلسطین کا اعلان نہایت قابل تحسین ہے تاہم ہمیں اس سے بڑھ کر ٹھوس عملی اقدامات کرنے چاہیں ۔ فلسطینیوں کا تسلسل سے قتل عام ہو رہا ہے او آئی سی اس کو روکنے میں ناکام رہی ہے۔ اسے عملی اقدام کرنا چاہیے ۔ کونسل کے سیکریٹری جنرل لیاقت بلوچ نے اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ اسرائیل ایک ناسور کی شکل اختیار کر چکا ہے ۔ 

فلسطینی سرزمین پر عالمی استعماری قوتوں نے ایک سوچے سمجھے منصوبے کے ساتھ زیر کرنے کے لیے جو اقدامات کیے تھے اب وہ چیزیں آشکار ہو چکی ہیں ۔ فلسطین اور بیت المقدس کے ساتھ پوری دنیا کے مسلمانوں کی ایک عقیدت و محبت موجود ہے بانیان پاکستان نے قیام پاکستان نے وقت بھی فلسطین کی حمایت کی اور پوری پاکستان آج بھی اپنے قائدین کے موقف پر قائم ہے ۔ انھوں نے کہا کہ ٹرمپ نے صہیونیوں کو خوش کرنے کے لیے جو فیصلہ کیا ہے اس کے خلاف فلسطینی سراپا احتجاج ہیں۔تمام مسلمان فلسطینیوں سے اظہار یکجہتی کے لیے باہر نکلیں اور یوم یکجہتی فلسطین کو بھرپور انداز سے اپنا احتجاج ریکارڈ کروائیں۔آج امت مسلمہ کو اتحاد کی ضرورت ہے تاکہ امت کے مسائل حل ہو سکیں ۔

ملی یکجہتی کونسل پاکستان کے ڈپٹی سیکریٹری جنرل علامہ سید ثاقب اکبر نے اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ فلسطین کی موجودہ صورتحال پوری تحریک میں ایک نیا موڑ ہے ، ٹرمپ کی جارحانہ پالیسیاں فلسطین کے لیے ، پاکستان کے لیے پوری امت کے تشویش ناک ہیں۔ ٹرمپ نے گزشتہ برس ایک ریاستی حل کی بات کی تھی یعنی اس نے فلسطینی ریاست کا سرے سے ہی انکار کر دیا ۔ قائد اعظم کا شروع سے موقف رہا ہے کہ ہم اسرائیلی ریاست کے وجود کو کسی طور بھی تسلیم نہیں کرسکتے۔تاریخ میں پہلی مرتبہ حکومت پاکستان نے یوم یکجہتی فلسطین منانے کا فیصلہ کیا ہے جو نہایت خوش آئند ہے۔

جماعت اسلامی آزاد جموں و کشمیر کے امیر عبد الرشید ترابی نے اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ ٹرمپ نے ایک ریاستی حل کی بات کرکے امریکی موقف اور عالمی اتفاق رائے کی مخالفت کی ہے ۔ اسرائیل نے جس طرح حالیہ دنوں میں فلسطینیوں پر آگ اور خون کی بارش کی ہے اس کی ہم شدید مذمت کرتے ہیں ہم اپنے فلسطینی بھائیوں کے ساتھ ہیں ۔ دنیا بھر کے مسلمان فلسطینیوں کے ساتھ ہیں۔

میں سمجھتا ہوں کہ فلسطین میں ہونے والے مظالم میں مسلم حکمران برابر کے ذمہ دار ہیں جو امریکا اور اسرائیل کے ساتھ کھڑے ہیں۔کونسل کے اجلاس میں حکومت پاکستان کی جانب سے 18مئی کے یوم یکجہتی فلسطین کے فیصلے کو سراہا گیا اور اعلان کیا گیا کہ کونسل میں شامل سب جماعتیں اس روز یوم یکجہتی فلسطین منائیں گی ۔

اجلاس میں مطالبہ کیا گیا کہ او آئی سی فوجی اتحاد بنائے اور اسرائیل کے خلاف اقدام کرے ۔ اجلاس میں یہ بھی مطالبہ کیا گیا کہ وہ مسلمان ممالک جن کے اسرائیل سے تعلقات ہیں فی الفور ان تعلقات کو ختم کریں ۔

اجلاس میں اتحاد علمائے پاکستان کے نائب صدر مولانا عبد الجلیل نقشبندی ،تحریک احیائے خلافت کے راہنما قاضی ظفر الحق ، تحریک اسلامی کے سیکریٹری جنرل علامہ عارف حسین واحدی ،تنظیم اسلامی کے راہنما ڈاکٹر امتیازتنظیم اسلامی، جمعیت علمائے اسلام کے راہنمامفتی امیر زیب،جماعت اہل حدیث کے راہنما علامہ خالد سیف اللہ، تحریک جوانان پاکستان کے راہنما مولانا عمران سندھو،تنظیم العارفین کے راہنما آصف تنویر ایڈوکیٹ، اسلامی تحریک کے راہنما سکندر گیلانی ایڈووکیٹ، البصیرہ کے محققین مفتی امجد عباس، شہباز عباسی، جماعت اسلامی کے میڈیا کوارڈینیٹر شاھد شمسی ،سینیئر صحافی صفدر دانش، کونسل کے کواردینیٹر حافظ شاھد ، مولانا نجف ایڈووکیٹ اور دیگر قائدین نے شرکت کی۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
نوٹ: مبصر ڈاٹ کام ۔۔۔ کا کسی بھی خبر سے متفق ہونا ضروری نہیں ۔۔۔ اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔ علاوہ ازیں آپ بھی اپنا کالم، بلاگ، مضمون یا کوئی خبر info@mubassir.com پر ای میل کر سکتے ہیں۔

اپنا تبصرہ دینے کے لیے نیچے فارم پر کریں
   
نام
ای میل
تبصرہ
  67235
کوڈ
 
   
متعلقہ خبریں
وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کی سربراہی میں قومی سلامتی کمیٹی کا اجلاس ہوا جس میں بھارتی بلااشتعال فائرنگ کے واقعات کی سخت مذمت کی گئی۔ ذرائع کے مطابق وزیراعظم ہاؤس میں ہونے والے اجلاس میں ایل اوسی پر بھارتی فوج
پاکستان نے ورکنگ باؤنڈری پر بھارتی بلااشتعال فائرنگ سے 4 پاکستانیوں کی شہادت اور 10 افراد کے زخمی ہونے پر بھارتی ہائی کمشنر کو دفتر خارجہ طلب کر لیا۔ پاکستانی حکام نے بھارتی ہائی کمشنر سے وضاحت مانگتے ہوئے
پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے مطابق سیالکوٹ ورکنگ باؤنڈری پر بھارتی فوج نے ایک بار پھر ہٹ دھرمی کا مظاہرہ کرتے ہوئے بلااشتعال فائرنگ کی۔ بھارتی فورسز نے علی الصبح شہری آبادی کو نشانہ بنایا جس کے نتیجے میں
وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کی اپیل پر فلسطینیوں سے اظہار یکجہتی کے لیے آج (18 مئی) کو ملک بھر میں یوم یکجہتی فلسطین منایا جارہا ہے۔ ریڈیو پاکستان کی رپورٹ کے مطابق ایک بیان میں وزیراعظم شاہد خاقا ن عباسی نے کہا

مزید خبریں
صوبہ بلوچستان کے ضلع تربت میں کالعدم تنظیموں سے تعلق رکھنے والے 15 اہم کمانڈروں سمیت تقریباً 200 فراری ہتھیار ڈال کر قومی دھارے میں شامل ہوگئے ہیں۔ تقریب کے مہمان خصوصی وزیراعلیٰ بلوچستان میرعبدالقدوس بزنجو تھے۔ اب تک ایک ہزار 8 سو کے قریب فراری ہتھیار ڈال کر قومی دھارے میں شامل ہوچکے ہیں۔
سابق وزیراعظم اور حکمران جماعت کے سربراہ میاں محمد نواز شریف کی کل سعودی عرب روانگی کا امکان ہے۔ جہاں وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف پہلے سے موجود ہیں۔ جبکہ وفاقی وزیر ریلوے خواجہ سعد رفیق بھی پی آئی اے کی پرواز کے ذریعے اہلخانہ کے ہمراہ سعودی عرب روانہ ہوگئے ہیں
وزیر اعظم نواز شریف نے کہا ہے کہ دہشت گردی کے خلاف پورے عزم سے لڑ رہے ہیں ، دہشت گردوں کا نیٹ ورک توڑ دیا ہے ، آخری دہشت گرد کے خاتمے تک جنگ لڑیں گے۔ وزیر اعظم نواز شریف سے پشاور میں مسلم لیگ ن کے سینیٹرز اور ارکان قومی
سابق گورنر پنجاب چوہدری محمد سرورنے تحریک انصاف میں باضابطہ طور پر شامل ہونےکی تصدیق کردی ہے۔ ایک نجی ٹی وی سے بات کرتے ہوئے چوہدری سرور کا کہنا تھا کہ تحریک انصاف جمہوریت پسند جماعت ہے اس لئے اس میں شامل ہونے کا

مقبول ترین
پاکستان تحریک انصاف کی رہنما فوزیہ قصوری نے پارٹی سے استعفٰی دے دیا۔ فوزیہ قصوری نے ٹوئٹر پر اپنے پیغام میں لکھا کہ اپنا استعفیٰ پارٹی چیئرمین عمران خان اور دیگر پارٹی قائدین کو بھیج دیا ہے۔ فوزیہ قصوری نے سوشل میڈیا پر اپنے استعفے
گوگل کمپنی نے مصنوعی ذہانت یعنی آرٹیفیشل انٹیلیجنس کا استعمال کرتے ہوئے 'گوگل نیوز ایپ' کو اَپ ڈیٹ کر دیا ہے جس سے صارفین کو خبروں کے حصول میں مزید آسانی ہوگی۔
ملک پر قرضوں کے بوجھ میں خطرناک حد تک اضافہ ہوگیا اور غیر ملکی قرضوں کا حجم تاریخ کی بلند ترین سطح پر جا پہنچا، رواں مالی سال کے پہلے 9ماہ میں 5 ارب ڈالر غیر ملکی قرضوں کی مد میں ادا کیے گئے ہیں جبکہ مجموعی طورپر رواں مالی سال
دنیا بھر کے اسلامی ممالک میں جہاں رمضان المبارک کا استقبال مختلف طریقوں سے کیا جاتا ہے وہیں بعض ممالک میں اس ماہ مقدس کو لے کر کچھ روایتیں بھی عام ہیں جس کے تحت سعودی عرب میں برتنوں کو دھونی دینے کی ایک خاص روایت ہے۔

پاکستان
 
آر ایس ایس
ہمارے پارٹنر
ضرور پڑھیں
ریڈرز سروس
شعر و ادب
مقامی خبریں
آڈیو
شہر شہر کی خبریں