Friday, 30 October, 2020
”قومی اسمبلی: حرمت حضرت فاطمہؑ، قرارداد متفقہ منظور“

”قومی اسمبلی: حرمت حضرت فاطمہؑ، قرارداد متفقہ منظور“

اسلام آباد ۔ قومی اسمبلی میں پیپلز پارٹی کی رکن شگفتہ جمانی کی جانب سے پیش کی جانے والی قرار داد کوحکومت و اپوزیشن ارکان نے حرمت حضرت فاطمتہ الزہرا سلام اللہ علیہا کے حوالے سے حرمت سیدہ کائنات پر یک ذبان، متفقہ قرارداد منظورکرتے ہوئے دختر دسول، زوجہ علی المرتضی، مادر حسینین کریمین کی حرمت پر جان قربان، گستاخی کرنیوالے مذہبی سکالر کے خلاف کارروائی کا مطالبہ کیاہے  ۔

قرارداد پیش کرتے ہوئے پیپلز پارٹی کی رکن شگفتہ جمانی کا کہنا تھا کہ وزیر پارلیمانی امور اور وزیر مذہبی امور سمیت حکومت و اپوزیشن کی شکر گزار ہوں جنہوں نے بھرپور حمایت کی یہ معزز ایوان بارگاہ اُم السادات ،مخدوم کائنات ، دختر مصطفی کاتم النبین ، بانوئے مرتضیٰ،اُم الحسنین کریمین ، سیدہ طیبہ ، طاہرہ، راضیہ مرضیہ ، عابدہ ، زاہدہ ، محدثہ، معظم مبارکہ ، ذکیہ سیدة النساءسیدہ فاطمہ البتول الزہرہ سلام اللہ علیہاکی بارگاہ عالی مرتبت میں کروڑ ہا بار ھدیہ سلام عقیدت پیش کرتی ہوں ۔

 قرار داد کے مطابق حضرت حذیفہ رضی اللہ عنہ بیان کرتے ہیں کہ رسول اکرم نے فرمایا کہ ایک فرشتہ جو اس رات سے پہلے کبھی زمین پر نہ اترا تھا اس نے اپنے پروردگارسے اجازت مانگی کے مجھے سلام کرنے حاضر ہونا ہے اور یہ خوشخبری دی کہ فاطمہ سلام اللہ علیہا ایل جنت کی تمام عورتوں کی سردار ہیں اور امام حسن ؑ اور امام حسین ؑ جنت کے تمام نوجوانوں کے سردار ہیں ، حضرت مسور بن محترمہ رضی اللہ عنہ سے روایت ہے کہ رسول اکرم نے فرمایا فاطمہ ؑ میری جان کا حصہ ہے پس جس نے اسے ناراض کیا اس نے مجھے ناراض کیا ۔

حضرت عبداللہ بن زبیر رضی اللہ عنہ فرماتے ہیں رسول اکرم نے فرمایا بے شک فاطمہ ؑ سلام اللہ علیہا میری جان کا حصہ ہے اُسے تکلیف دینے والی چیز مجھے تکلیف دیتی ہے اور اسے مشقت میں ڈالنی والا مجھے مشقت میں ڈالتا ہے ۔ حضرت ابو حنظلہ رضی اللہ عنہ سے روایت ہے کہ رسول اکرم نے فرمایا کہ بے شک فاطمہؑ سلام اللہ علیہا میری جان کا حصہ ہے جس نے اسے ستایا اس نے مجھے ستایا ۔

ایک مشہور حدیث جو حدیث کسا کے نام سے مشہور ہے کے مطابق حضرت رسول اکرم نے ایک یمنی چادر کے نیچے حضرت فاطمہ ، حضرت امام علی ؑ، حضرت امام حسن ؑ اور حضرت امام حسین ؑ کو اکھٹا کیا اور فرمایا کہ بے شک اللہ تعالیٰ چاہتا ہے کہ اے میرے اہلبیتؑ تجھ سےرجس کو دور کرے اور ایسا پاک کرے جیسے پاک کر نے کا حق ہے ۔

سیدہ طاہرہ، ام ابیہا کے حوالے سے ایک مذہبی سکالر نے سوشل میڈیا پر توہین کی ہے جس کی یہ ایوان نہ صرف مذمت کرتا ہے اور اس سے پوری امت کی دل آزاری تصور کر تاہے ۔صحابہ کرام ؓ، اہلبیت ؑاطہار ،اذواج مطہرات رضوان اللہ علیہا، اور برگزیدہ ہستیوں کی بارگاہ میں اشارہ ،کنایةً، تحریراً، تقریر یا کسی بھی انداز میں بے ادبی و گستاخی قابل مذمت اور ناقابل قبول ہے ۔

اراکین اسمبلی نے اسے اسلامی تعلیمات کے منافی ، قومی بیانیہ پیغام پاکستان کے متفقہ اعلامیہ و فتوی کے خلاف ورزی کا سنگین جرم قرار دیتے ہوئے اس امر کا مطالبہ کر تا ہے کہ حکومتی سطح پر اقدامات اٹھائے جا نا ناگزیر ہیں اس کے لئے موجودہ قوانین پر عملدرآمد کے ساتھ ساتھ ان قوانین میں ترامیم لا کر انہیں مزید سخت اور موثر کر نے کی ضرورت ہے ۔تاکہ توہین و اہانت کا دروازہ مکمل طور پربند ہو سکے۔

مسلم لیگ ن کے رکن قومی اسمبلی سید عمران علی شاہ حضرت فاطمہ ؑ کاذکر کرتے ہوئے ایوان میں آبدیدہ ہوگئے انہوں نے سپیکر اسمبلی سے حضرت فاطمہؑ کی توہین کرنے والے مولوی اشرف جلالی کے خلاف کارروائی کا مطالبہ کردیا۔ انہوں نے کہا ہم علماے کرام کا احترام کرتے ہیں مگر آصف اشرف جلالی نامی مولوی نے خاتون جنت پر تنقید کی اورغلط الفاظ بولے میری جناب سپیکر آپ سے گزارش ہے کہ اس کے خلاف کارروائی کریں۔

 قرآن پاک میں اللہ اپنے نبی حضرت محمد سے فرماتا ہے کہ اے نبی کہہ دیجیے میں اپنی نبوت کا اجرتم سے نہیں مانگتا سوائے اس کے میرے قرابت داروں سے محبت کرو ،میں کہتا ہوں علی محمد خان اورپیر نور الحق قادری اس معاملے کو دیکھیں اور اس مولوی کو کہیں کہ وہ اللہ سے رجوع کرے۔ وزیر مملکت شہر یا ر آفریدی نے کہایہ ہماراا یمانی واخلاقی فرض ہے ہر وہ سو چ جو ان کی نفی کاسوچے اس کو عبرت کا نشان بنایا جائے۔

سیدہ کی حرمت پر ہماری جان بھی قربان ، اشرف جلالی کے خلاف کارروائی کی جائے، غلام محمد لالی نے سپیکر سے رولنگ کا مطالبہ کیا جبکہ چیئرمین کشمیر کمیٹی شہریار آفریدی کا کہنا تھا کہ آل رسول کی حرمت پر کوئی سمجھوتا نہیں ہوگا ۔قرار داد ایوان میں پیش کی گئی تو اسے متفقہ طور پر منظور کرلیا گیا۔

سیدہ طاہرہ، ام ابیہا کے حوالے سے ایک مذہبی سکالر نے سوشل میڈیا پر توہین کی ہے جس کی یہ ایوان نہ صرف مذمت کرتا ہے بلکہ آئین پاکستان اور نیشنل ایکشن پلان کے تحت کارروائی کا مطالبہ کرتا ہے،حضور اکرم خاتم النبیین، اہلبیت علیہ السّلام، صحابہ کرام رضوان اللہ علیہم اجمعین اور بزرگان کا احترام لازم ہے ۔قرارداد کی منظوری کے بعد پینل آف چیئر امجد خان نیازی نے پورے ایوان کو مبارک باد پیش کی-

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
نوٹ: مبصر ڈاٹ کام ۔۔۔ کا کسی بھی خبر سے متفق ہونا ضروری نہیں ۔۔۔ اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔ علاوہ ازیں آپ بھی اپنا کالم، بلاگ، مضمون یا کوئی خبر info@mubassir.com پر ای میل کر سکتے ہیں۔ ادارہ

 

اپنا تبصرہ دینے کے لیے نیچے فارم پر کریں
   
نام
ای میل
تبصرہ
  30462
کوڈ
 
   
مزید خبریں
وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے کورونا وائرس کے مزید پھیلاؤ کے خطرے کو مدنظر رکھتے ہوئے اضلاع کی سطح پر قرنطینہ مرکز بنانے کی ہدایت کردی ہے۔
وزارت قانون و انصاف نے صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی کی منظوری سےخالد جاوید خان کو انور منصور کی جگہ پاکستان کا نیا اٹارنی جنرل تعینات کرنے کا باضابطہ نوٹی فیکیشن جاری کر دیا ہے۔
اسلام آباد: ہائر ایجوکیشن کمیشن (ایچ ای سی) اور مائیکروسافٹ نے Imagine Cup 2020میں نیشنل یونیورسٹی آف انجینئرنگ اینڈ ٹیکنالوجی (نسٹ)، اسلام آباد کی ٹیمFlowlines کو نیشنل فائنل 2020کا فاتح قرار دیاہے۔نسٹ کی ٹیم نے ملک بھر کی 60 فائنلسٹ ٹیموں میں بہترین کارکردگی دکھائی۔
پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے بانی رہنما اور وزیر اعظم عمران خان کے دیرینہ سیاسی معاون نعیم الحق طویل علالت کے بعد انتقال کر گئے۔ انھیں کینسر کا مرض‌لاحق تھا۔ وہ کراچی کے نجی اسپتال میں زیر علاج تھے۔

مقبول ترین
پاک فوج کے ترجمان میجر جنرل بابر افتخار نے بھارتی ونگ کمانڈر ابھینندن کی رہائی سے متعلق بیان پر سخت ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے اسے معاملہ مسخ کرنے اور پاکستان کی فتح متنازعہ بنانے کی کوشش قرار دیدیا ہے۔
پشاور کے علاقے دیر کالونی زرگر آباد میں مدرسے سے ملحقہ مسجد میں دھماکے میں 8 افراد جاں بحق اور 110 افراد زخمی ہوگئے، زخمیوں کو ہسپتال منتقل کر دیا گیا، زخمیوں میں سے متعدد کی حالت تشویشناک ہے۔ ہسپتالوں میں ایمرجنسی ڈکلیئر اور ڈاکٹروں
فرانس میں گستاخانہ خاکوں کے اہم معاملے پر سینیٹ اور قومی اسمبلی کے اجلاس میں متفقہ قرار دادیں منظور کر لی گئیں۔ قراداد منظور ہونے کے ساتھ ہی قومی اسمبلی کا ایوان نعرہ تکبیر اللہ اکبر سے گونج اٹھا۔ منظور کی گئی قرار داد کے مطابق یہ ایوان فرانس
فنانشل ایکشن ٹاسک فورس نے پاکستان کو اگلے سال 2021 تک گرے لسٹ میں برقرار رکھنے کا فیصلہ کیا ہے اور یوں بھارت کی پاکستان کو بلیک لسٹ کرانے کی کوششیں ناکام ہوگئی۔ ایف اے ٹی ایف کے صدر نے پریس کانفرنس کے دوران کہا کہ پاکستان فی الحال ایف اے ٹی ایف

پاکستان
 
آر ایس ایس
ہمارے پارٹنر
ضرور پڑھیں
ریڈرز سروس
شعر و ادب
مقامی خبریں
آڈیو
شہر شہر کی خبریں