Thursday, 14 November, 2019
فاٹا اصلاحات بل: اپوزیشن کا قومی اسمبلی سے واک آؤٹ، اجلاس پھر ملتوی

فاٹا اصلاحات بل: اپوزیشن کا قومی اسمبلی سے واک آؤٹ، اجلاس پھر ملتوی

اسلام آباد ۔ فاٹا اصلاحات بل پیش نہ کرنے اور اپوزیشن کے واک آؤٹ کے بعد کورم پورا نہ ہونے کے باعث قومی اسمبلی کا اجلاس ایک مرتبہ پھر ملتوی کردیا گیا۔

قومی اسمبلی کا اجلاس اسپیکر سردار ایاز صادق کی زیرصدارت شروع ہوا تو حکومت کی جانب سے آج بھی فاٹا اصلاحات بل ایوان میں پیش نہ کیا جاسکا۔

فاٹا اصلاحات بل پیش نہ کرنے پر اپوزیشن ارکان احتجاجاَ ایوان سے واک آؤٹ کر کے چلے گئے جس کے بعد کورم پورا نہ ہونے کی نشاندہی پر اجلاس ملتوی کردیا گیا۔

ایوان میں اظہار خیال کرتے ہوئے پیپلز پارٹی کے رکن اسمبلی سید نوید قمر نے کہا کہ قومی خزانے سے بھاری رقم ایوان پر خرچ ہوتی ہے لیکن کچھ حاصل نہیں، قومی اسمبلی ایجنڈے سے فاٹا سے متعلق نکات راتوں رات نکال لیے جاتے ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ حکومت کے وزیر نے  خود تسلیم کیا کہ دھرنے پر حکومت تنہا ہوگئی، حکومت کو تنہا رہ جانے کے معاملے سے سبق سیکھنا چاہیے۔

اپوزیشن کے واک آؤٹ کے دوران وزیر سیفران عبدالقادر بلوچ نے اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ فاٹا بل پر تھوڑا سا موقع اور دے دیں ، اپوزیشن نے صرف فاٹا پر ایک نکتہ ذہن میں رکھا ہوا ہے، فاٹا بل میں مزید تاخیر نہیں کریں گے اور جلد پیش کردیا جائے گا۔

عبدالقادر بلوچ نے کہا کہ اپوزیشن کی تین بار حکومت آئی انہیں کبھی فاٹابل لانے کی توفیق نہیں ہوئی، فاٹا کے لوگوں کو جو حقوق ملنے ہیں مل جائیں گے ۔

اپنا تبصرہ دینے کے لیے نیچے فارم پر کریں
   
نام
ای میل
تبصرہ
  22210
کوڈ
 
   
متعلقہ خبریں
حکومتی مذاکراتی ٹیم اور اپوزیشن کی رہبر کمیٹی کے درمیان مذاکرات کا پہلا دور ختم ہو گیا ہے تاہم کوئی پیشرفت نہ ہو سکی، حکومت اور اپوزیشن کے درمیان ڈیڈلاک برقرار ہیں۔ مذاکرات کے بعد مختصر پریس کانفرنس کرتے ہوئے پرویز خٹک
اپوزیشن رہنماؤں کی گرفتاری اور پروڈکشن آرڈر جاری نہ کرنے پر قومی اسمبلی کے اجلاس میں حکومتی اور اپوزیشن اراکین ایک بار پھر آمنے سامنے آگئے اور ایک دوسرے پر تنقید کی بوچھاڑ کی۔ ڈپٹی اسپیکر قاسم سوری کی زیر صدارت قومی
وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت اجلاس میں فیصلہ کیا گیا ہے کہ اپوزیشن کے کسی جلسے اور ریلی کو نہیں روکا جائے گا۔ وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت حکومتی ترجمانوں کا اجلاس ہوا جس میں وزیراعظم نے دورہ امریکا پر حکومتی
اسپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر کی صدارت میں اجلاس ہوا جس میں قائد حزب اختلاف شہباز شریف کی جانب سے وزیراعظم کو سیلیکٹڈ کہنے پر قومی اسمبلی میں ہنگامہ آرائی کی گئی تاہم اسپیکر نے سیلیکٹڈ کا لفظ ہذف کرتے ہوئے کہا کہ میڈیا ہذف شدہ الفاظ کا

مقبول ترین
وزیراعظم عمران خان نے کرتار پور راہداری اور دنیا کے سب سے بڑے گوردوارے دربار صاحب کا افتتاح کردیا۔ کرتار پور راہداری کے افتتاح کے موقع پر سکھ مت کے بانی بابا گرونانک دیو جی کے 550 ویں جنم دن کی تقریبات میں شرکت کے
بھارتی سپریم کورٹ نے بابری مسجد کیس کا فیصلہ سناتے ہوئے مرکزی حکومت کو حکم دیا کہ 3 سے 4 ماہ کے اندر اسکیم تشکیل دے کر زمین کو مندر کی تعمیر کے لئے ہندووں کے حوالے کرے۔ بھارتی میڈیا کے مطابق چیف جسٹس رنجن
وزیراعظم عمران خان نے حکومتی مذاکراتی ٹیم سے ملاقات میں کہا ہے کہ میں کسی بھی صورت میں اپنا استعفیٰ نہیں دوں گا، اگر شرط صرف استعفیٰ کی ہے تو پھر مذاکرات کا کیا فائدہ ہے؟ وزیردفاع پرویز خٹک کی سربراہی میں حکومتی مذاکرات
رہبر کمیٹی کے رکن اور رہنما جے یو آئی (ف) اکرم درانی کا کہنا ہے کہ آزادی مارچ 2 روز کے بعد نیا رخ اختیار کرے گا۔ اسلام آباد میں پریس کانفرنس کے دوران اپوزیشن رہبر کمیٹی کے رکن اکرم درانی کا کہنا تھا کہ افسوس ہے موسم کے حوالے

پاکستان
 
آر ایس ایس
ہمارے پارٹنر
ضرور پڑھیں
ریڈرز سروس
شعر و ادب
مقامی خبریں
آڈیو
شہر شہر کی خبریں