Sunday, 26 May, 2019
صدارتی نظام اور ملٹری کورٹس پر اپنا موقف نہیں بدلیں گے، بلاول بھٹو

صدارتی نظام اور ملٹری کورٹس پر اپنا موقف نہیں بدلیں گے، بلاول بھٹو

اسلام آباد ۔ پاکستان پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ  خارجہ پالیسی دینی ہے تو اس حوالے سے بیانیہ وزیرخارجہ کو دینا چاہیے اور اگر انتہاپسندی سے متعلق پالیسی بیان کرنا ہے تو وہ وزیر داخلہ دے لیکن وزیر اعظم اگر آئی ایس پی آر سے پالیسی بیان دلوائیں گے تو وہ ادارہ متنازع ہوگا اور ہم نہیں چاہتے کہ ہمارے ادارے متنازع ہوں۔

اسلام آباد میں پریس کانفرنس میں بلاول بھٹو زرداری کا حکومت پر تنقید کرتے ہوئے کہنا تھا کہ ہمیں گرفتاری کی دھمکیوں سے نہیں ڈرا سکتے، ہم جیل جانے کو تیار ہیں لیکن ہم 18 ویں ترمیم، ملٹری کورٹس، جمہوریت، آزادی اظہار اور صدارتی نظام پر اپنا اصولی مؤقف نہیں بدلیں گے، آپ نے جو کرنا ہے کرلیں، ہم نے ملک کے لیے قربانیاں دی ہیں لہٰذا آپ کی دھمکیوں اور نیب گردی سے ڈرنے والے نہیں ہیں۔

بلاول کا کہنا تھا کہ انہوں نے شروع دن سے کہا کہ ناراض نوجوانوں کو ریاست و حکومت کو انگیج کرنا چاہیے، خاص طور پر کے پی اور فاٹا میں جب ایک نسل سیاسی شعور پیدا کررہی ہے، ہمیں ان نوجوان کی حوصلہ افزائی کرنی چاہیے۔

بلاول بھٹو کا کہنا ہے کہ یہ نوجوان فاٹا سے تعلق رکھتے ہیں اور ممکن تھا کہ دہشت گردی کے ظلم برداشت کرنے کے بعد وہاں کے نوجوان انتشار کی طرف بھی جاسکتے تھے لیکن پاکستان خوش قسمت ہے کہ پختونخوا کے نوجوان اس راہ پر نہیں چل رہے ہیں، وہ جمہوریت اور انسانی حقوق کی بات کررہے ہیں۔ 


پی ٹی ایم کو جتنی چھوٹ لینی تھی لے لی، اب وقت ختم ہوگیا: ترجمان پاک فوج

انہوں نے کہا کہ میں ابھی بھی سمجھتا ہوں کہ ریاست اور حکومت کو انگیج کرنا چاہیے اور بطور پارٹی چیئرمین میں بھی اس قسم کے نوجوانوں سے بات کرنے کو تیار ہوں لیکن اس کا مطلب یہ نہیں ہے کہ میں کسی پارٹی کو سپورٹ کرتا ہوں۔

انہوں نے حکومت کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ پی پی چیئرمین کا کہنا ہے کہ یہ جس طریقے سے معیشت چلا رہے ہیں، اس سے غریب عوام کی جانب سے ردعمل آئے گا، ہم کب تک ان کو برداشت کریں گے؟ بوجھ ڈالنا ہے تو امیروں اور جہانگیر ترینوں پر ڈالو۔

انہوں نے کہا کہ حکومت ایمنسٹی کے لیے جگہ بنارہی ہے اور امیروں کے کالے پیسے کو بچانے کے لیے ایمنسٹی دے رہی ہے لیکن رمضان میں غریب عوام کو کچھ نہیں دے رہے ہیں بلکہ سبسڈی ختم کرنے کو تیار ہیں۔

پی پی پی چیئرمین کا کہنا تھا کہ 2008 میں پیپلز پارٹی نے مشکل حالات کے باوجود کام کیا ہے، 5 سالوں تک سب سے زیادہ روزگار دیا۔ 

انہوں نے کہا کہ آپ نے ایک کروڑ نوکریاں دینے کا وعدہ کیا  لیکن آپ تو روزگار چھین رہے ہیں اور ہر شعبے میں بیروزگاری بڑھتی جارہی ہے۔

انہوں نے کہا کہ نیب کا کالا قانون اور ہماری معیشت ساتھ نہیں چل سکتے، چھوٹے تاجروں کو تنگ کریں گے تو ملک کیسے چلے گا؟ بے نامی اکاؤنٹس کے لیے دوغلی پالیسی نہیں چلے گی، جہانگیر ترین کے بے نامی اکاؤنٹس پاک ہیں لیکن دیگر تاجروں کے اکاؤنٹس ناپاک ہیں۔

ان کا کہنا ہے کہ مشرف نے سیاسی انتقام کے لیے نیب کا ادارہ بنایا، کالا اور آمر کا قانون اور جمہوریت ساتھ ساتھ نہیں چل سکتے۔

بلاول بھٹو زرداری کا کہنا تھا کہ لاہور میں نیب کی حراست میں پروفیسرز مرتے ہیں، بریگیڈیئر (ر) اسد منیر پر ذہنی تشدد کریں گے تو جان دیں گے، لیکن انہوں نے موت کے بعد انصاف کی اپیل کی، امید ہے کہ چیف جسٹس انہیں انصاف دیں گے۔

انہوں نے مزید کہا کہ جب تک نظام نہیں بدلیں گے اور ایسا نظام نہیں لائیں گے جس میں سب کے لیے ایک قانون ہو تو انصاف کیسے ہوگا؟ پلی بارگین کا نظام چلتا رہے گا تو نیب خود منی لانڈرنگ کا ادارہ آج بھی ہے اور کل بھی ہوگا۔ 

ان کا کہنا تھا کہ شرجیل میمن بغیر سزا کے جیل میں موجود ہے، دوغلی پالیسی نہیں چلے گی، عدالت سے سزا سنائے جانے کے بعد گرفتاری کیا جائے، اسپیکر سندھ اسمبلی آغا سراج درانی کو اسلام آباد سے گرفتار کرتے ہو لیکن تحریک انصاف والوں کو نہیں پکڑتے بلکہ انہیں چھوڑتے ہو، ان سب چیزوں پر نیب کو جواب دینا ہوگا، نیب ہم سب کا احتساب کرے لیکن قانون پر عمل کرنا ضروری ہے، ہم چاہتے ہیں ادارے اور پارلیمان اپنا کام کریں۔

ایک سوال کے جواب میں بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ پی پی پی ایک ہی پارٹی کو سپورٹ کرتی ہے وہ پی پی ہی ہے، اگر دوسری سیاسی جماعتیں انسانی حقوق اور جمہوریت کی بات کریں گے تو ان نکات کو سپورٹ کرتا ہوں۔

راؤ انوار سے متعلق سوال کے جواب میں پی پی چیئرمین کا کہنا تھا کہ راؤ انوار کے بیان پر صدر زرداری نے وضاحت کردی تھی کہ بات راؤ انوار سے کافی دور کی ہے، پورا پاکستان جانتا ہے کہ وہ ایک آدمی نہیں تھا جو انکاؤنٹر کررہا تھا۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
نوٹ: مبصر ڈاٹ کام ۔۔۔ کا کسی بھی خبر سے متفق ہونا ضروری نہیں ۔۔۔ اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔ علاوہ ازیں آپ بھی اپنا کالم، بلاگ، مضمون یا کوئی خبر info@mubassir.com پر ای میل کر سکتے ہیں۔ ادارہ

اپنا تبصرہ دینے کے لیے نیچے فارم پر کریں
   
نام
ای میل
تبصرہ
  19241
کوڈ
 
   
متعلقہ خبریں
لاڑکانہ میں چیئرمین پیپلز پارٹی بلاول بھٹوزرداری نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے رتو ڈیرو میں بچوں سمیت سیکڑوں افراد کے ایڈز مبتلا ہونے کے مسئلے پر گفتگو کی۔ انہوں نے کہا کہ ایچ آئی وی اور ایڈز میں بہت فرق ہے، ایچ آئی وی کا علاج نہ ہو تو دس
قومی اسمبلی میں اظہار خیال کرتے ہوئے چیئرمین پیپلزپارٹی بلاول بھٹو زرداری کا کہنا تھا کہ داتا دربار لاہور میں دہشت گردی کا واقعہ افسوسناک ہے، اس دن وزیراعظم اسمبلی میں آئے اور دعا بھی کی، لیکن ہمیں امید تھی کہ وزیراعظم قوم سے خطاب
زیراعظم عمران خان نے ملک میں صدارتی نظام سے متعلق خبروں کو مسترد کردیا۔ صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ صدارتی نظام کے بارے میں کوئی سوچ ہی موجود نہیں ہے۔
قومی اسمبلی کے باہر میڈیا بریفنگ میں پیپلز پارٹی کے چیرمین بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ عوام مہنگائی کے سونامی میں ڈوب گئے، بے روزگاری بڑھتی جارہی ہے، ہر پاکستانی کے لیے زندگی تنگ ہوگئی ہے، ون یونٹ یا صدارتی نظام نافذ کرنے کی کوشش

مزید خبریں
سپریم کورٹ میں آج دوران سماعت چیف جسٹس پاکستان کا سینئر وکیل اعتزاز احسن سے خوش گوار مکالمہ ہوا جس کے دوران چیف جسٹس نے کہا کہ میری طرف سے کسی کی دل آزاری ہوئی ہے تو معاف کردیں۔ چیف جسٹس نے کہا کہ تسلیم کرتا ہوں کہ
میڈیا کے مطابق لاہور ہائی کورٹ کے جسٹس علی اکبر قریشی نے اظہر صدیق ایڈوووکیٹ کی درخواست پر سماعت کی۔ جس میں سگریٹ نوشی پر پابندی کے قوانین کی پاسداری نہ کرنے کی نشاندہی دہی کی گئی۔
صوبہ بلوچستان کے ضلع تربت میں کالعدم تنظیموں سے تعلق رکھنے والے 15 اہم کمانڈروں سمیت تقریباً 200 فراری ہتھیار ڈال کر قومی دھارے میں شامل ہوگئے ہیں۔ تقریب کے مہمان خصوصی وزیراعلیٰ بلوچستان میرعبدالقدوس بزنجو تھے۔ اب تک ایک ہزار 8 سو کے قریب فراری ہتھیار ڈال کر قومی دھارے میں شامل ہوچکے ہیں۔
سابق وزیراعظم اور حکمران جماعت کے سربراہ میاں محمد نواز شریف کی کل سعودی عرب روانگی کا امکان ہے۔ جہاں وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف پہلے سے موجود ہیں۔ جبکہ وفاقی وزیر ریلوے خواجہ سعد رفیق بھی پی آئی اے کی پرواز کے ذریعے اہلخانہ کے ہمراہ سعودی عرب روانہ ہوگئے ہیں

مقبول ترین
قومی احتساب بیورو (نیب) کے چیئرمین جسٹس (ر) جاوید اقبال کی آڈیو ویڈیو اسکینڈل کے مرکزی کرداروں کے خلاف احتساب عدالت میں ریفرنس دائر کردیا گیا۔ نیب کی طرف سے دائر کیا جانے والا ریفرنس 630 صفحات پر مشتمل ہے جس میں آڈیو
لاڑکانہ میں چیئرمین پیپلز پارٹی بلاول بھٹوزرداری نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے رتو ڈیرو میں بچوں سمیت سیکڑوں افراد کے ایڈز مبتلا ہونے کے مسئلے پر گفتگو کی۔ انہوں نے کہا کہ ایچ آئی وی اور ایڈز میں بہت فرق ہے، ایچ آئی وی کا علاج نہ ہو تو دس
اسلام آباد میں وفاقی وزراء اور چیئرمین ایف بی آر کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے عبدالحفیظ شیخ کا کہنا تھا کہ موجود حکومت نے اقتدار سنبھالا تو معاشی حالت بہت بری تھی، جب حکومت آئی تو قرضہ 31 ہزار ارب روپے سے زیادہ تھا، برآمدات گر رہی تھیں
پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے مطابق ایرانی وزیر خارجہ جواد ظریف نے آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ سے ملاقات کی اور خطے میں استحکام کے لیے پاکستان کے مثبت کردار کو سراہا۔

پاکستان
 
آر ایس ایس
ہمارے پارٹنر
ضرور پڑھیں
ریڈرز سروس
شعر و ادب
مقامی خبریں
آڈیو
شہر شہر کی خبریں