Wednesday, 20 February, 2019
عاصمہ جہانگیر کا انتقال
 

پاکستان کی ممتاز وکیل اور انسانی حقوق کی سرگرم کارکن حقوقِ انسانی کی علمبردار اور سکیورٹی اداروں کی ناقد عاصمہ جہانگیر 11 فروری کو لاہور میں 66 برس کی عمر میں انتقال کر گئیں ہیں۔ انکی زندگی پر مختصر نظر

  • عاصمہ جہانگیرکا انتقال عاصمہ جہانگیرکا انتقال


تصاویر
نئے پاکستان کا پہلا نیا سال
یوم دفاع و شہداء کا دن
جشنِ آزادی کی تیاریاں
عیدِ قرباں کیلئے مویشی منڈی
فلسطینیوں کے احتجاج پر اسرائیلی بربریت
مقبوضہ کشمیر میں بھارت کے ریاستی مظالم
یوم پاکستان پرمسلح افواج کی شاندار پریڈ
وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کا دورۂ نیپال
اداکارہ سری دیوی کی آخری رسومات
عاصمہ جہانگیر کا انتقال
’’کشمیر بنے گا پاکستان‘‘
دنیا میں نئے سال کا شاندار استقبال
’’کوئٹہ میں چرچ پر خودکش حملہ‘‘
’’جشنِ عید میلاد النبیﷺ‘‘
اسلام آباد میں دھرنا: آپریشن اور جھڑپیں
شہید میجراسحاق کا سفر آخرت
مقبول ترین
عالمی عدالت انصاف میں کلبھوشن یادیو سے متعلق کیس کی سماعت دوسرے روز بھی جاری رہی، ایڈہاک جج جسٹس (ر) تصدق جیلانی ناسازی طبع کے باعث عدالت نہیں آئے۔ پاکستان کے اٹارنی جنرل انور منصور نے تصدق حسین جیلانی کی علالت
پلوامہ حملے پر قوم سے خطاب میں وزیر اعظم نے کہا کہ چند دن پہلے مقبوضہ کشمیر کے علاقے پلوامہ میں واقعہ ہوا،بھارت نے بغیرسوچے سمجھے پاکستان پر الزام لگادیا، ہم سعودی ولی عہد کے دورے کی تیاری کررہے تھے، اس لئے اب بھارتی
سعودی ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان دو روزہ دورہ مکمل کر کے پاکستان سے روانہ ہو گئے۔ روانگی سے قبل نور خان ایئربیس پر وزیراعظم عمران خان کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے سعودی ولی عہد کا کہنا تھا کہ پاکستان جیو اسٹریٹجک اعتبار
سعودی عرب کے ولی عہد محمد بن سلمان کے دورے پاکستان کے بعد جاری مشترکہ اعلامیے میں دونوں برادر ممالک کے درمیان تاریخی تعلقات کی تجدید کرتے ہوئے تمام شعبوں میں باہمی تعلقات کی بڑھتی ہوئی رفتار پر اطمینان کا اظہار کیا گیا۔

براہ راست نشریات
پاکستان کا المیہ یہ ہے کہ پاکستانی معاشرے میں ہر سو کالے دھن اور اندھیر نگری کا راج ہے اور اس مروجہ نظام کے باعث معاشرہ نہ صرف ٹوٹ پھوٹ کا شکار ہو چکا ہے بلکہافراتفری اور انتشار کی جیتی جاگتی تصویر بھی بن گیا ہے ایسے حالات میں وطن عزیز
گلگت بلتستان کا ریاست جموں کشمیر سے دو سوسالہ سیاسی اور قانونی رشتے کی داستان اندوہناک بھی ہے اور عجیب غریب بھی۔ 1840 سے 1947 تک کی تاریخ میں کہیں نظر نہیں آتا کہ گلگت بلتستان اور لداخ کے لوگ مہاراجہ کی حکومت سے خوش رہا ہو
اسرائیل جو کہ ایک نسل پرست صہیونی ریاست ہے اور اس کا وجود چونکہ صہیونیوں نیبوڑھے استعمار برطانیہ کی مدد سے عالم اسلام کے قلب فلسطین پرغاصبانہ طور پر سنہ1948ء میں قائم کیا تھاتاہم ستر برس کے اس غاصبانہ قبضہ اور تسلط

عدالتوں سے نااہل شخص کو پارٹی صدر بنانے کا فیصلہ کیسا ہے؟
نتائج ملاحظہ کریں
پاکستان
 
آر ایس ایس
ہمارے پارٹنر
ضرور پڑھیں
ریڈرز سروس
شعر و ادب
مقامی خبریں
آڈیو
شہر شہر کی خبریں