Wednesday, 29 January, 2020
’’کافر ہوں سر پھرا ہوں مجھے مار دیجئے‘‘

’’کافر ہوں سر پھرا ہوں مجھے مار دیجئے‘‘

اسلام آباد ۔گزشتہ روز لاہور میں ہونیوالے دھماکے میں ڈی آئی جی ٹریفک کیپٹن ریٹائرڈ سید احمد مبین بھی شہید ہوئے، وہ ایک بہادر انسان اور قابل افسر تھے۔

شہادت سے قبل سوشل میڈیا پر کیپٹن احمد مبین نے ایک نظم پوسٹ کی جس کا عنوان ’’کافر ہوں سر پھرا ہوں مجھے مار دیجئے‘‘ تھا۔ مرحوم نے جو آخری نظم شیئر کی وہ درج ذیل ہے ۔

’’کافر ھُوں، سر پھرا ھُوں، مجھے مار دیجیے
میں سوچنے لگا ھُوں ، مجھے مار دیجیے

ھے احترام ِحضرت ِانسان میرا دین
بے دین ھو گیا ھُوں، مجھے مار دیجیے

میں پوچھنے لگا ھُوں سبب اپنے قتل کا
میں حد سے بڑھ گیا ہوں، مجھے مار دیجیے

کرتا ھُوں اہل جبہ ودستار سے سوال
گستاخ ھو گیا ھُوں، مجھے مار دیجیے

خوشبو سے میرا ربط ھے جگنو سے میرا کام 
کتنا بھٹک گیا ھُوں، مجھے مار دیجیے

معلوم ھے مجھے کہ بڑا جرم ھے یہ کام 
میں خواب دیکھتا ھُوں، مجھے مار دیجیے

زاہد یہ زہد و تقویٰ و پرہیز کی روش
میں خوب جانتا ھُوں، مجھے مار دیجیے

بے دین ھُوں مگر ھیں زمانے میں جتنے دین
میں سب کو مانتا ھُوں، مجھے مار دیجیے

پھر اس کے بعد شہر میں ناچے گا ھُو کا شور
میں آخری صدا ھُوں، مجھے مار دیجیے

میں ٹھیک سوچتا ھُوں، کوئی حد میرے لیے؟
میں صاف دیکھتا ھُوں، مجھے مار دیجیے 

یہ ظلم ھے کہ ظلم کو کہتا ھُوں صاف ظلم
 کیا ظلم کر رھا ھُوں، مجھے مار دیجیے

میں عشق و امن ھون، میں علم ھُوں، میں خواب
اک دردِ لادوا ھُوں ، مجھے مار دیجیے

زندہ رھا تو کرتا رھُوں گا ھمیشہ پیار
میں صاف کہہ رھا ھُوں، مجھے مار دیجیے

جو زخم بانٹتے ھیں انہیں زیست پہ ھے حق 
میں پھول بانٹتا ھُوں، مجھے مار دیجیے

ہے امن شریعت تو محبت مرا جہاد
باغی بہت بڑا ھُوں، مجھے مار دیجیے

بارود کا نہیں مرا مسلک درود ھے
میں خیر مانگتا ھُوں، مجھے مار دیجیے‘‘

اپنا تبصرہ دینے کے لیے نیچے فارم پر کریں
   
نام
ای میل
تبصرہ
  98504
کوڈ
 
   
مقبول ترین
عرب میڈیا کے مطابق سعودی فرمانروا شاہ سلمان بن عبدالعزیز نے امریکی صدر کی جانب سے مشرق وسطیٰ میں اسرائیل اور فلسطین کے درمیان تنازع کے خاتمے کے لیے امن منصوبہ ’ ڈیل آف سینچری‘ پیش کرنے اور فریقین کے درمیان امریکی سرپرستی میں
فلسطین کے صدر محمود عباس نے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے مشرق وسطیٰ کے امن منصوبے کو ’’صدی کا تھپڑ‘‘ قرار دیتے ہوئے مسترد کر دیا برطانوی خبررساں ادارے رائٹرز کی رپورٹ کے مطابق امریکی صدر کے اعلان کے بعد سے غزہ
دفتر خارجہ نے ہندوستانی وزیراعظم نریندر مودی کے حالیہ متشدد بیانات کو سختی سے مسترد کرتے ہوئے عالمی برادری سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ اس کا نوٹس لے۔ دفتر خارجہ کی جانب سے جاری اہم بیان میں کہا گیا ہے کہ بھارتی انتہا پسند بیانیہ
مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی سیکرٹری جنرل علامہ راجہ ناصر عباس جعفری نے کہا ہے کہ صدر ٹرمپ جسے امن منصوبے کا نام دے رہے ہیں وہ دراصل” امن کے خلاف جنگ“ (War Against Peace )ہے ۔اسے عالمی قوانین کی

پاکستان
 
آر ایس ایس
ہمارے پارٹنر
ضرور پڑھیں
ریڈرز سروس
شعر و ادب
مقامی خبریں
آڈیو
شہر شہر کی خبریں