Monday, 16 December, 2019
ملی یکجہتی کونسل کا مسئلہ کشمیر پر سیمینار منعقد کرنے کا اعلان

ملی یکجہتی کونسل کا مسئلہ کشمیر پر سیمینار منعقد کرنے کا اعلان

اسلام آباد ۔ ملی یکجہتی کونسل پاکستان کے زیر اہتمام ’’مودی کا دورہ اسرائیل اور مسئلہ کشمیر‘‘ کے موضوع پر ایک روزہ سیمینار رواں ماہ کے 18 تاریخ بروز منگل بوقت 4 بجے سہ پہر نیشنل پریس کلب، اسلام آباد میں منعقد کیا جائے گا۔ جس میں ملی یکجہتی کونسل میں شامل جماعتوں کے مرکزی قائدین خطاب کریں گے۔


اس سلسلے میں ملی ملی یکجہتی کونسل کے مرکزی سیکرٹری جنرل لیاقت بلوچ نے بتایا کہ مقبوضہ کشمیر میں نہتے اور مظلوم کشمیریوں پر بھارتی جارح افواج کی جانب سے روا رکھا جانے والا ظلم و ستم گذشتہ ستر برسوں سے عالمی انسانی ضمیر کے دروازے پر دستک دے رہا ہے۔

انہوں نے بتایا کہ بھارت اور اسرائیل کے بڑھتے ہوئے سیاسی ، عسکری اور تزویراتی روابط بھی امت مسلمہ کے لیے لمحہ فکریہ ہیں ۔ اسی طرح بھارتی وزیر اعظم نریندر مودی کا حالیہ دورہ اسرائیل اورصہیونی قابض ریاست کے وزیر اعظم نیتن یاہو اور دیگر اسرائیلی حکام کی جانب سے مسئلہ کشمیر کے حوالے سے اور پاکستان کے خلاف بھارت کی ہر ممکن حمایت اور تعاون پر مشتمل بیانات امت مسلمہ کے لیے بالعموم اور وادی کشمیر کے مسلمانوں نیز پاکستانیوں کے لیے بالخصوص تشویشناک ہیں۔ عالمی استعماری اور جارح قوتوں کا باہم متحد ہونا عالم اسلام کے خلاف نئی عالمی صف بندی کی نشاندہی کرتاہے۔

لیاقت بلوچ کا کہنا تھا کہ عالمی افق پر ہونے والی ان اہم تبدیلیوں بالخصوص نریندر مودی کے دورہ اسرائیل کے مضمرات اور اس کے مسئلہ کشمیر پر پیدا ہونے والے اثرات کے جائزے نیز اس حوالے سے امت مسلمہ کی ذمہ داریوں کے تعین کے لیے ملی یکجہتی کونسل پاکستان کے زیر اہتمام ’’مودی کے دورہ اسرائیل اور مسئلہ کشمیر ‘‘ کے موضوع پر ایک سیمینار رواں ماہ کے 18 تاریخ بروز منگل بوقت 4 بجے سہ پہر نیشنل پریس کلب، اسلام آباد میں منعقد کیا جارہا ہے۔ جس میں ملی یکجہتی کونسل میں شامل جماعتوں کے مرکزی قائدین خطاب کریں گے۔

ملی یکجہتی کونسل کے مرکزی ڈپٹی سیکرٹری جنرل ثاقب اکبر کے مطابق اس سیمینار میں ملی یکجہتی کونسل پاکستان کے قائدین اور دیگر مذہبی و سیاسی راہنما شرکت فرمائیں گے۔

اپنا تبصرہ دینے کے لیے نیچے فارم پر کریں
   
نام
ای میل
تبصرہ
  78634
کوڈ
 
   
متعلقہ خبریں
ڈونلڈ ٹرمپ کا پاکستان کے بارے بیان اور ڈو مور کا تقاضا وطن عزیز کے داخلی معاملات میں مداخلت اور عالمی قوانین کی خلاف ورزی کے مترادف ہے۔ ہم کسی بھی قوت کو وطن عزیز کے اندرونی معاملات میں مداخلت کی اجازت نہیں دے سکتے ۔
ملی یکجہتی کونسل پاکستان کے زیر اہتمام ’’مودی کا دورہ اسرائیل اور مسئلہ کشمیر‘‘ کے موضوع پر ایک روزہ سیمینار پرسوں 18 تاریخ بروز منگل بوقت 4 بجے سہ پہر نیشنل پریس کلب، اسلام آباد میں منعقد کیا جائے گا۔
ملی یکجہتی کونسل پاکستان یوم القدس کے موقع پر ایک عظیم الشان ریلی کا انعقاد کرے گی۔ان خیالات کا اظہار جماعت اسلامی اسلام آباد کے ناظم زبیر فاروق نے ملی یکجہتی کونسل پاکستان کی یوم القدس
افغانستان کی جانب سے پاکستانی سرحد پر فائرنگ اور گولہ باری انتہائی ہولناک ہے جس کو فالفور ختم ہونا چاہے اسی طرح ایران کی سرحد ی گارڈز پر حملہ بھی انتہائی قابل مذمت ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ کونسل

مقبول ترین
معاون خصوصی برائے اطلاعات فردوس عاشق اعوان نے کہا ہے کہ اگر لاڑکانہ میں بھٹو زندہ ہے تو غریب مر چکے ہیں۔ بلاول نے کرپشن سے اپنا رشتہ ابھی تک نہیں توڑا۔ پیپلز پارٹی نے بھٹو کے نظریے کو ختم کر دیا ہے۔
نریندر مودی کی اگلی جیت ہندوستانی شہریت کا ترمیمی ایکٹ ہے، جس نے آسام اور پورے ہندوستان کے مسلمانوں کے اندر بے چینی کو جنم دے دیا ہے۔ اب دیکھنا یہ ہے کہ مودی جی اور کون کون سی غلطیوں کی اصلاح کرتے ہیں۔ ناگالینڈ، ٹیپورہ، خالصتان بھی مودی کا منہ تک رہے ہیں۔ امید ہے فاتح ہندوستان جلد یا بدیر ان غلطیوں کی اصلاح کی بھی کوشش کرینگے۔ آئینی جنگ تو وہ شاید جیت جائیں، تاہم انکے ان اقدامات کے سبب وہ وقت دور نہیں کہ جب ہندوستان کی ساجھے کی ہانڈی بھرے چوراہے میں پھوٹے گی اور تاریخ ایک مرتبہ پھر ہندوستان کی تقسیم کا منظر اپنی آنکھوں سے مشاہدہ کریگی۔
بلوچستان نیشنل پارٹی (بی این پی) مینگل کے سربراہ سردار اختر مینگل کا کہنا ہے کہ ہم چاہتے ہیں جنوبی پنجاب بھی برابرکا ترقی یافتہ ہو، سی پیک سے لاہور میٹروٹرین چلائی گئی لیکن بلوچستان میں کیکڑا بس بھی نہیں دی گئی۔
کوئٹہ میں ورکرز کنونشن سے خطاب میں بلاول بھٹو زرداری کا کہناتھا کہ اس وقت بلوچستان میں لوگوں کو حقوق نہیں دیےجارہے، بلوچستان میں دیگر صوبوں سے زیادہ وسائل ہیں، مگربدقسمتی سے بلوچستان کے لوگ محروم ہیں، نالائق اور نااہل

پاکستان
 
آر ایس ایس
ہمارے پارٹنر
ضرور پڑھیں
ریڈرز سروس
شعر و ادب
مقامی خبریں
آڈیو
شہر شہر کی خبریں