Wednesday, 21 August, 2019
افغانستان میں امن و استحکام دیکھنا چاہتے ہیں، خواجہ آصف

افغانستان میں امن و استحکام دیکھنا چاہتے ہیں،  خواجہ آصف

اسلام آباد ۔ وزیر خارجہ خواجہ محمد آصف نے کہا ہے کہ پاکستان کی افغانستان پر پوزیشن بالکل واضح ہے۔ ہم  ہمسائیہ ملک میں امن و استحکام دیکھنا چاہتے ہیں، مذاکراتی میکنزم پر مکمل عمل ہونا چاہئے۔

سیالکوٹ میں عید کے موقع پر میڈیا سے بات کرتے ہوئے وزیر خارجہ خواجہ آصف نے افغان صدر کے بیان پر اپنے ردعمل میں کہا ہے کہ افغانستان پر ہماری پوزیشن واضح ہے، افغانستان میں امن و استحکام دیکھنا چاہتے ہیں۔مذاکراتی میکنزم پر مکمل عمل ہونا چاہئے۔

 وزیر خارجہ نے مزید کہا کہ افغان امن کیلئے پاکستان پہلے ہی باہمی، سہ فریقی اور 4 فریقی مذاکراتی میکنزم کا حصہ ہے اور ہم یہ سمجھتے ہیں کہ مذاکراتی میکنزم پر مکمل عمل ہونا چاہئے اور افغانستان میں امن کیلئے پاکستان اپنا کردار ادا کر رہا ہے۔

اپنا تبصرہ دینے کے لیے نیچے فارم پر کریں
   
نام
ای میل
تبصرہ
  16319
کوڈ
 
   
متعلقہ خبریں
پاکستان نے مسئلہ کشمیر کو عالمی عدالت انصاف میں لے جانے کا اصولی فیصلہ کر لیا ہے۔ میڈیا کے مطابق آئندہ ماہ جنیوا میں انسانی حقوق کمیشن اجلاس بلانے کیلئے وزارت خارجہ نے تیاری شروع کر دی ہے اور اس سلسلے میں سابق سیکرٹری
وزیراعظم عمران خان نے آرمی چیف کی مدت ملازمت میں 3 سال کی توسیع کردی۔ وزیراعظم آفس کے مطابق وزیراعظم عمران خان نے آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کے عہدے کی موجودہ مدت مکمل ہونے کے بعد انہیں مزید 3 سال کیلئے آرمی چیف مقرر
وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے خبردار کیا ہے کہ بھارت کسی بھی وقت پاکستان کے خلاف جارحیت کرسکتا ہے جس کے بارے میں بین الاقوامی برادری کو آگاہ کر رہے ہیں جبکہ پاکستانی قوم بھارتی جارحیت سے نمٹنے کے لیے مکمل تیار ہے۔
پاکستان نے بھارت کی جانب سے مقبوضہ کشمیر کی آئینی حیثیت تبدیل کرنے کے اقدام پر ردعمل دیتے ہوئے بھارتی ہائی کمشنر اجے بساریہ کو پاکستان چھوڑنے کا حکم دے دیا۔ غیر ملکی خبر رساں ادارے اے ایف پی کے مطابق پاکستان نے بھارتی

مقبول ترین
پاک فوج نے لائن آف کنٹرول (ایل او سی) پر بھارتی فوج کی بلااشتعال فائرنگ اور سیز فائر معاہدے کی خلاف ورزیوں کا منہ توڑ جواب دیا جس کے نتیجے میں ایک افسر سمیت 6 بھارتی فوجی ہلاک اور 2 بنکرز تباہ ہوگئے۔
پاکستان نے مسئلہ کشمیر کو عالمی عدالت انصاف میں لے جانے کا اصولی فیصلہ کر لیا ہے۔ میڈیا کے مطابق آئندہ ماہ جنیوا میں انسانی حقوق کمیشن اجلاس بلانے کیلئے وزارت خارجہ نے تیاری شروع کر دی ہے اور اس سلسلے میں سابق سیکرٹری
وزیراعظم عمران خان نے آرمی چیف کی مدت ملازمت میں 3 سال کی توسیع کردی۔ وزیراعظم آفس کے مطابق وزیراعظم عمران خان نے آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کے عہدے کی موجودہ مدت مکمل ہونے کے بعد انہیں مزید 3 سال کیلئے آرمی چیف مقرر
بھارت کی جانب سے مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت سے متعلق آرٹیکل 370 ختم کیے جانے کے بعد سے وزیراعظم عمران خان نے شدید تشویش کا اظہار کیا تھا اور وہ کشمیر کے معاملے پر بین الاقوامی برادری سے مسلسل رابطے میں ہیں۔

پاکستان
 
آر ایس ایس
ہمارے پارٹنر
ضرور پڑھیں
ریڈرز سروس
شعر و ادب
مقامی خبریں
آڈیو
شہر شہر کی خبریں