Friday, 18 October, 2019
دہشت گردی کے خلاف پاک فوج کی کامیابیاں اور بھارتی سازشیں

دہشت گردی کے خلاف پاک فوج کی کامیابیاں اور بھارتی سازشیں
تحریر: اعزاز احمد

 

دنیا کا واحد ملک پاکستان ہے جو دہشت گردی کے خلاف یکسوئی کے ساتھ نبرد آزما ہے ہزاروں شہریوں اور ہزاروں سیکورٹی اہلکاروں نے اپنی جانوں کا نذارانہ دے کر دہشت گردوں کو ناکام بنایا ہے پاکستان ہی وہ دنیا کا واحد ملک ہے جس نے دہشت گردی سے دنیا کو محفوظ بنانے کیلئے اتنی قربانیاں دیں ہیں کہ جس کی مثال دنیا کی تاریخ میں نہیں ملتی۔ 

دنیا میں ایک ہی ملک میں اندرونی ہجرت بھی پاکستان میں ہی ہوئی قبائیلی عوام نے دہشت گردی کے خلاف جنگ میں قوم کو سرخرو کرنے کیلئے نہ صرف اپنی جانوں کا نذرانہ دیا بلکہ لاکھوں کی تعداد میں قبائلیوں نے اپنا گھر بار صرف اس مقصد کیلئے چھوڑا کہ دنیا میں امن قائم ہو سکے اور ان دہشت گردوں کا صفایا ہو سکے جو دشمن طاقتوں کے آلہ کر بن کر پاکستان میں دہشت گردی کے ٹھکانے بنا کر امن تباہ کرنا چاہتے تھے دنیا کے بہت سارے ملک مل کر بھی اس جنگ میں کامیابی حاصل نہیں کر سکے لیکن پاکستان کی فوج اور عوام نے مل کر یہ جنگ جیت لی ہے۔ 

یہ الگ بات ہے کہ ناکام ہوتے ہوئے دہشت گرد آخری حربے کے طور پر اپنے وار کر رہے ہیں لیکن اب ان کے یہ وار بھی ناکامی کی طرف جا رہے ہیں کیونکہ سابق آرمی چیف جنرل راحیل شریف کی قیادت میں جو آپریشن شروع ہوا تھا وہ اب موجودہ سپہ سالار جنرل قمر جاویدباجوہ کی پرعزم قیادت میں کامیابی کے جھنڈے گاڑھ رہا ہے ۔

آپریشن ردالفساد کے تحت جاری آپریشن سے ملک کے ننانوے فیصد حصوں میں امن قائم ہو چکا ہے باقی ایک فیصد حصے سے دہشت گردوں کا صفایا کرنے کیلئے آپریشن رد الفساد کے تحت جاری ’آپریشن خیبر۔فور پوری کامیابی سے جاری و ساری ہے ۔

وفاق کے زیر انتظام قبائلی علاقے (فاٹا) میں آپریشن رد الفساد کے تحت جاری ’آپریشن خیبر۔فور‘ میں پاک فوج نے بڑی کامیابیاں حاصل کرتے ہوئے 90 مربع کلومیٹر کا علاقہ دہشت گردوں سے خالی کرالیا۔پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کی جانب سے جاری کردہ بیان میں کہا گیا کہ آپریشن خیبر فور میں اب تک 13 دہشت گرد مارے جا چکے ہیں اور 6 دہشت گرد زخمی ہوئے جبکہ دہشت گردوں کے ساتھ جھڑپ میں پاک فوج کے سپاہی عبدالجبار شہید ہوئے۔اسپیشل سروسز گروپ نے کارروائی کرتے ہوئے زمین میں نصب بارودی مواد کو قبضے میں لے کر اسے ناکارہ بنادیا۔

ایئر فورس (پاک فضائیہ)، آرمی ایوی ایشن اور آرٹرلی کی مشترکہ کارروائیوں کے نتیجے میں دہشت گردوں کے کئی ٹھکانے تباہ کردیے گئے جبکہ پاک فوج کی مختلف سمت میں پیش قدمی جاری ہے۔

فاٹا کے سب سے مشکل علاقے راجگال میں 16 جولائی کی صبح پاک فوج نے دہشت گردوں کے خاتمے کے لیے آپریشن رد الفساد کے تحت آپریشن خیبر فور کا آغاز کیا تھا۔

آئی ایس پی آر کے ڈائریکٹر جنرل (ڈی جی) میجر جنرل آصف غفور نے پریس کانفرنس کے دوران راجگال آپریشن کی تفصیلات بتاتے ہوئے کہا تھا کہ ’اس آپریشن کا مقصد سرحد پار داعش کو پاکستان میں کارروائی سے روکنا ہے‘۔دنیا کے امن کو بچانے کیلئے پاکستان نے اپنے حصے سے بہت زیادہ کام کیا ہے اب دنیا کے دیگر ممالک کا بھی فرض بنتا ہے کہ ان ممالک کا پیچھا کیا جائے جو پاکستان کی دہشت گردی کے خلاف جنگ کو ناکام بنانے کیلئے افغانستان کی سرزمین کا استعمال کر کے پاکستان میں نہ صرف ددہشت گردی کو فروغ دینا چاہتے ہیں بلکہ پاک چین اقتصادی راہداری منصوبے کی ناکامی کیلئے سازشیں کر رہے ہیں۔ 

بھارت اس حوالے سے فرنٹ لائن ملک کا کردار ادا کر رہا ہے پاکستان کی قربانیوں کا اعتراف کر کے دہشت گردی کے خلاف ساتھ دینے کے بجائے افغانستان کی سرزمین سے پاکستان میں دہشت گردی پھیلا نے کے نیٹ ورک کو مظبوط بنا رہا ہے۔ 

افغانستان میں بھارت کے درجنوں قونصل خانے یہی ڈیو ٹی انجام دے رہے ہیں اور ان قونصل خانوں سے نہ صرف دہشت گردوں کی مالی معاونت کی جاتی ہے بلکہ دہشت گردوں کی پاکستان کے خلاف زہن سازی کی تربیت بھی فراہم کی جاتی ہے۔ 

بھارت کے اسی گھناونے کردار کی بدولت دنیا کا امن خطر ے میں پڑہ چکا ہے حالانکہ حقیقت تو یہ ہے کہ بھارت اس وقت دہشت گردوں کی جنت بن چکا ہے۔ 

دنیا میں سب سے زیادہ دہشت گرد تنظیمیں بھارت میں ہی پنب رہی ہیں اس وقت بھارت میں 67 دہشت گرد تنظیمیں اپنا کام آزادی سے جاری رکھی ہوئیں ہیں اور انہیں روکنے والا کوئی نہیں ہزاروں مسلمانوں کے خون سے ہاتھ رنگنے والے نریندر مودی کے ہاتھ میں بھارت کی حکومتی ڈور بھاگ آچکی ہے تو ان دہشت گرد تنظیموں اور ہندو انتہا پسندوں کو بھی شہہ ملی ہے کہ آزادانہ دہشت گردی اور انتہا پسندی کو فرغ دیں ،دنیا کو ان حقائق کا ادراک کرتے ہوئے بھارت کے مکروہ چہرے کو نہ صرف عیاں کرنا چاہیے بلکہ بھارت کی اس دہشت گردی کی روک تھام کیلئے موثر اقدامات کرنے ہوں گے ۔

بہر حال بھارت جتنی بھی کوششیں کرے دہشت گردی کے خلاف جنگ میں جیت پاکستان کی ہی ہوگی کیونکہ دنیا کی بہترین اورجذبے سے سرشار پاک فوج نے پاکستانی قوم کے تعاون سے یہ جنگ جیت لی ہے آپریشن خیبر فور کے تحت حالیوں کارروائیوں میں ملنے والی کامیابیاں اس بات کا مظہر ہیں کہ تمام تر سازشوں کے باوجود پاکستان دہشت گردی کے خلاف جنگ جیت کر سرخرو ہونے جا رہا ہے ۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
نوٹ: مبصر ڈاٹ کام ۔۔۔ کا کالم نگار، بلاگر یا مضمون نگار کی رائے سے متفق ہونا ضروری نہیں ۔۔۔ اگر آپ بھی ہمارے لیے کالم / مضمون یا اردو بلاگ لکھنا چاہتے ہیں تو قلم اٹھائیے اور 500 الفاظ پر مشتمل تحریر اپنی تصویر، مکمل نام، فون نمبر اور مختصر تعارف کے ساتھ info@mubassir.com پر ای میل کریں۔ ادارہ

دہشت گردی کے خلاف پاک فوج کی کامیابیاں اور بھارتی سازشیں
اپنا تبصرہ دینے کے لیے نیچے فارم پر کریں
   
نام
ای میل
تبصرہ
  64838
کوڈ
 
   
متعلقہ خبریں
محنت سے عاری، مایوسی کے پیکر، خود سے تنگ لوگوں کی زبان سے یہ جملہ اکثر سننے کو مل جاتا ہے کہ پاکستان نے ہمیں کیا دیا ؟ ملک کو ستر سال ہو چکے ہیں اور تمام مسائل اسی طرح کھڑے ہیں؟ تعلیم، صفائی، ٹرانسپورٹ
پاکستانی قوم اس وقت جن باغیانہ اور دہشت گردانہ سرگرمیوں کے ساتھ اندرونی سیاسی انتشار اور خلفشار سے دو چار ہے وہ نہایت افسوسناک ہے، اس سے ملک و ملت کے استحکام اور بقا اور ملی یکحہتی کو سخت نقصان پہنچا ہے
ملی یکجہتی کونسل پاکستان کے زیر اہتمام ’’مودی کا دورہ اسرائیل اور مسئلہ کشمیر‘‘ کے موضوع پر ایک روزہ سیمینار نیشنل پریس کلب، اسلام آباد میں منعقد کیا گیا۔ جس میں ملی یکجہتی کونسل میں شامل جماعتوں کے مرکزی قائدین نے خطاب کیا۔
11فروری2017کو ایران کے اسلامی انقلاب کی 38ویں سالگرہ منائی جارہی ہے۔ یہ انقلاب11فروری 1979ء کوکامیاب ہوا۔ امام خمینی اس انقلاب کی قیادت کرتے ہوئے پیرس سے تہران پہنچے جہاں پر ان کا فقیدالمثال عوامی استقبال کیا گیا۔

مقبول ترین
وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ یہ پہلی اسمبلی ہے جو’ڈیزل‘ کے بغیر چل رہی ہے اگر فضل الرحمان کے لوگ میرٹ پر ہوئے تو انہیں بھی قرضے دیے جائیں گے۔ وزیراعظم عمران خان نے نوجوانوں کے لیے ’کامیاب جوان پروگرام‘ کا افتتاح کردیا ہے۔
وزیراعظم عمران خان کی زیرصدارت تحریک انصاف کی کورکمیٹی کا اجلاس ہوا جس میں پنجاب اور خیبر پختونخوا کے وزرائے اعلیٰ اورتین گورنرز نے شرکت کی۔ حکومت نے مولانا فضل الرحمان سے مذاکرات کے لیے کمیٹی بنانے کا فیصلہ کیا ہے
اسلام آباد میں تقریب سے خطاب کرتے ہوئے فواد چوہدری نے کہا کہ نوکریاں حکومت نہیں نجی سیکٹر دیتا ہے یہ نہیں کہ ہر شخص سرکاری نوکر ی ڈھونڈے ، حکومت تو 400 محکمے ختم کررہی ہے مگرلوگوں کا اس بات پر زور ہے کہ حکومت نوکریاں دے۔
وزیراعظم عمران خان کا کہنا ہے کہ پاکستان خطے میں امن اور استحکام کے لئے اپنا کردار ادا کرنے کو تیار ہے۔ ایرانی صدر سے ملاقات کے بعد مشترکہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے ایرانی صدر حسن روحانی نے کہا کہ پاکستان اور

پاکستان
 
آر ایس ایس
ہمارے پارٹنر
ضرور پڑھیں
ریڈرز سروس
شعر و ادب
مقامی خبریں
آڈیو
شہر شہر کی خبریں