Friday, 18 October, 2019
چین نے565 میٹر بلندی پر پل تعمیر کر لیا

چین  نے565 میٹر بلندی پر پل تعمیر کر لیا

بیجنگ ۔ جنوب مغربی چین میں 565 میٹر کی بلندی پر تعمیر کیا جانے والا بیپان جیانگ پل مکمل کرلیاگیا۔یہ پل جنوب مغربی چین کے پہاڑی علاقے میں تعمیر کیا گیا ہے جو چین کے دو صوبوں یونان اور گوئی ڑو کو ایک دوسرے سے ملا دے گا۔

چینی میڈیا کے مطابق دریائے بیپان جیانگ کے اوپر بنائے جانے والے اس پل کی تعمیر سن 2012ءمیں شروع ہوئی تھی۔ اس پل کو ٹریفک کے لیے رواں سال کھول دیا جائے گا جس کے بعد صوبے گوئی ڑو کے شہر لیو پانشوئی سے صوبے یونان کے شہر سوان وائی تک کی مسافت پانچ گھنٹے سے کم ہو کر دو گھنٹے سے بھی کم رہ جائے گی۔

یہ پل تقریباً ایک کلومیٹر چوڑی وادی پر بنایا گیا ہے۔ اس کی مجموعی لمبائی ایک ہزار تین سو اکتالیس میٹر ہے۔بیپان جیانگ پل کا ایک سرا ایک چٹان پر اور دوسرا دوسری چٹان پر بنایا گیا ہے اور یہ زمین کی سطح سے پانچ سو پینسٹھ میٹر بلند ہونے کی وجہ سے بلاشبہ دنیا کا بلند ترین پل ہے تاہم زمین کی سطح سے لے کر اوپر تک انسانی ہاتھوں سے تعمیر کیا جانے والا سب سے بڑا پل اب بھی جنوبی فرانس میں ہے۔

میو ویاڈوک کے ستون سطحِ زمین سے شروع ہو کر تین سو پینتالیس میٹر کی بلندی تک جاتے ہیں۔بیپان جیانگ پل کے ستون دریا کے دونوں طرف کافی دوری پر تعمیر کیے گئے ہیں اور ان کی بلندی تقریباً دو سو پچاس میٹر ہےتاہم درمیان میں اس پل کی زمین کی سطح سے اونچائی بہرحال 565 میٹر ہے اور یوں اسے بجا طور پر دنیا کا بلند ترین پل کہا جا رہا ہے۔

اِس پل کی تعمیر سے پہلے اس وادی کے دونوں طرف رہنے والوں کو ایک دوسرے کی جانب جانے کے لیے طویل ہی نہیں بلکہ خطرناک اور دشوار گزار پہاڑی راستوں سے ہو کر جانا پڑتا تھا تاہم اب اِس پل کی وجہ سے یہ سفر کہیں زیادہ مختصر ہی نہیں بلکہ محفوظ بھی ہو جائے گا۔یہ پل چین کی تین ہزار کلومیٹر طویل موٹر وےجی 56کے ایک حصے کے طور پر تعمیر کی گئی ہے۔ آج کل اس پل کی آرائش و زیبائش کا کام آخری مراحل میں ہے۔

تقریباً ڈیڑھ کلومیٹر طویل یہ پل دنیا کے اب تک کے جس بلند ترین پل کا ریکارڈ توڑے گا، وہ بھی چین ہی میں ہے۔ یہ ہے، ’سی ڈو ریور برِج‘ جو 472 میٹر بلند ہے۔ایک اندازے کے مطابق اس پل کی تعمیر یر 139 ملین یورو کی لاگت آئی ہے۔ چینی صوبے گوئی ڑو میں اقتصادی ڈھانچے کی تعمیر و ترقی پر بے پناہ پیسہ خرچ کیا جا رہا ہے۔ یہ صوبہ 2020ءمیں ایک سو میٹر سے زیادہ بلندی کے حامل 250 سے زیادہ پل تعمیر کرنے کا ارادہ رکھتا ہے۔

اپنا تبصرہ دینے کے لیے نیچے فارم پر کریں
   
نام
ای میل
تبصرہ
  36179
کوڈ
 
   
متعلقہ خبریں
آپ نے اگر اپنا گھر بنانا ہے تو مستریوں کے پیچھے بھاگنے کی ضرورت نہیں ہے۔ اب آپ کی مشکل حل کرنے کیلئے روبوٹ آ گئے ہیں۔ سعودی عرب نے ایک آسٹریلوی کمپنی سے معاہدہ کیا ہے
ٹوکیو سے تعلق رکھنے والی کمپنی شمیزو کارپوریشن نے اوشین سپائرلز کے نام سے زیر آب شہروں کی تعمیر کا منصوبہ بنایا ہے جس پا کام شروع کر دیا گیا ہے۔ پہلا شہر جاپانی دارالحکومت ٹوکیو کے ساحلوں پر 16400 فٹ گہرائی میں تعمیر ہو گا۔
سوئٹزرلینڈ میں دنیا کی سب سے لمبی اور سب سے گہری ریلوے سرنگ کا افتتاح کردیاگیا۔گوٹہارڈ ریل لنک کی تعمیر میں 20 سال لگے اور اس پر 12 ارب ڈالر سے زائد کا خرچ آیا ہے۔سوئس حکام کا کہنا ہے کہ اس سے یورپ کی مال برداری کے میدان میں انقلاب آ جائے گا
فرانس نے انقلابی قدم اُٹھاتے ہوئے 1000کلو میٹر سٹرک پر سولر پینلز بچھانے کے منصوبے پر عملدرآمد شروع کر دیا ہے ۔ فرانسیسی وزیر نے گذشتہ ہفتے ٹرانسپورٹ حکام کے ساتھ ایک پریس کانفرنس کرتے ہوئے بتایا کہ ”پازیٹو انرجی “کے ٹینڈرز پہلے ہی جاری کئے جا چکے ہیں

مزید خبریں
نیویارک میں ایک کمپنی نے ایک ایسا کام کرنے کے لیے بازار میں بوتھ بنادیا ہے جس کا سن کر ہی انسان شرم سے پانی پانی ہو جائے۔ اس کمپنی نے مردوں کو خودلذتی کا موقع فراہم کرنے کے لیے بازار کے بیچ یہ بوتھ بنایا ہے

مقبول ترین
وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ یہ پہلی اسمبلی ہے جو’ڈیزل‘ کے بغیر چل رہی ہے اگر فضل الرحمان کے لوگ میرٹ پر ہوئے تو انہیں بھی قرضے دیے جائیں گے۔ وزیراعظم عمران خان نے نوجوانوں کے لیے ’کامیاب جوان پروگرام‘ کا افتتاح کردیا ہے۔
وزیراعظم عمران خان کی زیرصدارت تحریک انصاف کی کورکمیٹی کا اجلاس ہوا جس میں پنجاب اور خیبر پختونخوا کے وزرائے اعلیٰ اورتین گورنرز نے شرکت کی۔ حکومت نے مولانا فضل الرحمان سے مذاکرات کے لیے کمیٹی بنانے کا فیصلہ کیا ہے
اسلام آباد میں تقریب سے خطاب کرتے ہوئے فواد چوہدری نے کہا کہ نوکریاں حکومت نہیں نجی سیکٹر دیتا ہے یہ نہیں کہ ہر شخص سرکاری نوکر ی ڈھونڈے ، حکومت تو 400 محکمے ختم کررہی ہے مگرلوگوں کا اس بات پر زور ہے کہ حکومت نوکریاں دے۔
وزیراعظم عمران خان کا کہنا ہے کہ پاکستان خطے میں امن اور استحکام کے لئے اپنا کردار ادا کرنے کو تیار ہے۔ ایرانی صدر سے ملاقات کے بعد مشترکہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے ایرانی صدر حسن روحانی نے کہا کہ پاکستان اور

پاکستان
 
آر ایس ایس
ہمارے پارٹنر
ضرور پڑھیں
ریڈرز سروس
شعر و ادب
مقامی خبریں
آڈیو
شہر شہر کی خبریں