Monday, 18 November, 2019
لندن میں سلفی والی کافی 'سلفی چینو' متعارف

لندن میں سلفی والی کافی 'سلفی چینو' متعارف

 لندن۔ دنیا کے مختلف ممالک میں  کافی کو منفرد انداز میں پیش کیا جاتا ہے لیکن برطانوی دارالحکومت لندن کا ایک کیفے لوگوں کو ان کی سیلفی والی کافی بنا کر پیش کررہا ہے۔ 

ویسے تو کافی کا استعمال پورے سال ہی کیا جاتا ہے لیکن سردیوں میں اس کی طلب میں اضافہ ہوجاتا ہے اور اس کے لیے لوگ اکثر مختلف کیفوں کا رخ کرتے ہیں جہاں وہ اپنی من پسند کافی بنواتے ہیں جن میں بلیک کافی، چاکلیٹ کافی، کیپی چینو، موکا چینو، ایسپریسو کافی اور کولڈ کافی سمیت دیگر شامل ہیں۔

لوگوں کو اپنی طرف متوجہ کرنے اور کافی کو مزید دلچسپ بنانے کے لیے کیفے والے کافی کے کپ کے اندر خوبصورت نقش نگاری کرتے ہیں جو لوگوں میں بہت مقبول ہے لیکن لندن کے ایک کیفے نے گاہکوں کو اپنی طرف راغب کرنے کے لیے کافی کے کپ میں پینے والوں کی تصاویر بنانا شروع کردی ہے جس کے لیے وہ ’تھری ڈی پرنٹر‘ کا استعمال کرتے ہیں۔

لندن کیفے کی انتظامیہ موبائل فون سے گاہک کی تصویر کھینچنے کے بعد اسے ’تھری ڈی پرنٹر‘ کے ذریعے کافی کے کپ میں پرنٹ کرکے  گاہکوں کو پیش کرتی ہے اور اس کے عوض وہ صرف 2 ڈالر اضافی چارج کرتی ہے۔

کیفے انتظامیہ کا کہنا ہے کہ گاہکوں کو اچھی کافی تو ہر جگہ مل جاتی ہے لیکن انہیں اپنی طرف راغب کرنے کے لیے کچھ الگ کرنا پڑتا ہے، اس لیے ہم نے کافی پر تصویر بنانے کا عمل شروع کیا ہے کیوں کہ لوگ اسے دوستوں کے ساتھ شیئر کرتے ہوئے محظوظ ہوتے ہیں۔ دوسری جانب کچھ  گاہکوں نے اسے منفرد اقدام قرار دیا لیکن کچھ کا کہنا تھا کہ اپنی تصویر والی کافی پینا تھوڑا عجیب لگتا ہے۔

اپنا تبصرہ دینے کے لیے نیچے فارم پر کریں
   
نام
ای میل
تبصرہ
  35542
کوڈ
 
   
مزید خبریں
نیویارک میں ایک کمپنی نے ایک ایسا کام کرنے کے لیے بازار میں بوتھ بنادیا ہے جس کا سن کر ہی انسان شرم سے پانی پانی ہو جائے۔ اس کمپنی نے مردوں کو خودلذتی کا موقع فراہم کرنے کے لیے بازار کے بیچ یہ بوتھ بنایا ہے

مقبول ترین
وزیراعظم عمران خان کا کہنا ہے کہ عدلیہ طاقتور اور کمزور کےلیے الگ قانون کا تاثر ختم کرے۔ ہزارہ موٹروے فیز 2 منصوبے کی افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ پچھلے دنوں کنٹینر
لاہور ہائیکورٹ نے سابق وزیراعظم اور مسلم لیگ ن کے قائد میاں محمد نواز شریف کا نام ای سی ایل سے نکالتے کا حکم دیتے ہوئے انہیں 4 ہفتے کیلئے بیرون ملک جانے کی اجازت دیدی جبکہ عدالت کی طرف سے کوئی گارنٹی نہیں مانگی گئی۔
وفاقی دارالحکومت اسلام آباداور کراچی سمیت ملک کے مختلف شہروں میں جمعیت علماء اسلام (ف) کے کارکنوں نے دھرنے دے کر سڑکیں بلاک کردیں۔ مولانا فضل الرحمان کے آزادی مارچ کے ’پلان بی‘ کے تحت ملک بھر میں دھرنوں کا سلسلہ
وفاقی حکومت اور نیب کی جانب سے موقف اختیار کیا گیا تھا کہ لاہور ہائیکورٹ کو درخواست پر سماعت کا اختیار نہیں جبکہ نواز شریف کے وکیل نے موقف اختیار کیا کہ عدالت کے پاس کیس سننے کا پورا اختیار ہے۔ عدالت نے درخواست کو قابل سماعت قرار

پاکستان
 
آر ایس ایس
ہمارے پارٹنر
ضرور پڑھیں
ریڈرز سروس
شعر و ادب
مقامی خبریں
آڈیو
شہر شہر کی خبریں