Monday, 10 May, 2021
کینیڈین شخص کو آرڈر کیے گئے سامان کا پارسل 8 سال بعد مل گیا

کینیڈین شخص کو آرڈر کیے گئے سامان کا پارسل 8 سال بعد مل گیا
فائل فوٹو

ٹورنٹو سے تعلق رکھنے والے ایک شخص  کو اس وقت بہت حیرانی ہوئی جب انہیں  ڈاک سے ایسا سامان ملا، جس کا آرڈر انہوں نے نہیں دیا تھا۔ تاہم کچھ دیر بعد انہیں یاد آیا کہ یہ جو سامان آیا ہے، اس کا آرڈر تو انہوں نے 8 سال پہلے دیا تھا۔

ایلیٹ برینسٹن نے بتایا کہ کینیڈا پوسٹ کے ڈیلیوری ورکر نے 6 مئی کو ویل ڈاٹ سی اے کی طرف سے بھیجا گیا پارسل  ان کے دروازے پر چھوڑا۔

شروع میں تو وہ کافی حیران ہوئے کہ انہوں نے ویل ڈاٹ سی اے سے کسی قسم کا سامان نہیں خریدا لیکن پھر انہیں یاد آیا کہ اس پلیٹ فارم سے انہوں نے 8 سال پہلے کچھ سامان منگوایا تھا۔

اس پارسل میں  ایک کریم اور ہیرسٹائل پراڈکٹس تھیں۔ اس کے ساتھ ہی پارسل میں ایک انوائس بھی تھی، جس میں 2012 کی تاریخ لکھی تھی۔
اتنی تاخیر سے ڈیلیوری کے بارے میں جان کر ایلیٹ  ہنسنے لگے۔

ایلیٹ نے بتایا کہ انہوں نے پیکیج ٹریکنگ کوڈ سے اس کی ترسیل دیکھنے کی کوشش کی تھی لیکن انہیں بتایا کہ اب یہ کوڈ موثر نہیں ہے۔

کینیڈا پوسٹ کے ترجمان نے بتایا کہ تاخیر سے پارسل پہنچنے کی تحقیقات کی جا رہی ہیں۔ ترجمان نے بتایا کہ یہ ایک منفرد صورتحال ہے اور اس وقت وہ اس کے بارے میں اندازے ہی لگا سکتے ہیں کہ کیا ہوا ہوگا۔

ایلیٹ نے بتایا کہ اب وہ ملنے والی کریم کو استعمال نہیں کریں گے۔ ایلیٹ نے بتایا کہ جب انہوں نے کریم کھولی، جو انہوں نے پہلے کبھی استعمال نہیں کی تھی،  تو اس کا رنگ پیلا تھا۔ انہوں نے گوگل پر دیکھا تو وہاں انہیں معلوم ہوا کہ یہ کریم سفید ہوتی ہے۔اس وجہ سے وہ سے نہیں آزمائیں گے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
نوٹ: مبصر ڈاٹ کام ۔۔۔ کا کسی بھی خبر سے متفق ہونا ضروری نہیں ۔۔۔ اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔ علاوہ ازیں آپ بھی اپنا کالم، بلاگ، مضمون یا کوئی خبر info@mubassir.com پر ای میل کر سکتے ہیں۔ ادارہ

اپنا تبصرہ دینے کے لیے نیچے فارم پر کریں
   
نام
ای میل
تبصرہ
  21764
کوڈ
 
   
مقبول ترین
ڈی جی آئی ایس پی آر نے کہا ہے کہ ملک کے 16شہروں میں کورونا کیسز کی شرح بہت زیادہ ہے، جہاں سول اداروں کی مدد کے لیے پاک فوج کی تعیناتی کردی گئی ہے۔ راولپنڈی میں نیوز کانفرنس سے خطاب میں ڈی جی آئی ایس پی آر میجر جنرل بابر افتخار
یران کے وزیر خارجہ نے کہا ہے کہ ’ان پر پاسداران انقلاب کی کارروائیوں کی حمایت کے لیے سفارت کاری کی قربانی دینے کے لیے دباؤ ڈالا گیا تھا۔‘ عرب نیوز کے مطابق محمد جواد ظریف کے لندن میں ایران نیشنل ٹی وی چینل کو تین گھنٹے طویل انٹرویو میں ایرانی
قومی اسمبلی میں قرارداد پیش کرنے پر کالعدم تحریک لبیک پاکستان (ٹی ایل پی) نے لاہور کے مرکزی دھرنے سمیت ملک بھر میں احتجاج ختم کرنے کا اعلان کردیا۔ میڈیا کے مطابق حکومت کی جانب سے فرانس کے سفیر کو ملک بدر کرنے سے متعلق قرارداد
عوامی نیشنل پارٹی نے اپوزیشن جماعتوں کے اتحاد پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) سے راہیں جدا کرنے کا فیصلہ کرلیا جس کے نتیجے میں اتحاد ٹوٹ گیا اور اے این پی رہنماؤں نے پی ڈی ایم کے تمام عہدے چھوڑ دیے۔ پشاور میں اے این پی کی مرکزی

پاکستان
 
آر ایس ایس
ہمارے پارٹنر
ضرور پڑھیں
ریڈرز سروس
شعر و ادب
مقامی خبریں
آڈیو
شہر شہر کی خبریں