Monday, 10 May, 2021
اسرائیل غرب اردن کو ضم کرنے کا خواب نہ دیکھے، یورپی یونین

اسرائیل غرب اردن کو ضم کرنے کا خواب نہ دیکھے، یورپی یونین
فائل فوٹو

یورپی یونین کی خارجہ پالیسی کے سربراہ نے اسرائیل سے کہا ہے کہ وہ غرب اردن کو مقبوضہ علاقوں میں ضم کرنے سے اجتناب کرے۔ دنیا بھر سے غرب اردن کو مقبوضہ علاقوں میں ضم کرنے کے اسرائیلی منصوبے کی بڑے پیمانے پر مخالفت کی جارہی ہے۔

بین الاقوامی خبر رساں ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق یورپی یونین کی خارجہ پالیسی کے سربراہ جوزپ بورل نے کہا کہ اسرائیل کو چاہئیے کہ وہ  یورپی یونین سے وعدہ کرے کہ وہ غرب اردن کو مقبوضہ علاقوں میں ضم کرنے کا یکطرفہ طور پر فیصلہ نہیں کرے گا اس لئے کہ اسرائیل کا یہ اقدام عالمی قوانین کی خلاف ورزی ہے۔

تفصیلات کے مطابق یورپی یونین کی خارجہ پالیسی کے سربراہ نے چند روز قبل بھی کہا تھا کہ یورپی یونین اسرائیل کو اس کے منصوبے سے منحرف کرنے کیلئے کوئی بھی اقدام کر سکتا ہے۔

فلسطینی گروہوں، دنیا بھر کے دیگر ممالک اور عالمی اداروں نے گزشتہ ہفتوں کے دوران غرب اردن کو مقبوضہ علاقوں میں ضم کرنے کے اسرائیلی منصوبے کی بڑے پیمانے پر مخالفت کی ہے۔

واضح رہے کہ غاصب اسرائیل نے کہا ہے کہ وہ اپنے اس منصوبے کو یکم جولائی 2020 میں عملی جامہ پہناتے ہوئے فلسطین کے مغربی کنارے کے بعض علاقوں کو اپنے زیر قبضہ علاقوں میں شامل کرنے کا عمل شروع کر دے گا۔

یاد رہے کہ شراکت اقتدار کے معاہدے کے تحت بینجمن نیتن یاہو ڈیڑھ سال کے لیے وزیراعظم بن گئے۔ انہوں نے جلد فلسطینی غرب اردن کو اسرائیل میں ضم کرنے کا اعلان کر رکھا ہے۔

17 مئی کو اسرائیلی پارلیمان سے اپنے خطاب میں نیتن یاہو نے کہا، ''وقت آگیا ہے کہ اسرائیلی قانون اور صہیونی تاریخ کا ایک شاندار نیا باب رقم کیا جائے۔‘‘ نیتن یاہو نے اپنی انتخابی مہم کے دوران اسرائیلی خودمختاری کا دائرہ  فلسطینی غرب اردن میں قائم یہودی آبادیوں تک پھیلانے کا وعدہ کیا تھا۔

خیال رہے اردن کے شاہ عبداللہ نے بھی اسرائیل کو خبردار کیا تھا کہ اس کا یہ اقدام خطے میں بڑے مسلح تنازع کا سبب بن سکتا ہے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

نوٹ: مبصر ڈاٹ کام ۔۔۔ کا کسی بھی خبر سے متفق ہونا ضروری نہیں ۔۔۔ اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔ علاوہ ازیں آپ بھی اپنا کالم، بلاگ، مضمون یا کوئی خبر info@mubassir.com پر ای میل کر سکتے ہیں۔ ادارہ

اپنا تبصرہ دینے کے لیے نیچے فارم پر کریں
   
نام
ای میل
تبصرہ
  65865
کوڈ
 
   
متعلقہ خبریں
عالمی ادارہ صحت نے دنیا بھر کے عوام کو خوش خبری دیتے ہوئے کہا ہے کہ اس سال کے آخر تک کورونا کی ویکسین تیار ہو جائے گی۔ ڈاکٹر سوامی ناتھن کا کہنا تھا کہ انسداد ملیریا دوا ہائیڈروکسی کلوروکین کورونا وائرس انفیکشن کے علاج میں مفید نہیں ہے۔
انٹرنیشنل دنیا میں صحافیوں کو درپیش سنجیدہ مسائل کے بروقت حل کے حوالے سے صحافتی امور پر ویڈیو لنک میٹنگ کا انعقاد کیا گیا ۔ویڈیو لنک میٹنگ میں حاجی وقار یعقوب، چیف اکرام الدین، مس ابیر الور ایڈوکیٹ اور سمیت دنیا بھر سے سینئر صحافتی رہنماوں نے ویڈیو لنک کے زریعے میٹنگ میں شرکت کی۔
عالمی ادارہ صحت نے کورونا وائرس کے علاج کیلئے ہائیڈروکسی کلوروکوئین کو دوبارہ مفید قرار دے دیا البتہ ایک بیان میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ ابھی تک ایسی کوئی دوا سامنے نہیں آئی جس کی مدد سے کرونا کی وبا کا شکار ہونے والے افراد کی جانیں بچائی جا سکیں۔
کیوبا کے صدر نے کہا ہے کہ واشنگٹن نہ صرف دہشتگردی کے خلاف کچھ بھی نہیں کر رہا بلکہ وہ خود دہشتگردوں کے ساتھ ملا ہوا ہے۔ امریکہ کے حکام نے بد بینی کے تمام ریکارڈ توڑتے ہوئے خاموشی کے بجائے توہین آمیز اقدامات کا سہارا لیا ہے۔

مقبول ترین
ڈی جی آئی ایس پی آر نے کہا ہے کہ ملک کے 16شہروں میں کورونا کیسز کی شرح بہت زیادہ ہے، جہاں سول اداروں کی مدد کے لیے پاک فوج کی تعیناتی کردی گئی ہے۔ راولپنڈی میں نیوز کانفرنس سے خطاب میں ڈی جی آئی ایس پی آر میجر جنرل بابر افتخار
یران کے وزیر خارجہ نے کہا ہے کہ ’ان پر پاسداران انقلاب کی کارروائیوں کی حمایت کے لیے سفارت کاری کی قربانی دینے کے لیے دباؤ ڈالا گیا تھا۔‘ عرب نیوز کے مطابق محمد جواد ظریف کے لندن میں ایران نیشنل ٹی وی چینل کو تین گھنٹے طویل انٹرویو میں ایرانی
قومی اسمبلی میں قرارداد پیش کرنے پر کالعدم تحریک لبیک پاکستان (ٹی ایل پی) نے لاہور کے مرکزی دھرنے سمیت ملک بھر میں احتجاج ختم کرنے کا اعلان کردیا۔ میڈیا کے مطابق حکومت کی جانب سے فرانس کے سفیر کو ملک بدر کرنے سے متعلق قرارداد
عوامی نیشنل پارٹی نے اپوزیشن جماعتوں کے اتحاد پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) سے راہیں جدا کرنے کا فیصلہ کرلیا جس کے نتیجے میں اتحاد ٹوٹ گیا اور اے این پی رہنماؤں نے پی ڈی ایم کے تمام عہدے چھوڑ دیے۔ پشاور میں اے این پی کی مرکزی

پاکستان
 
آر ایس ایس
ہمارے پارٹنر
ضرور پڑھیں
ریڈرز سروس
شعر و ادب
مقامی خبریں
آڈیو
شہر شہر کی خبریں