Sunday, 31 May, 2020
دنیا کے آرٹسٹوں نے کورونا کو موضوع بنا لیا ۔۔۔
 

کورونا انسانی دل و دماغ پر چھایا ہوا ہے۔ اس کے اثرات آپ سارا دن میڈیا، سوشل میڈیا پر دیکھتے ہوں گے اور اب دنیا میں جابجا مختلف شکلوں میں اس کے اثرات دکھائی دینے لگے ہیں۔ اب بہت سے آرٹسٹ ایسے ہیں جنہوں نے کورونا کو اپنے کام کا موضوع بنا لیا ہے۔

  • دنیا بھر کے آرٹسٹ نے کورونا کو موضوع بنالیا دنیا بھر کے آرٹسٹ نے کورونا کو موضوع بنالیا


تصاویر
دنیا کے آرٹسٹوں نے کورونا کو موضوع بنا لیا ۔۔۔
جان لیوا وائرس پوری دنیا کو ویران کرگیا
ملک بھر میں لاک ڈاؤن: سڑکیں سنسان، مارکیٹیں ویران
عالمی یوم خواتین پر’عورت مارچ‘ اور ’حیا مارچ‘
’’یوم یکجہتی کشمیر کی تصویری جھلکیاں‘‘
ملی یکجہتی کونسل کے وفد کا دورہ ایران
عراق میں امریکی سفارتخانے پر مظاہرین کا دھاوا
پاکستان میں سورج گرہن کیسے؟
لاہور میں خودکش دہماکہ
کینیڈا: کیوبیک کی مسجد میں فائرنگ
دنیا بھر میں سال نو کا بھرپور استقبال
دنیا بھر میں سال نو کی تیاریاں
حویلیاں: طیارہ حادثے کی تصویری جھلکیاں
سپر مون کے دلکش نظارے
ڈونلڈ ٹرمپ امریکہ کے نئے صدر منتخب
 
 
 
مقبول ترین
پاکستان مسلم لیگ ن کے سینئر رہنما راجہ ظفر الحق کا کہنا ہے کہ ایٹمی دھماکوں کا کریڈٹ سابق وزیراعظم میاں محمد نواز شریف کو جاتا ہے۔ میڈیا کے مطابق وزیر ریلوے شیخ رشید نے دعویٰ کیا تھا کہ ملک میں ایٹمی دھماکے انہوں نے، گوہر ایوب اور
وزیر ریلوے شیخ رشید احمد کا کہنا ہے کہ ساری قوم کو یہ بتانا چاہتا ہوں کہ ایٹمی دھماکا راجا ظفر الحق، گوہر ایوب اور میں نے کیا، نواز شریف سمیت ساری کابینہ ایٹمی دھماکے کے خلاف تھی۔ لاہور میں پریس کانفرنس کے دوران شیخ رشید احمد نے
معاون خصوصی برائے صحت ڈاکٹر ظفر مرزا کا کہنا ہے کہ پاکستان میں کورونا کے مقامی سطح پر پھیلاؤ کی شرح 92 فیصد ہے لہٰذا عوامی مقامات پر ماسک کے استعمال کو لازمی قرار دے رہے ہیں۔ وزیراعظم کے معاونین خصوصی ڈاکٹر ظفر مرزا اور
وزیر مملکت برائے امور کشمیر شہریار آفریدی بھی کورونا کا شکار ہوگئے ہیں۔ وزیر مملکت نے قوم کے لیے دعا دی اور کہا رب ذوالجلال سے دعا ہے کہ وطن عزیز کو موذی وباء سے محفوظ بنائے۔

کرونا وائرس اور احتیاتی تدابیر
میرے بچپن میں میرے والد صاحب بیرون ملک ملازمت کرتے تھے. اچھا کھاتے پیتے تھے لیکن وہ ایک کمی ہوتی ہے نا کہ کب ابو آئیں گے اور کب ان کو لینے ایئرپورٹ جائیں گے، وہ ہمیشہ رہتی تھی. اور جب ان کو لینے ائیر پورٹ جاتے تو خوشی کا کوئی ٹھکانہ نہیں ہوتا تھا.
صدی کی ڈیل (deal of century) امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ کی طرف سے مسئلہ فلسطین کا پیش کیا جانے والا نام نہاد حل ہے ۔اس منصوبہ کے تحت اسرائیل اور فلسطین کے درمیان ایک نئی حد بندی کی جائے گی ۔جس کے نتیجے میں ایک جدید فلسطین تشکیل دیا جائے گا ۔اگر اس صدی کی ڈیل کے بعد کے فلسطین کو دیکھا جائے تو مکمل طور پہ تبدیل ہو جائے گا۔
سعودی عرب کے ایک ایم بی سی چینل پر رمضان کے شروع میں ایک ڈرامہ "ام ہارون" کے نام سے نشر کیا جا رہا ہے، جس میں یہودیت کو مظلوم بنا کر پیش کیا گیا ہے۔

کیا ملک میں کرفیو نافذ ہونا چاہیے؟
نتائج ملاحظہ کریں
پاکستان
 
آر ایس ایس
ہمارے پارٹنر
ضرور پڑھیں
ریڈرز سروس
شعر و ادب
مقامی خبریں
آڈیو
شہر شہر کی خبریں