Wednesday, 23 September, 2020
امریکہ: پُر تشدد مظاہرے جاری، 4 ہزار افراد گرفتار، حالات مزید کشیدہ

امریکہ: پُر تشدد مظاہرے جاری، 4 ہزار افراد گرفتار، حالات مزید کشیدہ

واشنگٹن: امریکہ میں پولیس کے ہاتھوں کے سیاہ فام شخص کے قتل سے خراب ہونے والے حالات مزید کشیدہ ہوگئے ہیں اور دارالحکومت سمیت 13 شہریوں میں کرفیو نافذ کر دیا گیا ہے۔ امریکی پولیس نے ملک میں ہونے والے مظاہروں کے دوران اب تک 2564 افراد کو گرفتار کرنے کا اعلان کیا ہے تاہم گرفتار ہونے والوں کی تعداد 4 ہزار سے زائد ہے۔

اخبار واشنگٹن پوسٹ کے مطابق امریکہ کے مختلف علاقوں میں ہونے والے مظاہروں کے دوران اب تک4 ہزار سے زائد افراد کو گرفتار کیاگیا ہے۔ گرفتار ہونے والوں میں سے زیادہ تر کا تعلق لاس اینجلس سے ہے۔ گرفتار ہونے والے افراد پر کرفیو کی خلاف ورزی کرنے اور املاک کو نقصان پہنچانے کے الزامات عائد کئے گئے ہیں۔

امریکی ذرائع ابلاغ کے مطابق صدرڈونلڈ ٹرمپ نے وائٹ ہاؤس میں بنے ہوئے زیرزمین بنکر میں چلے گئے تھے اور وہاں انہوں نے 60 منٹ گزارے تاہم یہ واضح نہیں کہ یہ یلانیا ٹرمپ اور بیرن ٹرمپ کو بھی ساتھ لے جایا گیا تھا یا نہیں۔

امریکہ کے دارالحکومت واشنگٹن ڈی سی میں وائٹ ہاوَس کے باہر مظاہرین اور پولیس آمنے سامنے آگئے ہیں اور مشتعل افراد کی جانب سے شدید  نعرے بازی کی جا رہی ہے۔

واضح رہے کہ پولیس کے ہاتھوں سیاہ فام امریکی شہری کے بہیمانہ قتل کے بعد امریکہ کے مختلف شہروں میں احتجاج اور مظاہرے شروع ہو گئے جو اب پورے ملک میں پھیل گئے ہیں۔

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نےحالیہ مظاہروں پر ردعمل ظاہر کرتے ہوئے اپنی ایک ٹوئیٹ میں مظاہرین کو غنڈے اور بدمعاشوں کا ٹولہ کہا تھا۔

صدر ٹرمپ نے ایک دن قبل وائٹ ہاوس کے سامنے جمع ہونے والے مظاہرین کے بارے میں کہا ہے کہ دوبارہ ایسی حرکت کرنے اور سکیورٹی کوریڈور کو توڑنے کی صورت میں ان کا سامنا کتّوں سے ہو گا۔

درایں اثنا اے بی سی ٹیلی ویژن نے خبر دی ہے کہ ریاست منے سوٹا کے حکام نے سیاہ فام امریکی شہری کے قتل میں ملوث پولیس افسر ڈریک چیون کو ضمانت پر رہا کرنے کا اعلان کیا ہے۔ یہ خـبر ایسے وقت میں سامنے آئی ہے جب کیس کی سماعت کرنے والی عدالت کے سامنے ایسی کوئی دستاویز پیش نہیں کی گئی جس میں سیاہ فام شہری کے قاتل امریکی پولیس افسر کو ضمانت پر رہا کرنے کی بات کی گئی ہو۔ اے بی سی ٹیلی ویژن کے مطابق حکام نے کہا ہے کہ سیاہ فام امریکی شہری کے قاتل پولیس افسر کو پانچ لاکھ ڈالر کی ضمانت پر رہا کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

وائٹ ہاؤس کے سامنے  بھی سیکڑوں مظاہرین نے سیاہ فام شخص کی ہلاکت کے خلاف احتجاج کیا اور’میں سانس نہیں لے پا رہا‘ کے نعرے بلند کیے۔

ریاست ورجینیا میں ایمرجنسی لگا کر نیشنل گارڈز کو طلب کرلیا گیا ہے۔ امریکہ کی ریاست مشی گن میں پولیس اہلکار ہتھیار ڈال کر مظاہرین کے ساتھ شامل ہو گئے ہیں۔

نسلی تعصب کے خلاف ہونے والے مظاہرے امریکہ کے30 شہروں تک پھیل گئے ہیں اور لاس اینجلس سمیت12 شہروں میں کرفیو نافذ ہے۔ پرتشدد مظاہروں کو روکنے کے لیے14ریاستوں میں نیشنل گارڈز طلب کرلیے گئے ہیں۔

شکاگو میں احتجاج کے دوران ہنگامہ آرائی سے پولیس اہلکاروں سمیت12سے زائد افراد زخمی ہونے کی بھی اطلاعات ہیں جب کہ مختلف شہروں میں100 افراد کو گرفتار بھی کیا گیا ہے۔

نیویارک میں پولیس موبائل نے مظاہرین کو ٹکرمار دی جس کے سبب حالات مزید کشیدہ ہوگئے ہیں اور مظاہروں میں شدت آئی ہے۔ امریکی ریاست مینیسوٹا، واشنگٹن، نیویارک، لاس اینجلس، ہوسٹن، اٹلانٹا اور لاس ویگاس سمیت کئی شہروں میں مظاہرے ہو رہے ہیں۔

مظاہرین کو منتشر کرنے کے لیے نیشنل گارڈز تعینات کیے گئے ہیں لیکن اس کے باوجود جلاؤ گھیراؤ اور توڑ پھوڑ کے واقعات میں کمی نہیں آئی۔ ریاست مینیسوٹا اور لاس اینجلس میں صورتحال انتہائی کشیدہ ہے جہاں توڑ پھوڑ اور جلاؤ گھراؤ کے واقعات پیش آئے ہیں۔

لاس اینجلس میں پولیس کی جانب سے  مظاہرین پر ربڑ کی گولیوں کا استعمال کیا گیا اور آنسوگیس کے شیل بھی فائر کیے گئے ہیں۔

یاد رہے کہ گزشتہ ہفتے پیر کے روز ایک سفید فام امریکی پولیس اہلکار نے منیاپولس شہر میں سیاہ فام امریکی شہری جارج فلوئیڈ کو انتہائی بہیمانہ طریقے سے تشدد کر کے قتل کردیا تھا۔

اس واقعے کی فوٹیج سوشل میڈیا کے ذریعے عام ہونے کے بعد پورے امریکہ میں مظاہرے کیے جا رہے ہیں اور مقامی حکومتوں نے صورتحال پر قابو پانے کے لیے کئی شہروں میں ہنگامی حالت جبکہ پچیس شہروں میں کرفیو کا اعلان کیا ہے۔

انسانی اور شہری حقوق کا دفاع کرنے والی تنظیموں کا کہنا ہے کہ امریکہ میں سیاہ فاموں اور دیگر نسلوں سے تعلق رکھنے والے لوگوں کو پولیس کے تشدد آمیز رویئے کا سب سے زیادہ سامنا کرنا پڑتا ہے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
نوٹ: مبصر ڈاٹ کام ۔۔۔ کا کسی بھی خبر سے متفق ہونا ضروری نہیں ۔۔۔ اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔ علاوہ ازیں آپ بھی اپنا کالم، بلاگ، مضمون یا کوئی خبر info@mubassir.com پر ای میل کر سکتے ہیں۔ ادارہ

اپنا تبصرہ دینے کے لیے نیچے فارم پر کریں
   
نام
ای میل
تبصرہ
  59804
کوڈ
 
   
متعلقہ خبریں
انٹرنیشنل دنیا میں صحافیوں کو درپیش سنجیدہ مسائل کے بروقت حل کے حوالے سے صحافتی امور پر ویڈیو لنک میٹنگ کا انعقاد کیا گیا ۔ویڈیو لنک میٹنگ میں حاجی وقار یعقوب، چیف اکرام الدین، مس ابیر الور ایڈوکیٹ اور سمیت دنیا بھر سے سینئر صحافتی رہنماوں نے ویڈیو لنک کے زریعے میٹنگ میں شرکت کی۔
متحدہ عرب امارات اور صیہونی حکومت نے دبئی میں اسرائیل کا عارضی سفارت خانہ کھولنے پر اتفاق کرلیا ہے۔ یوئل ہارون نے بھی اس خبر کی تائید کردی ہے۔ یونیوز نے اسرائیلی ذرائع ابلاغ کے حوالے سے بتایا ہے کہ تل ابیت اور ابوظہبی کے درمیان ہونے والے اتفاق کے مطابق
کورونا وائرس کی بیماری میں مبتلا برطانیہ کے وزیراعظم بورس جانسن کی طبیعت سنبھلنے لگی۔ کورونا وائرس کے شکار برطانیہ کے وزیر اعظم بورس جانسن ابھی بھی لندن کے اسپتال میں انتہائی نگہداشت کے یونٹ میں زیر علاج ہیں۔
چینی دفترخارجہ کے ترجمان گینگ شوانگ نے ہفتہ وار پریس کانفرنس کے دوران سوالوں کے جوابات دیتے ہوئے کہا کہ مسئلہ کشمیر ایک تاریخی مسئلہ ہے جسے اقوام متحدہ کے چارٹر اور سلامتی کونسل کی متعلقہ قراردادوں کی روشنی میں پر امن طریقے

مزید خبریں
چینی دفترخارجہ کے ترجمان گینگ شوانگ نے ہفتہ وار پریس کانفرنس کے دوران سوالوں کے جوابات دیتے ہوئے کہا کہ مسئلہ کشمیر ایک تاریخی مسئلہ ہے جسے اقوام متحدہ کے چارٹر اور سلامتی کونسل کی متعلقہ قراردادوں کی روشنی میں پر امن طریقے

مقبول ترین
انسداد دہشت گردی عدالت نے سانحہ بلدیہ فیکٹری کیس کے مجرموں رحمان بھولا اور زبیر چریا کو 264 ، 264 بار سزائے موت سنادی ہے۔ انسداد دہشت گردی عدالت میں سانحہ بلدیہ فیکٹری کیس کی سماعت ہوئی جس میں رحمان بولا، زبیر چریا اور رؤف صدیقی
ایران نے کہا ہے کہ امریکا نے روایتی غنڈہ گردی کا مظاہرہ کرتے ہوئے یک طرفہ طور پر اقوام متحدہ کی پابندیاں بحال کیں جس پر اُسے فیصلہ کن جواب دینے کا وعدہ کرتے ہیں۔ عالمی خبر رساں ادارے کے مطابق صدر حسن روحانی نے ایران پر اقوام متحدہ کی پابندیوں
وزیراعظم نے کہا ہے کہ اپوزیشن کی آل پارٹیز کانفرنس (اے پی سی) ریاستی اداروں کو بدنام کرنے کی کوشش تھی، عدالتوں اور فوج کو بدنام نہیں ہونے دیں گے۔ پاکستان کی مسلح افواج قومی سلامتی کی ضامن ہیں۔ ن لیگ نے ایک بار پھر بھارتی ایجنڈے کو فروغ دیا۔
عسکری قیادت نے واضح کیا ہے کہ پاک فوج کا ملک میں کسی بھی سیاسی عمل سے براہ راست یا بالواسطہ تعلق نہیں ہے۔ میڈیا کے مطابق آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ اور ڈی جی آئی ایس آئی لیفٹیننٹ جنرل فیض حمید کی پارلیمانی رہنماؤں سے

پاکستان
 
آر ایس ایس
ہمارے پارٹنر
ضرور پڑھیں
ریڈرز سروس
شعر و ادب
مقامی خبریں
آڈیو
شہر شہر کی خبریں